بھارتی حکمران ’این آئی اے‘ کو بطور ہتھیار استعمال کر رہے ہیں‘یاسین ملک

سرینگر جدت ویب ڈیسک مقبوضہ کشمیر میں جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ کے چیئرمین محمد یاسین ملک نے کہا ہے کہ بھارتی حکمران اور مقبوضہ علاقے میں ان کے کٹھ پتلی کشمیریوں کی تحریک آزادی کو کچلنے کے لیے’ این آئی اے‘ کوایک ہتھیار کے طور پر استعمال کررہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ بھارتی تحقیقاتی ادارہ حریت رہنمائوں ، کشمیری تاجروں کو نئی دلی طلب کر کے انہیں اعصابی تشدد سے گزار رہا ہے ۔ میڈیارپورٹ کے مطابق محمد یاسین ملک نے سرینگر میں جاری ایک بیان میں این آئی اے کی طرف سے پارٹی رہنما نورمحمد کلوال کو پوچھ تاچھ کے لیے نئی دلی طلب کرنے کے اقدام پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ نور محمد کلوال ایک سیاسی و مزاحمتی رہنما ہیں جن کی سماجی اور سیاسی زندگی کھلی کتاب کی مانند ہے۔انہوںنے کہا کہ نور محمد کلوال انتہائی سادہ زندگی بسر کرنے والے انسان ہیں جن کی دیانت،شرافت،سادگی،بے غرضی اور پرامن مزاحمت کے ساتھ گہری وابستگی کے سبھی لوگ معترف ہیں۔یاسین ملک نے کہا کہ بھارتی حکمران چاہتے ہیں کہ کشمیری مزاحمتی قائدین اور پوری تحریک آزادی کو داغدار کیا جائے اور اسکے لیے میڈیا کا بھی بھر پور استعمال کیا جا رہا ہے لیکن انہیں ناکامی کے سوا کچھ نہیں ملے گا۔ محمد یاسین ملک نے کہا کہ لاکھوں افراد کی قربانیاں کشمیریوں کے لیے ایک مقدس امانت کی حیثیت رکھتی ہیں اور وہ ان قربانیوں کی ہر قیمت پر حفاظت کریں گے۔ انہوںنے کہا کہ بھارت کی یہ غلط فہمی ہے کہ وہ اوچھے ہتھکنڈوں کے ذریعے کشمیریوں کے جذبہ آزادی کو دبا سکے گا۔ بھارتی تحقیقاتی ادارے ’ نیشنل انویسٹی گیشن ایجنسی‘نے نور محمد کلوال کو 28اگست بروز پیر کو پوچھ تاچھ کے لیے نئی دلی بلا لیا ہے ۔

 

Leave a Reply

Your email address will not be published.