Daily archive

July 05, 2021

میرے سوشل میڈیا اکاؤنٹس کس نے ہیک کیے؟، اداکارہ میرا نے ایف آئی اے سے رجوع کر لیا

/

ویب ڈیسک ::میرے سوشل میڈیا اکاؤنٹس کس نے ہیک کیے؟ اداکارہ میرا نے فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی (ایف آئی اے ) سے رجو ع کرلیا پاکستانی اداکارہ میرا نے ایف آئی اے میں درخواست دی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ میرے سوشل میڈیا اکاﺅنٹس ( فیس بک، انسٹاگرام اور ٹوئٹر )ہیک کرلئے گئے ہیں، ایف آئی اے ہیکرز کے خلاف کارروائی کرے۔

فلم اسٹار میرا نے درخواست میں اپنے سابقہ مینیجر پر الزام عائد کیا ہے، میرا نے درخواست میں مؤقف اختیار کیا کہ فیس بک، انسٹاگرام اور ٹوئٹر اکاونٹس کا کنٹرول میرے پاس نہیں، میرا ہزاروں فالوورز اور چاہنے والوں سے رابطہ نہیں ہو رہا۔

دوسری جانب ایف آئی اے سائبر کرائم لاہور نے اداکارہ کی درخواست پر انکوائر ی شروع کردی ہے اور فیس بک، انسٹاگرام اور ٹوئٹر اکاوئنٹس سے متعلق تفصیلات طلب کرلی ہیں۔

 

Meera's social media accounts hacked 'by her ex-manager'

اچار کھانے کے کے بے شمار طبی فوائد ۔ اور احتیاط

/

ویب ڈیسک ::اچار جہاں گھروں میں خواتین بناتی ہیں وہیں اس کی متعدد برانڈز بھی ہیں جو کہ طرح طرح کے اچار بناتے ہیں اور مارکیٹ میں انہیں بڑی تعداد میں خریدا جاتا ہے، اچار کھانا تو ہر کوئی پسند کرتا ہے مگر اس کے بے شمار طبی فوائد سے بہت کم لوگ واقف ہیں جنہیں جاننا اور اس کا استعمال بڑھانا لازمی ہے۔

قدیم زمانے سے پاکستان، ایشیائی اور یورپی ممالک خصوصاً پاکستان، بھارت اور بنگلہ دیش میں اس غذا کو بنانے کا بڑا اہتمام کیا جاتا ہے جسے عام اصطلاح میں اچار کہتے ہیں اچار کھانوں کا لُطف دوبالا کر دیتا ہے اور پاکستان کے تقریباً سب ہی باورچی کھانوں میں موجود ہوتا ہے۔

طبی و غذائی ماہرین کی جانب سے اچار کے بے شمار فوائد گِنوائے جاتے ہیں، یہ ایک ایسی قدیم روایت جو آج بھی کئی گھروں میں خواتین بڑے اہتمام سے خصوصی مرتبانوں میں اچار ڈالتی ہیں اور یہ اچار گھر کے افراد سمیت ہر آنے والے مہمان کے سامنے بھی پیش کیا جاتا ہے۔

اچار ڈالنا پاکستان کی روایتوں میں سے ایک خاص روایت ہے، اچار کا استعمال خصوصی طور پر اندرون سندھ، اندرون پنجاب اور متعدد شہروں میں بھی کیا جاتا ہے، سندھ کے شہر شکار پور کا اچار پاکستان بھر میں بہت مقبول ہے حتیٰ کے اسے درآمد بھی کیا جاتا ہے، یہ مکس مسالوں کا اچار نہایت لذیذ اور صحت کے لیے مفید ہوتا ہے۔طبی و غذائی ماہرین کے مطابق اچار میں استعمال کیے جانے والے سب ہی قدرتی اجزا مثلاً سرکہ، لال مرچ، سونف، سرسوں کا تیل، رائی دانہ، میتھی دانہ، ہلدی، کلونجی، نمک، کیری، لیموں، گاجر، لہسن، ہری مرچ، لسوڑے اور دیگر متعدد اجزا صحت کے لیے نہایت مفید ہوتے ہیں، ان سب میں اینٹی آکسیڈنٹ اینٹی انفلامینٹری خصوصیات، وائرل اور انفیکشن سے بچاؤ کے لیے اجزا بھی شامل ہوتے ہیں

