نئی پابندیاں : امریکی فوجی اڈوں کو نشانہ بنائینگے ، ایران کی دھمکی

تہران جدت ویب ڈیسک ایرانی فوج کے سپہ سالار جنرل محمد علی جعفری نے دھمکی دی ہے کہ اگر امریکا نے ان کے خلاف نئی پابندیاں عاید کی تو وہ امریکی فوجی اڈوں کو حملوں کا نشانہ بنا سکتے ہیں۔پاسداران انقلاب کو دہشت گردوں کی فہرست میں شامل کرنا امریکا کی بہت بری غلطی ہوگی اور اسے اس کا خمیازہ بھگتنا ہوگا۔ غےر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق ایرانی جنرل کا کہنا تھا کہ اگر امریکا ایران کے عسکری اداروں پر نئی پابندیاں عاید کررہا ہے تو وہ اپنے فوجی اڈے ایران سے ایک ہزار کلو میٹر دور کردے امریکا کو یہ معلوم ہونا چاہیے کہ نئی اقتصادی پابندیوں کی حماقت کے نتیجے میں اسے کیا قیمت چکانا ہوگی۔ پاسداران انقلاب کو دہشت گردوں کی فہرست میں شامل کرنا امریکا کی بہت بری غلطی ہوگی اور اسے اس کا خمیازہ بھگتنا ہوگا۔خیال رہے کہ ایران کے بیلسٹک میزائل تجربات کے تسلسل اور پاسداران انقلاب کی خطے میں دہشت گردی کی کارروائیوں پر امریکا نے تہران کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔ امریکا نے الزام عاید کیا ہے کہ ایران مشرق وسطیٰ میں امن وامان کی مساعی کو تباہ کرنے سازشیں جاری رکھے ہوئے ہے۔امریکا کی ان دھمکیوں کے جواب میں پاسداران انقلاب کے چیف کا کہنا ہے کہ ان کا فوجی ادارہ بیلسٹک میزائلوں کی تیاری کا سلسلہ جاری رکھے گا۔ انہی میزائلوں سے ایک ماہ قبل شام کے دیر الزور شہر میں حملہ کیا گیا تھا۔ خیال رہے کہ امریکا کی طرف سے ایران پر نئی اقتصادی پابندیوں کے جواب میں ایرانی صدر حسن روحانی اور وزیرخارجہ جواد ظریف نے سخت برہمی کا اظہار کیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.