کراچی کے شہری دس ماہ کے دوران تقریباً ایک ارب روپے مالیت کی اشیاء سے محروم ہوئے

کراچی ویب ڈیسک:شہر کراچی میں ایک وقت تھا کہ ہر طرف لوٹ مار،قتل و غارت گری اور بد امنی کے ڈیرے تھے اور پاک فوج سمیت دیگر قانون نافذ کرنے والے اداروں نے بڑی جاں فشانی سے ان تمام عناصر کے خلاف بھرپور کارروائی کی جو اس شہر میں بد امنی،قتل و غارتگری اور لوٹ مار میں مصروف تھے اور آج شہر کراچی میں بڑی حد تک امن قائم ہوچکا ہے تاہم اب بھی شہر میںچوری اور لوٹ مار کی کارروائیاں جاری ہیں ۔ شہر میں چوری اور لوٹ مار کے حوالے سے سی پی ایل سی نے ایک لسٹ جاری ہے جس کے مطابق سال 2017ء کے ماہ جنوری سے اکتوبر تک مختلف وارداتوں کے حوالے سے اعداد وشمار درج ہیں۔ جس کے مطابق اس عرصہ(10ماہ)کے دوران 173گاڑیوں کے چھینی جبکہ ایک ہزار 53گاڑیاں چوری ہوئیں۔ 1164موٹر سائیکل سواروں سے ان کی موٹر سائیکلیں گن پوائنٹ پر جبکہ شہر کے مختلف علاقوں سے 20ہزار 428موٹر سائیکلیں چوری ہونے کی شکایات درج کی گئیںاسی طرح تقریباً گیارہ ہزار کے قریب موبائل فون چھینے جبکہ 14ہزار 629موبائل فون چوری ہوئے اس طرح کل ملا کر کراچی کے شہری دس ماہ کے دوران تقریباً ایک ارب روپے مالیت کی اشیاء سے محروم ہوئے۔

 

Leave a Reply

Your email address will not be published.