شریف فیملی کا دفاع کرنےوالوں کو پاکستان کاوفاداربننے کا مشورہ

اسلام آباد جدت ویب ڈیسک تحریک انصاف کے رہنما فواد چودھری نے کہا ہے کہ سازش تلاش کرنے والے پہلے جے آئی ٹی رپورٹ پڑھ لیں ہلٹن میٹل کےلئے سرمایہ پاکستان سے گیا نواز شریف حکومت میں آئے تو اچانک اثاثے بڑھ گئے پرانی قانونی ٹیم کے انکار کے بعد شریف فیملی نئے وکیل ڈھونڈ رہی ہے شریف فیملی کا دفاع کرنے والے پہلے پاکستان کے وفاداربنیں۔ سینیٹر شبلی فراز کے ہمراہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پی ٹی آئی رہنما نے کہاکہ عدالت کوبتایا گیا کہ 2005 میں عزیزیہ مل فروخت کی گئی جس کی رقم 63.1 ملین سعودی ریال بنی جو حسین نواز کو ملی جبکہ عزیزیہ مل میں دیگر شراکت داروں کو کچھ بھی نہیں ملا اور جب جے آئی ٹی نے مل فروخت کرنے والی لافرم سے رابطہ کیا تو انہوں نے بھی تصدیق کی اور کہا کہ عزیزیہ مل سے ملنے والی رقم کے ذریعے ہلٹن میٹل کمپنی کھولی گئی جو جون 2005 میں ہی تیار گئی تھی اس کے لئے پیسہ بھی نوازشریف نے ہی پاکستان سے بھیجا تھا۔انہوں نے بتایا کہ ہلٹن میٹل 2007 تک ایک پیسہ بھی نہ بنا سکی لیکن 2008 میں پنجاب میں مسلم لیگâنá کے اقتدار میں آتے ہی کمپنی نے پیسے بنانا شروع کردیئے اور 2010 سے 2015 تک کمپنی نے نوازشریف کو ایک ارب سے زائد رقم گفٹ کی اوراسی رقم میں سے نوازشریف نے10 کروڑروپے اپنی جماعت کو دیئے اور بعد میں 4 کروڑ واپس لے لیے۔ 82 کروڑ روپے مریم نواز کو گفٹ کیے گئے اور وہ پیسے بھی مریم نواز نے دوبارہ نوازشریف کو گفٹ کردیئے۔پی ٹی آئی رہنما کا کہنا تھا کہ جے آئی ٹی نے اپنی رپورٹ میں انکشاف کیا ہے کہ حسن نواز13 کمپنیوں کے مالک ہیں جن میں سے 9 کمپنیاں نقصان میں ہیں اور ان نقصان ذدہ کمپنیوں کو عرب امارات میں واقع ایف زیڈ ای کیپیٹل نامی کمپنی سے پیسے بھیجے جارہے ہیں جس کے چئیرمین نوازشریف ہیں۔فواد چوہدری نے بتایا کہ نوازشریف نے 1990 میں جب اقتدار سنبھالا تو اس وقت ان کے اثاثے 7.53 ملین تھے جو بعد میں 32.15 ملین تک جاپہنچے سوال یہ ہے کہ شریف برادران جب بھی اقتدار میں آئے ان کا کاروبار کئی گنا کیسے بڑھ جاتا ہے 2009 میں شریف فیملی کےاثاثے اچانک بڑھنے شروع ہوگئے شریف برادارن نے اپنی بلیک منی کو وائٹ کرنے کے لئے مسلم لیگâنá کا استعمال کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ اب حقیقت سب کے سامنے آچکی ہے اور شریف خاندان بھی نئے وکلا کی تلاش میں ہے کیوں کہ ان کی پرانی قانونی ٹیم نے مزید کارروائی میں اپنی دستیابی سے انکار کردیا ہے اسی وجہ سے âنá لیگ کی جانب سے جے آئی ٹی پر تاحال اعتراضات نہیں اٹھائے جاسکے۔انہوں نے کہا کہ شریف فیملی کا دفاع کرنے والے وزرا تسلی سے جے آئی ٹی رپورٹ پڑھیں اور پھر اس پر بات کریں دانیال عزیز جیسے اسکول ماسٹر جو پوری کلاس کو فیل کراتے ہیں ایسے لوگ پوریâنá لیگ کو گائیڈ کررہے ہیں۔ اب آئندہ ہفتے میں حکومتی جماعت کو بھی پتہ چل جائے گا کہ کسی ایک شخصیت کی اندھی پوجا کے بجائے قیادت کو تبدیل کرنا ہی ان کے مستقبل کے لئے بہتر ہوگاانہوں نے یہ دعویٰ کیا کہ اب شریف فیملی نئے وکیل ڈھونڈ رہی ہے کیونکہ پرانی قانونی ٹیم نے انکار کردیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن کے سمجھدارلوگ استعفے کی بات کرناشروع ہوگئے ہیں ¾یقین ہے مسلم لیگ âن áخود کونوازشریف سے فاصلے پررکھے گی۔فواد چوہدری نے کہاکہ ملک کے وسائل کو بے دردی سے لوٹا جارہا ہے ¾سپریم کورٹ کے فیصلے پر مسلم لیگâنá کے وزرا نے مٹھائیاں بانٹیں اور اب جے آئی ٹی کے خلاف سازشیں کی جارہی ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.