Muhammad Safdar Awan · ‎Kulsoom Nawaz Sharif · ‎Marriyum Aurangzeb

نواز شریف کا رویہ تلخ نہیں ملک کی سمت درست کرنے کےلئے تلخ حقیقت بیان کرنا پڑتی ہے ‘ مریم نوازکی گرج

لاہور جدت ویب ڈیسک پاکستان مسلم لیگ ن کی مرکزی رہنما مریم نواز نے کہا ہے کہ نواز شریف کا رویہ بالکل بھی تلخ نہیں ہے ، اگر وہ اتنی دیر چپ رہے ہیں اور اب بول رہے ہیں تو سننے کا حوصلہ رکھنا چاہیے ،ملک کی سمت درست کرنے کے لئے تلخ حقیقت بیان کرنی پڑتی ہے ، نواز شریف آج بدھ کو لندن روانہ ہو رہے ہیں اور مجھے بھی جیسے ہی فراغت ملے گی والدہ کی تیماری دادری کے لئے روانہ ہو جائوں گی ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے داتا دربار پر حاضری کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ مریم نواز نے دربار پر چادر چڑھائی اور اپنی والدہ کی جلد صحتیابی اور این اے 120کے ضمنی انتخاب میں کامیابی کےلئے دعا کی ۔اس موقع پر صوبائی وزیر بلال یاسین ،سیف الملوک کھوکھر، علی ایاز صادق سمیت کارکنوں کی کثیر تعداد بھی موجود تھی ۔ مریم نواز نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ زندگی میں اتار چڑھائو آتے ہیں لیکن اللہ تعالیٰ کی ذات پر کامل یقین ہے اور یہ وقت بھی گزر جائے گا اور اللہ تعالیٰ فتح عطا فرمائے گا۔ میں یہ نہیں کہوں گی کہ برا وقت ہے کیونکہ اللہ تعالیٰ نے جس حال میں بھی رکھا بڑا چھا رکھا اور آئندہ بھی بہت اچھے کی امید ہے ۔انہوںنے والدہ کی عیادت کے لئے لندن روانگی کے حوالے سے سوال کے جواب میں کہا کہ یہ میری والدہ کی انتخابی مہم ہے اور اس کی ذمہ داری میرے حصے میں آئی ہے اور مجھے اسے نبھانا ہے ۔نواز شریف آج بدھ کو لندن جارہے ہیں وہ ہم سب کی نمائندگی کریں گے جیسے ہی فراغت ہو گی میں بھی لندن جائوں گی ۔میری اپنی والدہ سے روز بات ہوتی ہے دعا ہے کہ اللہ تعالیٰ انہیں جلد صحت عطا کرے ۔ انہوںنے سابق وزیر اعظم نواز شریف کا اداروں سے متعلق رویہ تلخ ہونے کے حوالے سے سوال کے جواب میں کہا کہ تلخ کہنا مناسب نہیں ہے ۔وہ اتنی دیر چپ رہے ہیں اور اگر اب بول رہے ہیں تو سننے کا حوصلہ رکھنا چاہیے ۔ ان کا رویہ بالکل بھی تلخ نہیںہے ۔سچائی اگر تلخ لگتی ہے تو کئی مرتبہ سچائیاں اور تلخ حقیقت بیان کرنی پڑتی ہے۔ ملک کی سمت درست کرنے کے لئے آپ کو تلخ حقیت بھی بیان کرنی پڑتی ہے۔ نواز شریف جب بات کرتے ہیں دنیا انہیں سنتی ہے وہ جو بات کرتے ہیں ملک کے لئے کرتے ہیں اس لئے دنیا انہیں سنتی ہے او رانہیں سننا چاہیے ۔قبل ازیں مریم نواز شریف ریلی کی صورت میں جاتی امرائ رائے ونڈ سے روانہ ہوئیں تو اس موقع پر کارکنوں کی ایک بڑی ان کے ہمراہ تھی جو سارے راستے اپنی قیادت کے حق میں نعرے لگاتے رہے ۔پولیس کی طرف سے اس موقع پر سکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کئے گئے تھے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.