PTI

عمران خان کی حکومت پر گولہ باری‘ آصف زرداری کو بھی ۔۔۔

اسلام آباد جدت ویب ڈیسک پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے کہا ہے کہ ا قتدار میں آکر اپنی ذات کےلئے پیسے بنانا کرپشن ہے‘ بمبینو سینما کے باہر ٹکٹ بیچنے والے آصف زرداری کے اربوں روپے باہر پڑے ہیں ¾سسٹم ٹھیک نہیں ہورہاہے‘ طاقتور اپنے آپ کو قانون سے بالا تر سمجھتا ہے‘ ریاست شریف خاندان کو بچا رہی ہے پاکستان میں قائداعظم کو ہی لیڈر مانتا ہوں لگ رہا ہے اب ہمیں آخری بار سڑکوں پر نکلنا پڑے گا موجودہ حکمرانوں نے ہماری عدلیہ کو بدنام کیا تو اتنے لوگ اسلام آباد کی سڑکوں پر نکل آئیں گے کہ کھڑے ہونے کی جگہ نہیں ملے گی ۔پارٹی ورکرز کنونشن سے خطاب کے دور ان عمران خان نے وزیر داخلہ احسن اقبال کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ انہوں نے ضیائ الحق کے مارشل لائ میں اپنا کیریئر شروع کیا ۔عمران خان نے کہاکہ فوج قربانیاں دے رہی ہے اوریہ اسے بدنام کررہے ہیں، یہ ہماری فوج ہے پاکستان کی فوج ہے ¾میں اپنی فوج کے ساتھ کھڑا ہوں۔پی ٹی آئی سربراہ نے کہا کہ فوج کہہ چکی ہے کہ وہ آئین کے ساتھ کھڑی ہے۔انہوں نے کہا کہ آصف زرداری کو کرپشن کی فکر پڑگئی ہے یہ قیامت کی نشانی ہے۔عمران خان نے کہا کہ ایک طرح کی سیاست وہ ہے جس نے پاکستان کویہاں تک پہنچادیا ہے،آج پاکستان کو ایک نئی سیاست کی ضرورت ہے۔عمران خان نے کہا کہ اقتدار میں آکر اپنی ذات کےلئے پیسے بنانا کرپشن ہے، کرپٹ لوگوں کی وجہ سے ملک میں غربت ہے۔عمران خان نے کہا کہ بمبینو سینما کے باہر ٹکٹ بیچنے والے آصف زرداری کے اربوں روپے باہر پڑے ہیں، لوگوں نے اپنی ذات کےلئے پاکستان کوآگے بڑھنے نہیں دیا، سسٹم اس لیے ٹھیک نہیں ہورہا کیوں کہ اوپر زرداری اور شریف بیٹھے ہیں، طاقتور اپنے آپ کو قانون سے بالاتر سمجھتا ہے۔عمران خان نے کہا کہ نوازشریف کہتے ہیں کہ انہیں کیوں نکالا، 3سوارب روپے کی چوری کرکے عدالت ایسے آتے ہیں جیسے کشمیر فتح کرکے آئے ہوں ¾ شریف خاندان کو اس کا جواب دینا ہے۔عمران خان نے کہا کہ شریف خاندان کی کوشش ہے کہ ان پرفرد جرم عائد نہ ہو، ریاست شریف خاندان کوبچارہی ہے۔عمران خان نے کہا کہ فوج کو برا بھلا کہنے کا مقصد یہ ہے کہ شریف مافیا منی لانڈرنگ کی سزا سے بچ جائے، جے آئی ٹی میں صحیح کام کرنے پر فوج کو برا بھلا کہا جارہا ہے، شریف برادران جمہوریت کو پٹری سے اتارنے کی پوری کوشش کررہے ہیں، حالانکہ عدلیہ کا فیصلہ نہ ماننے سے جمہوریت خود بخود ڈی ریل ہوگئی اور نظام انتشار کی طرف جارہا ہے۔انہوں نے کہا کہ سارے اداروں پر کرپٹ لوگ بٹھادیے گئے ہیں،ادارے ٹھیک کیسے ہوں گے، کوئی راکٹ سائنس نہیں، اچھے لوگ تعینات کریں۔انہوںنے کہاکہ دنیا میں ہمارے پاسپورٹ کی عزت نہیں کرتا کیوں کہ آج ہم مقروض ہیں۔عمران خان نے کہا کہ پی ٹی آئی میں اوپر وہ آئیں گے جو بڑی سوچ رکھ کر ملک کا سوچیں گے۔انہوں نے کہا کہ قائد اعظم کی جدوجہد اپنی ذات کیلئے نہیں قوم کیلئے تھی، میں پاکستان میں قائد اعظم کوہی لیڈر مانتا ہوں۔عمران خان نے کہا کہ مجھے لگ رہا ہے کہ ہمیں اب آخری بار سڑکوں پر نکلنا پڑے گا، ہمیں دھرنے اور آنسو گیس کا پورا تجربہ ہے، ہماری خواتین کارکن âن áلیگ کے مردوں سے زیادہ تجربہ کار ہیں، پورے ملک کو تیار کر رہا ہوں، جس دن یہ دیکھا کہ انہوں نے ہماری عدلیہ کو بدنام کیا تو اتنے لوگ اسلام آباد کی سڑکوں پر نکل آئیں گے کہ کھڑے ہونے کی جگہ نہیں ملے گی۔عمران خان نے کہاکہ نائن الیون کے بعد سے ہم غیرملکیوں کی مدد کررہے ہیں جب کہ بیرون ملک بے قصور پاکستانیوں کو قتل کیا گیا ¾جیلوں میں ڈال دیا گیا اور تشدد کا نشانہ بنایا گیا، ماضی میں پاکستان کی عزت تھی جو آج ختم ہوگئی ہے ¾سیاست دانوں نے پاکستان کو اس حال پر پہنچایا، اقتدار میں آکر اپنی ذات کےلئے پیسہ بنانا کرپشن ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.