لاہور سیشن کورٹ میں سماعت کے دوران فائرنگ دونوں وکیل دم توڑ گئے

جدت ویب ڈیسک ::لاہور سیشن کورٹ میں سماعت کے دورانفائرنگ دونوں وکیل دم توڑ گئے، اندر اسلحہ کون لایا یہ پتا لگا جارہا ہے لاہور کی سیشن کورٹ میں ناقص سکیورٹی کا پول ایک بار پھر کھل گیا ۔ ایڈیشنل سیشن جج عبدالرحمان توثیر کی عدالت کے باہر دو گروپوں کے درمیان فائرنگ کے تبادلے سے دو وکلاء جاں بحق ہو گئے ۔ وکلا جائیداد کے تنازع کیس کی سماعت کے بعد عدالت سے باہر آئے تھے ۔ تفصیلات کے مطابق ایک گروپ کی فائرنگ سے رانا ندیم اور اس کا کزن اویس طالب ایڈووکیٹ جاں بحق ہو گیا ۔ پولیس نے فائرنگ کے ملزم کاشف راجپوت ایڈووکیٹ کو گرفتار کر لیا ۔ وزیر اعلیٰ پنجاب شہبازشریف نے فوری نوٹس لیتے ہوئے سی سی پی او لاہور سے رپورٹ طلب کر لی اور چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ نے بھی رجسٹرار سے رپورٹ طلب کر لی ۔ سیشن کورٹ میں ناقص سکیورٹی پر وکلا اور سائلین نے مایوسی کا اظہار کیا ۔ سیشن کورٹ میں ایک ماہ کے دوران فائرنگ کا یہ دوسرا واقعہ ہے ۔ پہلے واقعہ میں فائرنگ سے ایک پولیس اہلکار اورملزم جاں بحق ہو گیا تھا ۔فائرنگ کے نتیجے میں سیشن کورٹ کے داخلی اور خارجی راستے بند کر دیئے گئے اور کیسز کی سماعت روک دی گئی ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.