PPP

پاکستان میں جمہوریت اوراسٹیبلشمنٹ دونوں ضروری ہیں‘آصف زرداری

کراچی جدت ویب ڈیسک سابق صدر آصف علی زرداری نے کہاہے کہ پاکستان میں جمہوریت اوراسٹیبلشمنٹ دونوں ضروری ہےں‘نواز شریف اپنا کاروبار چمکا رہے ہیں ،موجودہ حکومت عدلیہ اور فوج کو کمزور کررہے ہیں،بھٹو کے نظریات اب سمجھ میں آرہے ہیں،ہم 50سال سے ایک نظریہ پر قائم ہےں،بھٹو صاحب جمہوری عسکری قیادت کو ساتھ لے کر چلے ۔ایران وسائل سے مالا مال ملک ہے‘ایک سوال کے جواب میں آصف زرداری نے کہا کہ ایران وسائل سے مالا مال ملک ہے ۔ایران پر پہلے بھی پابندیاں لگیں ‘ ایران کو پابندیوں سے کوئی فرق نہیں پڑتاایران کے حوالے سے کانگریس کا ایک ووٹ ٹرمپ کا فیصلہ بدل دے دیا روس اور یورپ کی سرحدیں ملتی ہیں‘آپس میں اتحاد بن سکتا ہے،آصف علی زرداری نے کہا کہ عراق پھر خانہ جنگی کی طرف جارہا ہے انہوں نے کہا کہ کچھ لوگ سمجھتے ہیں کہ داعش کے پیچھے بیرونی طاقتیں ہیںایک سوال کے جواب میں انہوں نے روٹی کپڑا اور مکان کے سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ہم نے اپنے دور میں خورونوش کی قمیتیں کم کی ہیں اور پی پی کے دور میں روزگار کے موقع پیدا کئے‘بے نظیر انکم سپورٹ کارڈ کو منشور میں شامل کیا۔پنجاب میں پیپلزپارٹی کی ناکامی کے سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ پنجاب میں برادری ایزم کے بعد الیکشن کے ریزلٹ پر فرق پڑا لیکن انہوں نے کہا کہ ہمارے عزم جواں ہیں جہاں پارٹی کمزور ہوئی ہے وہاں کام کررہے ہیں لوگوں سے ملیں گیں اور اپنا کھویا ہوا مقام واپس حاصل کریں گے۔آصف زرداری نے کہا کہ ہم الیکشن سے 6ماہ قبل منشور دیں گے ہماری منشور ساز کمیٹی اپنا کام کررہی ہے تمام صوبوں ہمارے نظریہ کے ساتھ ہے ‘پچھلے الیکشن کے ریزلٹ کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ الیکشن کے دن ہمارے وزیراعظم کے بیٹے کو اغوائ کیا گیا یوسف رضا گیلانی کے بیٹے کو افغانستان سے بازیاب کیا گیا۔انتہائ پسندی کو شکست دینے کے لئے وقت چاہئے۔دو چار سال میں یہ مسئلہ حل نہیں ہوسکتا۔ہماری ہمیشہ سے خواہش تھی کہ فاٹا کو خےبرپختونخواہ کا حصہ بنایاجائے ہم نے فاٹا کے 61قوانین بدلے۔فاٹا کو خیبرپختونخواہ میں شامل کرنا خوش آئند ہے اور وہاں کے لوگوں کی محرومیاں کم کرے گا۔

 

Leave a Reply

Your email address will not be published.