ppp

کچھ تو ہے جسکی پردہ داری ہے۔۔۔ نفیسہ شاہ نے احدچیمہ کی گرفتاری پر ن لیگ کے احتجاج پر کونسا سوال اٹھادیا‘ جانئے

سکھر جدت ویب ڈیسک پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹرین کی مرکزی سیکریٹری اطلاعات سیدہ نفیسہ شاہ نے احد چیمہ کی گرفتاری اور اس پر بیورو کریٹس کے احتجاج پر سوال اٹھایاہے کہ پنجاب سے سرکاری افسر کی گرفتاری پر اتنا شور مچایا جارہا ہے مگر سندھ اور بلوچستان سے تو سرکاری افسران تو ایک طرف ایم این ایز اور ایم پی ایز کو گرفتار کیا جاتا رہا ہے اور اس وقت بھی سندھ و بلوچستان کے کئی اعلی سرکاری افسران گرفتار ہیں اور ان سے تفتیش کی جارہی ہے اس پر کیوں شور نہیں مچایا جارہا ہے ایک صوبے کے لیے الگ اور باقی صوبوں کے لیے الگ قانون کیوں ہے سندھ وبلوچستان سے گرفتار سرکاری افسران کے نام گنواتے ہوئے ان کا یہ بھی کہناتھا کہ سندھ و بلوچستان کے افسران کی گرفتاری پر وہاں کے افسراں نے تو کوئی احتجاج نہیں کیا ہے تو پنجاب میں کیوں ایسا ہورہا ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے سکھر پریس کلب کے دورے کے بعد صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ پارلیمنٹ کے قانون کے خلاف فیصلہ آنے کی ذمہ دار مسلم لیگ ن ہے اپوزیشن نے تو ان کو منع کیا تھا کہ وہ فی الحال ایسا کوئی قانون نہ لائیں جن سے اداروں کے درمیان تصادم کا خدشہ ہو مگر انہوں نے ایک نہ سنی اور قانون کو پاس کرانے کے لیے وہ اپنے ایک کینسر کے مرض میں مبتلا رکن کو بھی اسپتال سے اٹھا کر پارلیمنٹ لائے تھیعدالتی فیصلیسے پارلیمنٹ کو بھی نقصان ہوا ہے فیصلیہمارے خلاف بھی آئے ہیں مگر ہم نے جلسوں یا احتجاجوں کا راستہ اختیارکرنے کے بجائے قانونی راستہ اختیار کیا ہے اور عدالتوں کو کورٹ روم میں قائل کرنے کی کوشش کی ہے جو نواز شریف جلسوں میں مجھے کیوں نکالا کا سوال کرتے ہیں یہی سوال ان کے وکیل کو عدالت کے اندر کرنا چاہیے ان کا کہنا تھا کہ احد چیمہ کی گرفتاری کیبعدان کے بڑے راز فاش ہورہے ہیں انہوں نے کہا کہ ہم ن لیگ کے مینڈیٹ کا احترام کرتے ہیں لیکن ن لیگ کو اداروں کا احترام کرتے ہوئے سیاست کرنی چاہیے انکے رویئے سے جہموریت کو نقصان ہوگا ان کا کہنا تھاکہ ن لیگ نے اپنے حلقوں میں ہر سہولت دی ہوئی ہے یہاں تک کے زرعی ترقیاتی بنک کے اٹھاسی فیصد قرضے بھی ان کے حلقوں میں جارہے ہیں ان کا کہنا تھا کہ جی ڈی اے میں کتنی جماعتیں شامل ہیں ان کے نام تک لوگوں کو پتہ نہیں ہے اور انشاء اللہ انتخابات میں تو ان کی شکلیں تک لوگوں کو یاد نہیں رہیں گی ان کا کہنا تھا کہ پیپلزپارٹی کا ورکر وقت کے انتظار میں ہے اس وقت ملک میں دو لاڈلوں کے درمیان جنگ چل رہی ہے حکومت ملک کو معاشی بحران سے بچانے کے بجائے شریف خاندان کی محافظ بنی ہوئی ہے ملک کو ایف ٹی اے نے گرے لسٹ میں ڈال دیا ہیخدانخواستہ ملک کو بلیک لسٹ کردیا گیاتو ایک نیا معاشی بحران جنم لے گا لیکن حکومت کو اس کی کوئی فکر نہیں ہے ان کا کہنا تھا کہ ن لیگ صرف اپنا سریا فروخت کرنے کے لیے میٹرو بنا رہی ہے لاہور یا راولپنڈی میں بننے والے میٹروز کا خرچ پچاس ارب سے زیادہ ہے جبکہ ہمارے صوبے بلوچستان کا بجٹ ہی ساٹھ کروڑہیقبل ازیں سالار صحافت ، اسسٹنٹ سیکریٹری پی ایف یو جے لالہ اسد پٹھان نے نفیسہ شاہ و دیگر رہنمائوں کو سکھر پریس کلب کی تزئین و آرائش سمیت دیگر ہالز ، آڈٹیوریم ، گیمز ، کلبز سمیت دیگر معمالات سے آگاہ کیا ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.