کعبے کس منہ سے جاؤ گے غالب!شرم تم کو مگر نہیں آتی

سیالکوٹ جدت ویب ڈیسک وزیراعظم محمد نواز شریف نے کہا کہ تین نسلوں کا احتساب کرنے والے بتائیں کس جرم اور مقدم میں حساب لے رہے ہیں، ہمیں لوٹ کر ہم سے منی ٹریل پوچھنے والے بتائیں پیسہ لوٹ کر کہاں لے گئے ہمیں بتایا جائے کہ ہم نے قومی امانت میں کہاں خیانت کی، قوم کا وزیراعظم ایک ایک پائی کا امین ہے، امین نہ ہوتا تو کلنٹن سے 5ارب ڈالر لے لیتا اور دھماکے نہ کرتا، بدھ کے روز سیالکوٹ میں مسلم لیگ ن کے کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نواز شریف نے کہا کہ ہمیں لوٹ کر منی ٹریل بھی ہم سے پوچھتے ہیں، بھٹو نے ہماری فیکٹری تحویل میں لے لی تھی، ہمیں ایک ٹکہ بھی معاوضہ نہں دیا گیا، ہماری ایک فیکٹری بنگلادیش میں چلی گئی، انہوں نے کہا کہ آج میرا احتساب ہو رہا ہے کل کسی اور کا بھی ہوگا، ہمیں کون سے خزانے دے گئے تھے جو ہم لوٹ کر دبئی چلے گئے تھے، سرکاری پیسے کا کوئی احتساب کہیں ہو رہا، میرے خاندان کے ذاتی کاروبار کا احتساب ہو رہا ہے، امین نہ ہوتا تو امریکی صدر بن کلنٹن سے 5ارب ڈالر لے لیتا اور ایٹمی دھماکے نہ کرتا، 1972سے احتساب کیا جارہا ہے، جب نواز شریف بچہ تھا وزیراعظم نے کہا کہ مجھے پاکستان کو روشن کرنے کی فکر ہے، ملک سے اندھیرے چھٹ رہے ہیں، ہم نے ملک میں دہشتگردوں کی کمر توڑ دی ہے، منصوبوں میں ہم نے پاکستانی قوم کے پیسے بچائے ہیں، رکاوٹیں ڈالی جاتی تو آج پاکستان ترقی کی متنازل طے کرتا، عمران خان کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ٹانگیں نہ کھینچو اس لالچ میں کہ تم وزیراعظم بن جاؤ تمہیں عوام ووٹ ہی نہیں دیتی تو وزیراعظم کیسے بنو گئے، کبھی ادھر دھرنوں اور کبھی سازش کرتے ہوئے اقتدار حاصل کرنا چاہتے ہو، پاکستان کے عوام نے تمہیں بار بار مسترد کیا ہے2018ئ میں بھی مسترد کریں گے، تم ہر روز غیبت اور گالیاں دیتے ہو وزیراعظم نے ایک شعر بھی پڑھا۔کعبے کس منہ سے جاؤ گے غالب!شرم تم کو مگر نہیں آتی

Leave a Reply

Your email address will not be published.