Karachi

حضرت عبداللہ شاہ غازیؒ کے عرس پر سیکیورٹی سخت رکھی جائے ، آئی جی سندھ

کراچی جدت ویب ڈیسک آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ نے پولیس کو ہدایات جاری کی ہیں کہ حضرت عبداللہ شاہ غازی کے تین روزہ عرس کی تقریبات کے موقع پر سیکیورٹی کے غیر معمولی اقدامات کو یقینی بنایا جائے ۔انہوں نے کہا کہ ضلعی پولیس سیکیورٹی پلان کے تحت انٹیلی جینس کلیکشن وشیئرنگ ، پیٹرولنگ ، اسنیپ چیکنگ ، پکٹنگ ، ریکی ، نگرانی، ناکہ بندی ، سرچنگ اور ٹارگیٹڈ آپریشنز جیسے اقدامات کو مذید سخت مربوط اور غیر معمولی بنایا جائے تاکہ امن وامان کے حالات پر کنٹرول, شہریوں کی جان ومال کی سلامتی سمیت دہشت گردوں ودیگر سنگین جرائم میں ملوث عناصر کو قانون کی گرفت میں لاتے ہوئے ہر ممکن انسدادی اقدامات کو یقینی بنایا جاسکے ۔انہوں نے کہا کہ عرس کی تقریبات میں ملک کے دیگر صوبوں سے زائرین وعقیدت مندوں کی شرکت کے پیش نظر سندھ کے داخلی وخارجی راستوں اور مرکزی وذیلی شاہراہوں پر متعلقہ تھانوں کے لحاظ سے سیکیورٹی کو ناصرف غیر معمولی بنایا جائے بلکہ محفوظ سفر کے ضمن میں بھی ہر ممکن اقدامات اٹھائے جائیں۔انہوں نے تمام ڈی آئی جیز کو ہدایات جاری کیں کہ پولیس چیک پوسٹس, چوکیوں اور ناکوں پر سرچنگ, کڑی نگاہ رکھنے سمیت تمام تر لاجسٹک سپورٹ کی فراہمی کو بھی یقینی بنایا جائے جبکہ پولیس کنٹرول ñوائرلیس بیسز کے مجموعی امور کو انتہائی ٹھوس بنایا جائے تاکہ اطلاعات کی شیئرنگ اور کم سے کم وقت میں پولیس ریسپانس کی بدولت تمام تر انسدادی اقدامات کو بروقت ممکن بنایا جاسکے ۔انہوں نے کہا کہ تمام مساجد, امام بارگاہوں, مزارات, اقلیتی برادری کے مذہبی مقامات, پبلک مقامات سرکاری ونجی اسکولوں ، کالجوں ، جامعات ، اسپتالوں ، اہم عمارتوں وغیرہ پر کی گئی پولیس ڈپلائمنٹ کو ناصرف سیکیورٹی بریفنگ بلکہ متعلقہ ایس ایچ اوز کی علاقوں میں موجودگی اور گشت کے عمل کو بھی یقینی بنایا جائے۔ترجمان سندھ پولیس نے دفتر سے جاری اعلامئے میں عوام سے کہا ہے کہ کسی بھی مقام پر کوئی مشکوک گاڑی ، پارسل ، بیگ ، تھیلا ، بریف کیس وغیرہ یا مشتبہ شخص یا حرکات دکھائی دینے پر فوری اطلاع مددگار 15 ، ڈی آئی جیز ، ایس ایس پیز ، ایس ڈی پی اوز دفاتر ، قریبی تھانوں ، گشت پر مامور پولیس موبائلز ، موٹرسائیکل سوار افسران جوانوں یا پکٹنگ فرائض پر تعینات علاقہ پولیس کے افسران اور جوانوں کو دیں ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.