عامر لیاقت نے بول ٹی وی کیوں چھوڑا؟جانیے

جدت ویب ڈیسک :جلد ہی ہم ٹی وی کا نیوز چینل آرہاہے اورعامر لیاقت نےاسکی بھاگ ڈور سنبھالی ہے معروف مذہبی سکالر اور اینکر ڈاکٹر عامر لیاقت نے بول نیوز نیٹ ورک پر اپنے آخری پروگرام میں اس چینل کو چھوڑنے کا اعلان کیا تو ہر کوئی حیران رہ گیا اور ساتھ ہی یہ سوال بھی پیدا ہوا کہ اب وہ کس چینل کو رونق بخشیں گے۔ان کا استعفیٰ ایک ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب ملک میں ایک نیا نیوز چینل بنانے کا اعلان ہوا ہے۔ یہ اعلان ہم نیٹ ورک نے کیا ہے اور اب یہ کہا جا رہا ہے کہ ڈاکٹر عامر لیاقت نے اسی چینل کو جوائن کرنے کیلئے بول نیٹ ورک کو خیرباد کہا ہے تاہم چینل اور ڈاکٹر عامر لیاقت کی جانب سے تاحال کوئی اعلان نہیں کیا گیا۔معروف مذہبی سکالر اور اینکرپرسن ڈاکٹر عامر لیاقت نے بول ٹی وی کو خیرباد کہہ دیا ہے لیکن تاحال اس کی وجہ سامنے نہیں آئی تھی اور لوگ یہ جاننا چاہ رہے تھے کہ آخر ایسی کیا وجہ بنی تاہم اب ان کے آخری پروگرام کا ایک ایسا حصہ منظرعام پر آ گیا ہے جس سے یہ اندازہ ہوتا ہے کہ انہوں نے استعفیٰ کیوں دیا۔عامر لیاقت نے اپنے آخری پروگرام میں استعفیٰ دینے سے کچھ دیر قبل ایسی گفتگو کی جس نے سب کو حیران کر دیا ہے اور سوشل میڈیا پر گردش کرنے والی ویڈیو میں عامر لیاقت کی گفتگو کے دوران ایک ایسا کلپ بھی دکھایا گیا ہے جس میں سندھ رینجرز کے ایک اعلیٰ افسر کو خطاب کرتے دیکھا جا سکتا ہے۔ یہ کلپ چلانے سے قبل عامر لیاقت نے اپنی گفتگو کا آغاز کچھ اس طرح کیا ”ظاہر ہے کہ سبھی نے اپنا گھر بار چھوڑ دیا، اپنا سب کچھ چھوڑ دیا۔ ہم یہاں پاکستانی بننے آئے تھے، کچھ اور بننے آئے ہی نہیں تھے، کچھ اور بننا ہوتا تو آنے کی ضرورت نہیں تھی، آئے تھے پاکستانی بننے لیکن یہاں ہمیں لوگوں نے کچھ اور بنا دیا، ہمیں نفرتوں نے بانٹ دیا آپس میں، اور اب وقت ہے اس خلیج کو پاٹنے کا، اسے بڑھانے کا وقت نہیں ہے۔ اب اگر ڈاکٹر عامر لیاقت کی کلپ سے پہلے ہی گفتگو کو دیکھا جائے اور پھر اس کے بعد فوجی افسر کی گفتگو پر غور کیا جائے تو یوں محسوس ہوتا ہے کہ جیسے عامر لیاقت فوجی افسر کی گفتگو پر اپنے ردعمل کا اظہار کر رہے ہیں کیونکہ فوجی افسر کہتے ہیں کہ کیا کراچی کے لوگ اپنے آپ کو اپنی پہچان کو سب سے پہلے پاکستان سے منسلک کرنے کو تیار ہیں اور دوسری جانب عامر لیاقت کہہ رہے ہیں کہ ہم یہاں پاکستانی بننے آئے تھے، کچھ اور بننے آئے ہی نہیں تھے، کچھ اور بننا ہوتا تو آنے کی ضرورت نہیں تھی، اب یہ لمحات نہیں ہیں کہ ہمیں کھڑے ہو کر پوچھا جائے کہ کراچی والے پاکستانی بننے کو تیار ہیں کہ نہیںاب یہ لمحات نہیں ہیں کہ ہمیں کھڑے ہو کر پوچھا جائے کہ کراچی والے پاکستانی بننے کو تیار ہیں کہ نہیں، اب خلیجوں کو ختم کرنے کا وقت ہے

https://www.dailymotion.com/video/x5wzzyu
https://www.dailymotion.com/video/x5x0ycj <iframe frameborder=”0″ width=”480″ height=”270″ src=”//www.dailymotion.com/embed/video/x5x18y1″ allowfullscreen=””></iframe>

Leave a Reply

Your email address will not be published.