ماہرین کا کہنا ہے کہ مختلف اقسام کی چٹنیوں، مسالوں، فرمینٹڈ فوڈ کو حالیہ تحقیق میں صحت کے لیے مفید قرار دیا گیا ہے۔ اچار میں موجود قدرتی صحت بخش اجزا کینسر سے بچاؤ کا بھی سبب بنتے ہیں۔

غذائی ماہرین کے مطابق ہر قسم کے اچار کھانے سے جسم کو بنیادی وٹامنز اور منرلز حاصل ہوتے ہیں جو کہ جسم کو تندرست اور چاق و چوبند رکھنے میں مدد فراہم کرتے ہیں۔ایک تحقیق میں یہ بات سامنے آئی کہ اچار کا اجوائن مسالہ نہ صرف بدہضمی، پیٹ میں درد، گیس اور ہاضمے کے دیگر مسائل میں کمی لاتا ہے بلکہ یہ خون میں چربی کی مقدار میں کم کرتا ہے  ویسے تو اس کے حوالے سے سائنسی شواہد موجود نہیں مگر متعدد افراد کا دعویٰ ہے کہ تھوڑی سے مقدار میں اچار کا عرق پینا ہچکیوں سے نجات دلانے کا اچھا علاج ہے، ہچکیاں آرہی ہوں تو آدھا چائے کا چمچ ہر چند سیکنڈ بعد اس وقت پینا جاری رکھیں جب تک ہچکیاں تھم نہیں جاتیں۔

اچارکھانے سے جسم کا مدافعتی نظام طاقتور ہوتا ہے اور انیمیا ( خون کی کمی) اور بینائی کی کمزوری دور ہوتی ہے اچار میں وٹامن سی اور اے کے علاوہ اور بھی بہت سے وٹامنز شامل ہوتے ہیں جو متعدد بیماریوں سے جسم کو تحفظ فراہم کرتے ہیں، اچار میں ایسے اینٹی آکسیڈینٹ بھی پائے جاتے ہیں جو کہ موسمی الرجی جیسی بیماریوں کو بھی قابو میں رکھتے ہیں۔

اچار میں سرکہ استعمال ہوتا ہے اور سرکہ ایسیڈک ایسڈ سے بھر پور ہوتا ہے جو جسم میں ہیموگلوبن کو بڑھاتا ہے اچار میں شامل سبز مرچ اور لہسن شوگر لیول کو کم کرنے میں انتہائی مفید ہے، لہسن جسم سے مضر صحت مادوں کو خارج کر دیتا ہے اور بہت سی دوسری بیماریوں میں بھی انتہائی مفید ہے۔

اچار کے جوس میں موجود سوڈیم اور پوٹاشیم جسمانی ڈی ہائیڈریشن سے مقابلہ کرنے میں مدد دیتے ہیں، سوڈیم اور پوٹاشیم جسم کو وہ الیکٹرولیٹس فراہم کرتے ہیں جو پسینے کے ذریعے خارج ہوجاتے ہیں، ویسے تو پانی بھی ڈی ہارئیڈریشن دور کرنے کے لیے موثر ہے مگر اچار کا جوس زیادہ تیز ریکوری میں مدد دیتا ہے۔

امریکی تحقیق کے مطابق اچار کا عرق مسلز کے اکڑنے کے مسئلے کی روک تھام میں عام پانی کے مقابلے میں زیادہ فائدہ مند ثابت ہوتا ہے، یہ عرق جسمانی پٹھوں کی اکڑن کی تکلیف میں 37 فیصد تیزی سے ریلیف دیتا ہے، ورزش کرنے والے افراد کے لیے اچار کھانا ناگزیر ہے۔

اچار کے عرق میں موجود پرو بائیوٹکس معدے میں موجود صحت کے لیے فائدہ مند بیکٹریا کی نشوونما اور صحت مند توازن برقرار رکھنے میں مدد دیتے ہیں۔

نقصانات:

گھر میں ڈالے گئے اچار صحت کے لیے مُفید ہوتے ہیں کیونکہ ان میں اچار کو لمبے عرصے تک محفوظ کرنے کے لیے کوئی ایسڈ یا کیمیکل استعمال نہیں کیا جاتا اورصاف سُتھرے مصالحوں کے ساتھ نیچرل پرسرویٹیو طریقے سے اچار کو محفوظ کیا جاتا ہے۔

