ایم کیو ایم پاکستان اور تحریک انصاف نےانتخابی اصلاحات ترمیمی بل2017 کو سندھ ہائی کورٹ میں چیلینج جبکہ جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق نے بل ماننے سے انکار کردیا

کراچی جدت ویب ڈیسک :تفصیلات کے مطابق ایم کیو ایم پاکستان اور تحریک انصاف نے سینیٹ سے پاس کیئے گئے انتخابی اصلاحات بل کے خلاف سندھ ہائی کورٹ سے رجوع کرلیا ہے.
درخواست گذاروں نے موقف اختیار کیا ہے کہ یہ بل آئین کے منافی بل ہے جس کے ذریعے ایک نا اہل اور سزا یافتہ شخص بھی پارٹی کا سربراہ نہیں سکتا ہے یہ ترمیم صرف نواز شریف کو مسلم لیگ (ن) کا سربراہ بنائے رکھنے کے لیے پاس کیا گیا ہے۔واضح رہے کہ حکومت نے بائیس ستمبر کو سینیٹ میں بل پیش کیا اور اکثریت رائے سے اس وقت بل منظور کرالیا جب بیشتر اراکین جمعہ کی نمازمیں مصروف تھے جب کہ سینیٹر میاں عتیق کے ووٹ کے باعث اپوزیشن کی مخالفت کے باوجود بل ایک ووٹ کی برتری سے منظور ہوگیا.جبکہ جماعت اسلامی نے اس بل کو ماننے سے انکار کردیاجماعت اسلامی کے امیر سراج الحق نے کہا ہے کہ ان کی جماعت نے کبھی ظالم کے سامنے سر نہیں جھکایا جماعت اسلامی وہ واحد جماعت ہے جو ہر ظلم کے خلاف آواز اٹھاتی ہے۔

ا

Leave a Reply

Your email address will not be published.