قومی شاہراہ پر غیر قانونی پارکنگ ایریا قائم

کراچی سے رحیم شاہ کی رپورٹ : قومی شاہراہ پر ذوالفقار آباد آئل ٹرمینل کے اطراف ڈیزل ،پیٹرول اور آئل بردار ٹینکروں نے غیر قانونی پارکنگ ایریا بنا لیا، ہزاروں کی تعداد میں ٹینکر کھڑے کئے جاتے ہیں،کسی بھی وقت احمد پور شرقیہ جیسے واقعے سے بھی خطرناک حادثہ ہونے کا اندیشہ ،وائرلیس گیٹ سے اسٹیل مل موڑ تک چھپرا ہوٹلیں،سروس اسٹیشن ،دکانیں،پتھارے اور غیر قانونی تجاویزات قائم، آئل ٹرمینل انتظامیہ اور ٹریفک پولیس سمیت قانون نافذ کرنے والے اہلکاروں نے خاموشی اختیار کر رکھی ہے،سروے رپورٹ کے مطابق رزاق آباد سے اسٹیل مل موڑ تک مرکزی قومی شاہراہ اور پورٹ قاسم موڑ کے قریب قائم پاکستان اسٹیٹ آئل کے ذوالفقار آباد آئل ٹرمینل کے سامنے اور اطراف سے متصل علاقوں رزاق آباد نشتر آباد اور وائرلیس گیٹ پر قومی شاہراہ پر ڈیزل ، پیٹرول اور آئل بردار ٹینکروں نے غیر قانونی پارکنگ ایریا بنا رکھا ہے، ٹینکروں کی پارکنگ کی آڑ میں وائر لیس گیٹ کی طویل دیوار کے ساتھ غیر قانونی تجاویزات قائم کرکے کچی دکانیں ،چھاپرا ہوٹل ،مکینکوں اور ٹائر پنکچر کی دکانیں بنا لی گئیں ہیں،جس کی وجہ سے گھنٹوں ٹریفک جام رہنا اور حادثات ہونا، معمول بن چکا ہے،احمد پور شرقیہ میں ایک ٹینکر اولٹنے کی وجہ سے ہونے والے حادثے میں 200انسانی جانیں لقمہ اجل بن گئیں تھیں،ان ہزاروں ٹینکروں کی قومی شاہراہ پر غیر قانونی اور غیر حفاظتی قطاروں سے ہونے والے ممکنہ حادثے کے تصور سے ہی روح کانپ اٹھتی ہے،ٹریفک پولیس اہلکار اور پولیس موبائل وی آئی پی کی آمد و رفت کے موقع پر وقتی طور پر ان گاڑیوں کو ہٹایا جاتا ہے،جس کے بعد یہ ٹینکر دن رات اسی طرح قومی شاہراہ پر کھڑے رہتے ہیں جس کی وجہ سے روزانہ کی بنیاد پر سفر کرنے والے مسافروں اور عام گاڑیوں کے لئے یہ ٹینکر پارکنگ مافیا وبالے جان بنے ہوئے ہیں،پولیس اور ٹریفک اہلکار صرف وی آئی پی مومنٹ میں ہی محترک نظر آتے ہیں،پاکستان اسٹیٹ آئل ٹرمینل کی انتظامیہ ،ٹریفک پولیس اور دیگر قانون نافذ کرنے والے اہلکار خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.