جبکہ مارکیٹ میں دستیاب ریڈی میڈ اچار ‘پرزرویٹوز’ استعمال کرتے ہیں جس کے صحت پر منفی اثرات مرتب ہوتے ہیں۔بازاری اچاروں کے ذائقے کو بڑھانے کے لیے تیل، سرکہ اور نمک استعمال کیا جاتا ہے اور ان چیزوں کا زیادہ استعمال صحت کے لیے نقصان دہ ہے خاص طور پر نمک کا زیادہ استعمال بلڈ پریشر کو تیز کرتا ہے۔

کُچھ بازاری اچاروں میں خاص طور پر آم کے اچار اور لیموں کے اچار میں شوگر استعمال کی جاتی ہے جو کہ ذیابطیس کے مریضوں کے لیے نقصان دہ ہے۔

بازاری اچار خاص طور پر کُھلے اچار میں خدشہ ہوتا ہے کہ اچار کو صاف طریقے سے نہیں بنایا گیا اور ایسے اچار صحت کے لیے نقصان دہ ہو سکتے ہیں

پاکستان عظیم ملک بننے جارہا ہے، گوادرمنصوبے بلوچستان کو ترقی کی نئی راہ پر ڈالیں گے وزیراعظم عمران خان

//

گوادر:وزیراعظم عمران خان نے گوادر شہر کے مختلف ترقیاتی منصوبوں کا افتتاح کردیا، کہتے ہیں، بلوچستان کی ترقی حکومت کی اولیں ترجیح ہے۔ گوادر منصوبے بلوچستان کو ترقی کی نئی راہ پر ڈالیں گے۔

گوادر منصوبوں کے فیز ٹو کی سنگ بنیاد تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کرتے ہوئے کہا، آج گوادر کے 22 ایکڑ کے زون کو کھولا ہے اور سرمایہ کاروں کو دعوت دی ہے۔ پاکستان میں بہت سے علاقے بہت پیچھے رہ گئے، اس میں بلوچستان بھی شامل ہے۔

اُن کا کہنا تھا کہ، وزیراعلیٰ بلوچستان اگر اردو میں تقریر کرتے تو ہمارے 90 فیصد پاکستانیوں کو بھی سمجھ آجاتی۔ وزیراعظم میں اسی لیے اردو میں تقریر کررہا ہوں تاکہ ہمارے 90 فیصد پاکستانیوں کو تقریر سمجھ آجائے۔اُنہوں نے کہا، پاکستان عظیم ملک بننے جارہا ہے، گوادرمنصوبے بلوچستان کو ترقی کی نئی راہ پر ڈالیں گے، پاکستان 60ء کی دہائی میں تیز ترین ترقی کرنے والے ممالک میں شامل تھا، پھر ہم نے غلطیاں کیں اور پیچھے رہ گئے۔ گوادر ایسا پوائنٹ بننے جا رہا ہے جس سے بلوچستان بلکہ پورے پاکستان کو فائدہ ہوگا۔

وزیراعظم نے کہا، گوادر میں ترقیاتی کاموں کا پلان بہت عرصے سے بنا ہوا تھا لیکن کام نہیں ہورہا تھا، بڑی کمپنیاں یہاں سرمایہ کاری کریں، حکومت ملکی و غیر ملکی سرمایہ کاروں کوبھر پور معاونت فراہم کرے گی۔عمران خان نے کہا، چینی سفیر کا خوبصورت تقریر پر شکریہ ادا کرتا ہوں، چین نے گوادر میں پانی اور بجلی کے منصوبے لگائے ہیں، ہم اب ایک ون ونڈو آپریشن کے اوپر جارہے ہیں، ماضی میں ایکسپورٹ پر توجہ نہیں دی گئی، ہم چاہتے ہیں بڑی کمپنیاں یہاں سرمایہ کاری کریں اور ایکسپورٹ بڑھے۔اُنہوں نے کہا، وفاقی حکومت اور بلوچستان حکومت کی بہت اچھی کوآرڈینیشن ہے، اس کوآرڈینیشن کو مزید بہتر کرنا چاہتے ہیں،  جب فوائد ملتے ہیں تو سرمایہ کار ایسے آتے ہیں جیسے شہد پر مکھیاں آتی ہیں۔

