جمہوری اداروں کو مضبوط کرنے کا وقت آگیا ہے ، میاں رضا ربانی

کراچی جدت ویب ڈیسک چیئرمین سینیٹ میاں رضا ربانی نے کہا ہے کہ قائد اعظم کی پوری جدوجہد جمہوری تھی جس کے نتیجے میں پاکستان کا قیام عمل میں آیا اور آج ملک میں جمہوری اداروں کو مضبوط کرنے کا وقت آگیا ہے ۔کراچی پریس کلب میں ‘پاکستان کے لئے جمہوریت ضروری ہے ؟’ کے موضوع پر سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے رضاربانی نے کہا کہ ملک کے عوام نے پارلیمانی نظام کے لئے بے پناہ قربانیاں دی ہیں اور آج ٹرمپ جس زبان میں بات کر رہا ہے اس کا جواب جمہوری ادارے ہی اچھی طرح دے سکتے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ آج ملک جن مسائل اور کیفیت سے گزر رہا ہے یہ ماضی کے آمرانہ طرز حکومت کا نتیجہ ہے ، ملک کے مسائل کا حل صدارتی نہیں بلکہ پارلیمانی نظام میں ہے ، ماضی میں ہم صدارتی طرز حکومت آزما چکے ہیں جس سے ملک کو ناقابل تلافی نقصان اٹھانا پڑا ہے ۔چیئرمین سینیٹ رضا ربانی نے اپنے صدارتی خطاب میں کہا کہ بدقسمتی سے ہمارے ملک میں جمہوریت کو پنپنے نہ دیا گیا حالانکہ پاکستان کی جدوجہد بنیادی طور پر ایک جمہوری جدوجہد تھی۔انھوں نے کہا کہ قائد اعظم کی جمہوری جدوجہد کے ذریعے پاکستان وجود میں آیا، پاکستان کی جڑوں کے اندر جمہوریت تھی اور جس چیز کی جڑیں اکھاڑ دی جائیں تو وہ کمزور ہوجاتی ہے ۔انھوں نے کہا کہ ہر دس سال کے بعد آمریت اس ملک پر مسلط ہوئی جس کے باعث جو خرابیاں پیدا ہوئی ہیں ان کا خمیازہ ہم بھگت رہے ہیں اور یہ سب کچھ غیر جمہوری ادوار کا نتیجہ ہے ۔رضاربانی نے کہا کہ ایوب سے لے کر ضیاالحق اور مشرف تک صدارتی نظام ہی رہے ہیں اور ان نظاموں نے ہمیں فیل کر دیا لیکن پاکستانی عوام نے جمہوریت کے لئے بے مثال قربانیاں دی ہیں جس کی شاید ہی ہیں مثال ملتی ہو۔نیشنل پارٹی کے سربراہ اور وفاقی وزیر حاصل خان بزنجو نے کہا کہ ملک میں صدارتی نظام کے نام سے ایک خاص گروہ آمرانہ طرز حکومت نافذ کرنا چاہتا ہے ، ماضی میں غیر جماعتی انتخابات کے ذریعے غیر سیاسی لوگوں کو آگے لا کر انھیں اپنے مقاصد کے لئے استعمال بھی کیا گیا۔انھوں نے کہا کہ پولیٹیکل سائنس میں جمہوریت سے بہتر کوئی نظام ایجاد نہیں ہوا، کرپشن آمروں کی پیداوار ہے جس کا خمیازہ ابھی تک ہم بھگت رہے ہیں۔وفاقی وزیر نے کہا کہ غلطیوں کی درستی اور پارلیمانی اداروں کی مضبوطی کے لئے ہمیں دوبارہ ڈائیلاگ میں جانا پڑے گا اور ملک کی تمام سیاسی جماعتیں پارلیمنٹ کو مکمل بااختیار بنانے کے لئے ایک چارٹر پر دستخط کریں۔سیمینار سے چیئرمین سینیٹ رضاربانی اور نیشنل پارٹی کے سربراہ حاصل خان بزنجو کے علاوہ سندھ کے صوبائی وزیر نثار کھوڑو، متحدہ قومی موومنٹ کے سربراہ فاروق ستار، جماعت اسلامی کے اسد اللہ بھٹو، مسلم لیگ نواز سندھ کے صدر سرفراز خان جتوئی، ایاز لطیف پلیجو، آفاق احمد، علی زیدی اور سینئر صحافی مظہر عباس اور دیگر نے بھی خطاب کیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.