عمران خان کا ڈیم کی تعمیر کے لیے چیف جسٹس اورپرائم منسٹر فنڈز اکٹھا کرنے کا اعلان

اسلام: جدت ویب ڈیسک :: وزیراعظم عمران خان پانی کے بحران سے متعلق آج قوم سے براہ راست خطاب کیا۔
وزیر اعظم نے کہا کہ معاشی صورت حال سمیت دیگر مسائل پر بریفنگ لےرہا ہوں، ملک کو بڑے چیلنجز کا سامنا ہے ، پاکستان پرقرضہ6ہزار سے 30ہزار ارب پر پہنچ چکا ہے ۔
ان کا کہنا تھا کہ ڈیم نہ بنائے گئے، تو 2025 میں پاکستان میں خشک سالی شروع ہوجائے گی، ڈیم نہ بنائے تو پاکستان میں قحط کا خدشہ ہے. ملک کےلئے ڈیم ناگزیر ہے.
انھوں نے کہا کہ چیف جسٹس کا اقدام قابل تعریف ہے، البتہ ڈیمز فنڈ کا کام چیف جسٹس کا نہیں، بلکہ سیاسی لیڈرشپ کا تھا، پاکستان کاقرضہ 10سال پہلے6ہزارارب روپےتھا، آج پانی کم ہوکرفی کس1000کیوسک ہوگیاہے،وزیراعظم کا کہنا تھا کہ ڈیم کی تعمیر کے لیے چیف جسٹس اورپرائم منسٹر فنڈز کو اکٹھا کررہےہیں، ملکی و بیرون ملک پاکستانی ڈیم فنڈز کے لئے پیسہ دینا شروع کریں ۔
انھوں نے کہا کہ 90لاکھ بیرون ملک پاکستانی ایک ہزار ڈالر بھیجیں ، بیرون ملک پاکستانیوں نے پیسہ بھیجا تو ڈیمز جلد بننا شروع ہوجائے گا، بیرون ملک پاکستانیوں نے پیسہ بھیجا تو معاشی صورتحال بھی بہترہوگی، ڈیمز نہ بنائےتواناج اگانےکے لئے بھی پانی نہیں ہوگا۔ان کا کہنا تھا کہ ڈیم نہ بنائے گئے، تو 2025 میں پاکستان میں خشک سالی شروع ہوجائے گی، ڈیم نہ بنائے تو پاکستان میں قحط کا خدشہ ہے. ملک کےلئے ڈیم ناگزیر ہے.

Leave a Reply

Your email address will not be published.