اُن کا کہنا تھا کہ، چین سے دوستی کا ہمیں بہت زیادہ فائدہ ہے، چین معاشی طور پر دنیا میں اس وقت سب سے تیزی سے آگے جارہا ہے، چین سے بہت زیادہ فائدہ اٹھا سکتے ہیں، گوادر کے لوگوں کو ٹیکنیکل ٹریننگ فراہم کرنے کی ضرورت ہے، گوادر میں جس طرح انڈسٹری میں اضافہ ہوگا اسی طرح ٹرینڈ اسٹاف کی ضرورت ہوگی، اس کے لیے گوادر میں ٹریننگ کالج بن رہا ہے۔ عالمی معیار کا اسپتال بھی بن رہا ہے۔وزیراعظم بولے کہ، آج جتنے بھی منصوبوں کا اعلان ہوا ہے اس کی باقاعدگی سے مانیٹرنگ کریں گے، وزیراعظم ہاؤس سی پیک کے سب سے اہم سیکٹر گوادر کی براہ راست مانیٹرنگ کرے گا، وزیراعلیٰ بلوچستان سے کہتا ہوں اب کسی بھی قسم کی رکاوٹ نہیں آنی چاہئے۔اُن کا کہنا تھا کہ، کوئی بھی ملک اس وقت تک صحیح معنوں میں ترقی نہیں کرسکتا جب تک اس کا کوئی بھی علاقہ پیچھے نہ رہ جائے، بلوچستان کو 730 ارب روپے کا ترقیاتی فنڈ دیا جو تاریخ میں سب سے زیادہ ہے۔ مزید کہا کہ، ہم طالبان سے بھی بات کررہے ہیں کہ افغانستان کا کسی طرح سیاسی حل نکل آئے۔

خراٹے سے چھٹکارا ۔کونسی کروٹ لیٹنا زیادہ فائدہ مند ہے؟

/

برمنگھم: جب انسان سو جاتا ہے تو وہ خراٹوں سے پریشان کرتا ہے کبھی اٹھ کر چلنا شروع کردیتا ہے ہر انسان کے سونے کا طریقہ مختلف ہوتا ہے، لیکن اگر آپ الٹی کروٹ پر سوتے ہیں تو پھر یقیناً آپ بہت سے طبی مسائل سے دور ہوں گے۔
ماہرین صحت کے مطابق الٹی کروٹ پر سونے کے طبی فوائد درج ذیل ہیں۔
حاملہ خواتین کے لیے بہترین
حاملہ خواتین کے لیے الٹی کروٹ پر سونا مفید ہوتا ہے ، عموماً ڈاکٹر بھی انہیں الٹی کروٹ سونے کی تجویز دیتے ہیں۔ کیوں کہ اس طرح سونے سے حاملہ خواتین کا رحم ان کے جگر کے مخالف دبتا ہے۔
لمف نوڈز میں مدد
الٹی کروٹ سونے سے لمف نوڈز(لمفی نظام کا وہ حصہ جو اینٹی باڈیز پیدا کرتا ہے) کو فائدہ پہنچتا ہے۔ اس سے آپ کے جسم میں موجود مائع پورے جسم میں زیادہ تیزی سے فلٹر ہوتا ہے جب کہ سیدھی کروٹ سونے سے آپ کے لمف نوڈز کے کام کرنے کی رفتارزیادہ سست ہوتی ہے۔
خراٹوں میں کمی
نیند میں خراٹے لینے کی عادت آپ کے ہمراہ سونے والے فرد کے لیے بہت پریشان کن ہوتی ہے۔ آپ سکون سے خراٹوں کے ساتھ خواب خرگوش کے مزے لیتے ہیں، لیکن دوسرا بندہ ساری رات تکیے میں سر دبا کر جاگتا رہتا ہے۔
خاص طور پراگر آپ کمر کے بل سوتے ہیں تو آپ کے خراٹوں کی آواز زیادہ بلند ہوتی ہے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ سوتے وقت آپ کی زبان ، منہ اور جبڑا مکمل طور پر پرسکون ہوجاتا ہے۔ اگر آپ اپنی خراٹیں لینے کی عادت سے تنگ ہیں تو آج سے الٹی کروٹ پر سونا شروع کردیں۔
معدے کی تیزابیت کم کریں
کیا آپ نے بستر پر جانے سے پہلے بہت زیادہ کھا لیا ہے؟ اگر ایسا ہے تو پھر ساری رات معدے کی تیزابیت آپ کو بے چین رکھے گی۔ماہرین کا کہنا ہے کہ اس مسئلے کا حل الٹی کروٹ سونے میں پوشیدہ ہے، کیوں کہ اس طرح سونے سے معدے کی تیزابیت میں کمی واقع ہوتی ہے۔
دل کی مدد کیجیے
الٹی کروٹ سو کر آپ اپنے دل کی سخت محنت میں تھوڑی سی کمی کر سکتے ہیں۔ اس طرح سونے سے آپ کے دل کو پورے جسم میں خون کی گردش جاری رکھنے میں آسانی ہوجاتی ہے۔
نوٹ: اس مضمون میں معلومات صرف مفاد عامہ کےتحت شائع کی گئی ہیں

