CM SINDH

حالیہ دہشت گردی کی لہر چیلنج ہے ،مراد علی شاہ کا تقریب سے خطاب

کراچی جدت ویب ڈیسک وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ پاک فضائیہ نے 1965 کی جنگ میں بہادری کی تاریخ رقم کی، پی اے ایف ہیروز آج بھی ہماری دلوں میں زندہ ہیں جبکہ حالیہ دہشت گردی کی لہر ہمارے لیے ایک چیلنج ہے۔بدھ کو یوم دفاع پاکستان کے موقع پرشہدا کوخراج تحسین پیش کرنے کیلئے پاک فضائیہ کی مسرور بیس پر پروقار تقریب کا انعقاد کیاگیا۔تقریب میں وزیر اعلی سندھ کے پہنچنے پر ایئر وائس مارشل محمد حسیب پراچہ نے استقبال کیا، تقریب میں میئر کراچی وسیم اختر، آرمی، ایئر فورس کے افسران اور سویلین نے بھی شرکت کی۔تقریب کا آغاز تلاوت قرآن پاک سے ہوا،اس کے بعد قومی ترانا پیش کیا گیا جبکہ پاکستان ایئر فورس اسکول کے بچوں نے ایئرفورس کے شہدا کو خراج تحسین دینے کی لیے قومی نغمے پیش کیے۔وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاک فضائیہ نے تمام آپریشنز میں اہم کردار ادا کیا۔ پی اے ایف نے لاہور کا بہادری سے دفاع کیا۔تقریب کے دوران وزیراعلی سندھ نے مختلف اسٹال کا دورہ کیا،جہاں انہیں مختلف اشیا کے بارے میں بتایا گیا۔تقریب کے بعد انہوں نے میڈیا سے گفتگو کی۔ انہوں نے آلائشیں اٹھانے سے متعلق سوال پر کہا کہ آلائشوں کو پہلے دن ہی اٹھالینا چاہیے تھا لیکن ایسا نہیں ہوسکا، صفائی سے متعلق کوشش کریں گے کہ آئندہ شکایات نہ ہوں۔علاوہ ازیں وزیراعلی ہاوس کراچی میں مراد علی شاہ کی زیرصدارت اجلاس ہوا جس میں ان کا کہنا تھا کہ یہ بات واضح ہے کہ ہمیں مردم شماری پر تحفظات ہیں جب کہ عوام کو بھی نتائج پر اعتماد نہیں۔انہوں نے کہا کہ بلاکس کی تفصیلات سندھ حکومت کو دی جائیں تاکہ کاونٹر چیک ہوں، مردم شماری میں جامشورو کو 40 فیصد شہری دکھایا گیا ہے۔وزیراعلی سندھ نے کہا کہ آئینی طور پرانتخابات نئی مردم شماری کے حساب سے ہوتے ہیں، اس کے لیے آئین میں ترمیم کرنا پڑے گی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.