آشیانہ اقبال اسکینڈل میں فواد حسن فواد نیب کے سوالوں کے جواب نہ دےسکے

جدت ویب ڈیسک ::وزیر اعظم کے پرنسپل سیکرٹری فواد حسن فواد نے آشیانہ اقبال اسکینڈل میں نیب لاہور کی تفتیشی ٹیم کے سامنے بیان ریکارڈ کرا دیا ۔ ذرائع کے مطابق فواد حسن فواد نے مبینہ طور پر لطیف اینڈ کو کمپنی کا لائسنس منسوخ کر کے ساکا اینڈ کمپنی کو دلوایا ۔ تین ہزار کنال کی آشیانہ اقبال ہاؤسنگ میں ایک ہزار کنال پر 1365 فلیٹ بنے اور باقی 2 ہزار کنال تعمیراتی اخراجات کی مد میں کمپنی کو دیدی گئی ۔ دوسری جانب نیب لاہور نے سابق ڈی جی لاہور ڈیولپمنٹ اتھارٹی احد چیمہ کو بھی جمعے کے روز 3 بجے سہ پہر پیش ہونے کی ہدایت کی ہے ۔فواد حسین فواد نے بطور سیکرٹری ٹو سی ایم پنجاب ، حکومت کی من پسند کمپنی کو پراجیکٹ کا ٹھیکہ دلوانے میں کردار ادا کیا تھا ۔ اس کام کے لیے انہوں نے مبینہ طور پر وزیرِ اعلیٰ پنجاب شہباز شریف کے احکامات کے مطابق ایک کمپنی کا ٹھیکہ منسوخ کروا دیا تھا ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.