 

Why You Should Sleep On Your Left Side Tonight - Best sleeping position - YouTube

ملک میں تمام سیکٹرز کو معمول کے مطابق گیس اور پریشر کی فراہمی بحال کردی، حماد اظہر

//

اسلام آباد:: وفاقی وزیر توانائی حماد اظہر کہتے ہیں کہ، ملک میں تمام سیکٹرز کو معمول کے مطابق گیس اور پریشر کی فراہمی بحال کردی۔

حماد اظہر نے ٹویٹ میں مزید لکھا کہ ایل این جی کی فراہمی 100 فیصد بحال کی گئی ہے، جمعے کی شام سے بجلی کی جبری لوڈ شیڈنگ کا بھی مکمل خاتمہ کردیا گیا تھا۔

ماہ نور بلوچ کئی سال بعد اب کس کے ساتھ شوبز انڈسٹری میں انٹری دے رہی ہیں؟ مزید پڑھیے

/

کراچی ویب ڈیسک ::پاکستانی شوبز انڈسٹری کی انتہائی خوبصورت اداکارہ ماہ نور بلوچ کی ایک مرتبہ پھر سے انڈسٹری میں آمد متوقع ہے،

اداکار اعجاز اسلم نے سماجی رابطے کی ویب سائیٹ ٹویٹر پر ایک 6 سیکنڈ کی مختصر بوم رینگ ویڈیو شیئر کی ہے جس میں اعجاز اسلم خود، ماہ نور بلوچ اور فیصل قریشی موجود ہیں اور اس ویڈیو میں ماہ نور بلوچ ہاتھ میں جوس کا گلاس تھامے ہوئے ہیں اور اس سے محظوظ ہو رہی ہیں جبکہ دونوں اداکار انکے ساتھ ویڈیو میں موجود ہیں۔

 جس سے انکے مداحوں کو اندازہ ہو گیا ہے کہ وہ اب دوبارہ سے انڈسٹری میں اعجاز اسلم اور فیصل قریشی کیساتھ انٹری دینے والی ہیں البتہ ابھی تک ماہ نور بلوچ نے خود اس بات کی اب تک تصدیق نہیں کی ہے کہ وہ کیا کسی ڈرامے میں یا پھر کسی ٹی وی پروگرام میں جلوہ افروزہوں گی۔

واٹس ایپ کااینڈروئیڈ اور آئی فون صارفین کے لیے مفید فیچر

/

سلیکان و یلی:جدت ویب ڈیسک: واٹس ایپ جلد ہی آئی فون سے اینڈروئیڈ فون اور اینڈروئیڈ سے آئی فون پر منتقل ہونے والے صارفین کا دیرینہ مسئلہ حل کرنے جا رہا ہے۔
واٹس ایپ سے متعلق خبریں اور اپ ڈیٹس دینے والی ویب سائٹ ویبیٹا انفو کے مطابق واٹس ایپ انتظامیہ اس فیچر پر گزشتہ کئی ماہ سے کام کر رہی ہیاورجلد ہی واٹس ایپ کے استعمال کنندگان ایک آپریٹنگ سسٹم سے دوسرے آپریٹنگ سسٹم پر اپنی چیٹ کو منتقل کرسکیں گے۔ آئی فون سے اینڈروئیڈ اور اینڈروئیڈ سے آئی فون پرچیٹ کس طرح منتقل ہوگی وہ درج ذیل ویڈیو میں بتایا گیا ہے۔رواں سال مارچ میں ہی یہ خبرسامنے آئی تھی کہ واٹس ایپ دو آپریٹنگ سسٹمز کے درمیان چیٹ منتقل کرنے کے فیچر پر کام کر رہا ہے۔ کیوں کہ گوگل اینڈروئیڈ صارفین کے لییچیٹ کا بیک اپ گوگل ڈرائیو پر جب کہ آئی فون کے صارفین کی چیٹ کا بیک اپ آئی کلاڈ پر بناتا ہے۔ اور یہ دونوں ایک دوسرے کے بیک اپ کو منتقل کرنے کی اجازت نہیں دیتے اور ایک موبائل سے دوسرے فون پر منتقل ہونے صارف گوگل ڈرائیو یا آئی کلاڈ پر موجود واٹس ایپ کے چیٹ بیک اپ کو منتقل نہیں کر سکتے۔

