مریم نواز اورکیپٹن ریٹائرڈ صفدر پرفرد جرم عائد کیے جانے کا امکان

اسلام آبادجدت ویب ڈیسک :: مریم نواز اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر احتساب عدالت پہنچ گئے جہاں ان پر فرد جرم عائد کیے جانے کا امکان ہے۔تفصیلات کے مطابق نااہل وزیراعظم نوازشریف، مریم نواز اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کے خلاف احتساب عدالت کے جج محمد بشیر کررہے ہیں جبکہ آج نوازشریف ان کی بیٹی اور داماد پرفرد جرم عائد ہونے کا امکان ہے۔نوازشریف اپنی اہلیہ کلثوم نواز کی علالت کےباعث لندن میں موجود ہیں، نیب قوانین کی شق 17 سی کے مطابق ان کی عدم موجودگی کے باوجود بھی ان پرفرد جرم عائد کی جاسکتی ہے۔درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ گواہوں کے بیانات کی کاپی بھی فراہم نہیں کی گئی، بیانات اوروالیم 10 کی کاپی کی فراہمی تک فرد جرم عائد نہیں ہوسکتی۔احتساب عدالت میں مریم نواز اور کیپٹن صفدر کے وکیل امجد پرویز ایڈووکیٹ کی فرد جرم نہ عائد کرنےکی درخواست کی جس میں کہا گیا کہ ابھی تک والیم 10 کی کاپی فراہم نہیں کی گئی۔ڈپٹی پراسیکیوٹر نیب نے کہا کہ جن کے بیانات ریکارڈ کیے وہ استغاثہ کے گواہوں کی فہرست میں نہیں ہے انہوں نے کہا کہ دیکھنا ہے کہ جن 3 افراد کے بیان کا ذکر کیا انہیں ملزم بنانا ہے یا گواہ بنانا ہے۔احتساب عدالت نے امجد پرویزایڈووکیٹ کی درخواست پر فیصلہ محفوظ کرلیا

 

Leave a Reply

Your email address will not be published.