نہتے کشمیریوں پر بھارتی مظالم میں روز بروز اضافہ،جولائی میں تینتیس لوگ شہید

جدت ویب ڈیسک :مقوضہ کشمیر میں قابض بھارتی افواج کی بربریت کا سلسلہ جاری ہے اور نہتے کشمیریوں پر بھارتی مظالم میں روز بروز اضافہ ہوتا جارہا ہے۔حریت کمانڈر برہانی وانی کے شہادت سے اب تک بھارتی فوج نے نہتے کشمیریوں پر پیلٹ گن کا استعمال بھی بڑھا دیا ہے جس سے اب تک متعدد کشمیری نابینا ہوچکے ہیں جب کہ شہادتوں میں بھی ہر گزرتے دن کے ساتھ اضافہ ہورہا ہے۔کشمیر میڈیا سروس کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ ماہ جولائی میں بھارتی فوج کے مظالم سے 33 کشمیری شہید ہوئے جن میں 2 نوجوان اور ایک خاتون بھی شامل ہیں۔بھارتی فوج کی گولیوں کا نشانہ بننے والے شہید نوجوانوں کی شناخت عرفان احمد شیخ اور عابد مگرے کے نام سے ہوئی ہے جب کہ نوجوانوں کی شہادت کے بعد سمبورا اور تہاب کے علاقوں میں لوگ سڑکوں پر نکل آئے اور شدید احتجاج کیا۔بھارتی فورسز نے علاقے میں انٹرنیٹ سروس بند کرتے ہوئے ہوائی فائرنگ اور شیلنگ کرتے ہوئے مختلف علاقوں میں احتجاج کرنے والوں کو منتشر کردیا رپورٹ میں بتایا گیا ہےکہ بھارتی فورسز نے 3 کشمیریوں کو جعلی مقابلوں میں شہید کیا جب کہ قابض فورسز نے کارروائیوں کے دوران پیلٹ گن اور آنسو گیس کا اندھا دھند استعمال کیا جس سے 565 کشمیری شدید خمی ہوئے اور درجنوں گھروں کو بھی نقصان پہنچایا گیا۔رپورٹ کے مطابق قابض بھارتی فورسز نے حریت رہنماؤں سمیت 450 کشمیریوں کو بھی گرفتار کیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.