 

طالبان کا بدخشاں کے متعدد اضلاع پرکنٹرول، افغان فوجیوں نے تاجکستان میں پناہ لے لی

کابل: جدت ویب ڈیسک:افغانستان میں طالبان کی پیش قدمی جاری ہے اور اس میں تیزی دیکھی جارہی ہے، بغیر لڑے ہی بدخشاں کے متعدد اضلاع کا کنٹرول سنبھال لیا ہے جبکہ سیکڑوں افغان فوجی ہتھیار ڈال کر پڑوسی ملک تاجکستان میں پناہ لینے پر مجبور ہوگئے ہیں۔

بین الاقوامی میڈیا کے مطابق افغانستان کے شمالی صوبہ بدخشاں میں طالبان تیزی سے پیش قدمی کرتے ہوئے سرحد کی طرف بڑھ رہے ہیں۔ تاجکستان کی قومی سلامتی کمیٹی نے بتایا ہے کہ مزید 300 سے زائد افغان فوجی سرحد عبور کرکے تاجکستان میں داخل ہوگئے ہیں،

جنہیں انسانیت کے ناطے پناہ دی گئی ہے۔اپریل کے وسط میں جب سے امریکی صدر جوبائیڈن نے افغانستان کو ’ہمیشہ کی جنگ‘ قرار دیتے ہوئے وہاں سے واپسی کا اعلان کیا ہے تب سے طالبان تیزی سے ملک میں غالب ا?تے جارہے ہیں۔

تاہم بدخشاں میں فتوحات اس لیے غیر معمولی نوعیت کی حامل ہیں کہ یہ امریکا کے اتحادی سرداروں کا ہمیشہ سے مضبوط گڑھ رہا ہے، جنہوں نے 2001 میں طالبان کو شکست دینے میں امریکا کی مدد کی تھی۔ اب طالبان کا ملک کے 421 اضلاع میں سے ایک تہائی پر قبضہ ہوچکا ہے۔

چھوٹے اور درمیانہ درجے کے صنعتکاروں کیلئے اسپیشل ٹیکس سسٹم جاری

//

اسلام آباد :چھوٹے اور درمیانہ درجے کے صنعتکاروں کے لئے اسپیشل ٹیکس سسٹم جاری کردیا گیا، نیشنل سیونگ سرٹیفکیٹ ہر نان فائلر کے لیے 30 فیصد ودہولڈنگ ٹیکس عائد ہو گیا۔

25 چھوٹے اور درمیانہ درجے کے صنعتکاروں کے لئے اسپیشل ٹیکس سسٹم جاری کردیا گیا، اب سے 1 کروڑ تک کی سیل کرنے والوں پر نیا نظام لاگو ہوگا۔ اس کیٹیگری کے صنعتکاروں کو اب اسمال انڈسٹری میں شمار نہیں کیا جائے گا، ایسے صنعتکاروں کو ٹیکس سسٹم کے تحت دو حصوں میں تقسیم کردیا گیا ہے، 1 کروڑ تک کی سیل کرنے والوں کو 7.5 فیصد ٹیکس دینا ہوگا، 1 تا اڑھائی کروڑ روپے تک کی سیل کرنے والوں کو 15 فیصد ٹیکس دینا ہوگا۔

دوسری جانب حکومت نے قومی بچت اسکیموں سے حاصل منافع پر ود ہولڈنگ ٹیکس عائد کردیا ہے۔ نیشنل سیونگ سرٹیفکیٹ ہر نان فائلر کے لیے 30 فیصد ودہولڈنگ ٹیکس عائد کردیا گیا، اب سے 5 لاکھ تک کے منافع کی بجائے ایک لاکھ روپے پر ٹیکس عائد ہوگا، فائلرز کے لیے 15 فیصد ودہولڈنگ ٹیکس عائد کردیا گیا ہے، قومی بچت اسکیموں میں سرمایہ کاری کی حوصلہ شکنی اور کالا دھن سفید کرنے میں رکاوٹ ڈالنے کے لیئے یہ اقدام اُٹھایا گیا ہے۔

1 2 3 6