جے آئی ٹیزرپورٹ پبلک کی جائیں حکومت سندھ کوجواب کیلئےدس نومبر تک کی مہلت

کراچی جدت ویب ڈیسک :سندھ ہائیکورٹ نے عزیر بلوچ، نثار مورائی اور سانحہ بلدیہ ٹاؤن کی جے آئی ٹیز پبلک کرنے کے معاملے میں ایڈوکیٹ جنرل سندھ کو جواب داخل کروانے کے لیے 10 نومبر تک مزید مہلت دے دی۔درخواست گزار تحریک انصاف کےرہنما علی زیدی نے عدالت کو بتایا کہ عزیر بلوچ، نثار مورائی اور سانحہ بلدیہ میں تہلکہ خیز انکشافات سامنے آچکے۔ قتل عام اور سنگین جرائم میں ملوث عناصر کے بارے میں آگاہی عوام کا حق ہے۔ علی زیدی نے عدالت کو بتایا کہ جے آئی ٹی پبلک کرنے کے لئے چیف سیکرٹری سندھ کو خط بھی لکھا تھا لیکن انہوں نے کوئی مثبت جواب نہیں دیا ۔انہوں نے کہاکہ گینگسٹر نے ملک اور صوبے کے حاکموں کے اوپر سنگین جرائم کے الزامات لگائے ہیں ۔ عمر سومرو ایڈووکیٹ نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ لاہور ہائیکورٹ نے سانحہ ماڈل ٹاؤن کی جے آئی ٹی کی رپورٹ پبلک کرنے کا حکم دیا ہے ۔ اسی طرح یہ جے آئی ٹیز بھی پبلک کی جائیں ۔عزیر بلوچ، نثار مورائی کے انکشافات کو نظر انداز نہیں کر سکتے۔ تحقیقات ہونی چاہیےکہ فریال تالپور کوعذیر بلوچ بھتہ دیتا تھا یانہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.