بھارتی حکومت اپنا تھوکا چاٹنے پر مجبور ہوگئی، مزید پڑھیے

جدت ویب ڈیسک ۔ بھارتی میڈیا کے مطابق اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ کشمیریت کی اکثریت امن کی طرفدار ہے لیکن کچھ مٹھی امن دشمن عناصر اکثریت کی خواہش رکھنے والوں کو یرغمال بنائے ہوئے ہیں اور اس کی اجازت نہیں دی جائے گی ۔انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم کا بیان کشمیر کی اکثریت کے لئے ایک واضح پیغام ہے کہ کشمیریون کو گلے سے لگانے کے لئے بھاجپا کی حکومت تیار ہے انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم نے واضح کر دیا ہے کہ تشدد کا کوئی حامی نہیں ہے لہذا ملک میں کسی طرح کا تشدد کیوں نہ ہو وہ کسی صورت قبول نہیں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ امن کے لئے کشمیر کے تمام طبقوں سے بات چیت ہو سکتی ہے ۔ ۔بھارتی وزیر داخلہ راجناتھ نے کہا ہے کہ وزیر اعظم نے کشمیر سے متعلق دل کو چھولینے والا بیان دیاہے کہ حکومت گولی اور گالی کے بجائے پرامن مذاکرات میں ہی یقین رکھتی ہے

Leave a Reply

Your email address will not be published.