تجربہ کامیاب ،پاکستان میں عجوہ کھجوروں کے پانچ ہزار درختوں نے پھل دینا شروع کر دیا

جدت ویب ڈیسک ::پاکستان میں بھی اب دنیا کی نایاب کھجوروں امبر، عجوا، خلاص اور برہی جیسی اعلیٰ اقسام کی پیداوار ہو گی، ادھر کسانوں نے بھی پنجاب حکومت کی جانب سے کھجوروں کے پودوں کی مفت فراہمی کو خوش آئند قرار دیا ۔ کھجور کی عالمی مارکیٹ میں پاکستان کا ساتواں نمبر ہے ۔ کھجوروں کی نئی اقسام کی کاشت سے ایکسپورٹ میں اضافہ ہو گا اور پاکستان بہت جلد پہلے تین ممالک کی صف میں بھی شامل ہو جائے گا ۔ ۔ بیرون ممالک سے اٹھہتر کروڑ روپے کے منگوائے گئے کھجوروں کے پودے کسانوں میں مفت تقسیم کئے گئے ۔ بہاولپور میں تجرباتی طور پر لگائے گئے پانچ ہزار پودوں نے پھل دینا بھی شروع کر دیا ۔ آپ نے پھل تو بڑے کھائے ہوں گے لیکن جو لطف کھجور میں ہے وہ کسی اور پھل میں نہیں ۔ کھجور نہ صرف لذت اور ذائقے میں بےمثال ہے بلکہ انتہائی قوت بخش خوراک بھی ہے اور اگر امبر، عجوا، خلاص اور برہی اقسام کی نایاب کھجور ہو تو کیا ہی کہنے ۔ حکومت پنجاب نے کھجور کی پیداوار بڑھانے کیلئے انقلابی قدم اٹھایا ہے اور ملکی تاریخ میں پہلی بار اعلیٰ اقسام کی کھجوروں کے پچاس ہزار سے زائد پودے بھاری رقم کے عوض بیرون ممالک سے منگوا کر دس اضلاع کے کسانوں میں مفت تقسیم کئے ۔ محکمہ زراعت کے ریسرچ ڈائریکٹر خالد اشفاق نے کہا کہ کھجوروں کی فصل کو کسانوں میں عام کرنے کا مقصد روایتی فصلوں کے علاوہ دیگر اجناس سے بھی فائدہ اٹھانا ہے، جن کی مانگ دنیا بھر میں پائی جاتی ہے ۔ ادھر محکمہ زراعت کے اسسٹنٹ ڈائریکٹر نوید عصمت کاہلوں نے کہا کہ روایتی فصلوں کی جگہ دوسری فصلیں کاشت کرنے سے زمین کی طاقت میں بھی اضافہ ہوتا ہے ۔ کھجوروں کے پودوں کی تقسیم کا مقصد کسانوں کو متبادل ذرائع آمدن کی طرف راغب کرنا بھی ہے، تاکہ ملکی زرمبادلہ میں اضافے کے ساتھ ساتھ کسانوں کو زیادہ منافع مل سکے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.