پاکستان کی سیاست اور ریاست کا لائحہ عمل طے ہونے جارہا ہے ، بابر اعوان

اسلام آباد جدت ویب ڈیسک پاکستان تحریک انصاف کے رہنما بابر اعوان نے کہاہے کہ پاکستان کی سیاست اور ریاست کا لائحہ عمل طے ہونے جارہا ہے ¾سپریم کورٹ جے آئی ٹی پر اعتراضات کو مسترد کرچکی ہے ¾ریاست کے وسائل کیس کو بچانے کے لیے استعمال ہورہے ہیں۔الیکشن کمیشن کے باہر میڈیا سے گفتگو میں بابر اعوان نے کہاکہ عمران خان کے خلاف توہین عدالت کی درخواست پر کارروائی کا مطالبہ غیرقانونی ہے۔عمران خان کے خلاف کچھ لوگوں کی خواہش ہے کہ وہ نااہل ہوجائیں جبکہ بعض کی یہ ضرورت ہے۔تحریک انصاف کے رہنما نے کہا کہ ہم نے سپریم کورٹ میں عمران خان کی تمام تفصیلات پیش کر دی ہیںاورسپریم کورٹ کو وہ تفصیلات بھی دیں جو مانگی نہیں گئی تھیں۔اس وقت 4مقدمات قومی منظر نامے پر چھائے ہوئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ تمام حقائق سامنے آچکے ہیں ¾ ہم نے کوئی چیز نہیں چھپائی۔ بابر اعوان نے کہاکہ کچھ لوگ چاہتے ہیں عمران خان نااہل ہو جائیں،عمران خان کی نااہلی کچھ کی خواہش اور کچھ کی ضرورت ہے 1976 ئ کا توہین عدالت قانون ختم ہو چکا ہے، الیکشن کمیشن کے پاس توہین عدالت کارروائی کا اختیار نہیں،صرف سپریم کورٹ اور ہائیکورٹ کو توہین عدالت کارروائی کا اختیار ہے پی ٹی آئی کسی قیمت پر پاناما کیس سے پیچھے نہیںہٹے گی۔اس موقع پر نعیم الحق کا کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن میں اکبر ایس بابر، ہاشم بھٹہ کی درخواست میں ایک جیسے الزامات ہیں،حنیف عباسی کی دائر درخواست میں بھی اسی نوعیت کی درخواست ہے۔نعیم الحق نے کہاکہ حکومت نے ساز ش کے تحت عمران خان کےخلاف مقدمات بنائے ہیںالیکشن کمیشن سپریم کورٹ میں 3 کیس فائل کئے گئے ہیں جن میں ایک ہی الزام ہے ہم نے سپریم کورٹ میں عمران خان کی وہ تفصیلات بھی دیں جو مانگی نہیں گئی تھیںالیکشن کمیشن میں اکبر ایس بابر، ہاشم بھٹہ کی درخواست میں ایک جیسے الزامات ہیںحنیف عباسی کی سپریم کورٹ میں دائر درخواست میں بھی اسی نوعیت کی ہے ،تمام حقائق سامنے آچکے ہیں ہمیں کوئی چیز نہیں چھپانی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.