محمد حفیظ کی بائولنگ کا بڑا امتحان‘فیل یا پاس؟۔۔۔جانئے

 

لاہور جدت ویب ڈیسک قومی کرکٹ ٹیم کے آل رانڈر اور سابق کپتان محمد حفیظ مستقبل میں بائولنگ کر سکیں گے یا نہیں اس کا فیصلہ آج بدھ کو بائولنگ ٹیسٹ کے بعد ہوگا۔ محمد حفیظ نے امید ظاہر کی کہ وہ بائولنگ ایکشن ٹیسٹ کلئیر کرلیں گے۔ سری لنکا کے خلاف میچ کے دوران آئی سی سی نے محمد حفیظ کے بائولنگ ایکشن کو مشکوک قرار دیا تھا اور انہیں 14 روز کے اندر بائیو مکینک ٹیسٹ کی ہدایت کی گئی تھی۔آل رانڈر محمد حفیظ بائولنگ ٹیسٹ کیلئے انگلینڈ پہنچ چکے ہیں جہاں وہ بائولنگ ایکشن کا بائیو مکینک ٹیسٹ دیں گے۔ حفیظ اس سے قبل بھی بھارت میں دیے جانے والے بائولنگ ایکشن ٹیسٹ میں کلئیر قرار دیے گئے تھے۔ میچ آفیشلز نے سری لنکا کے خلاف ابو ظہبی کے شیخ زید کرکٹ گرانڈ پر کھیلے جانے والے تیسرے ون ڈے میچ میں محمد حفیظ کے بالنگ ایکشن کو رپورٹ کیا تھا۔یاد رہے کہ سری لنکا کے خلاف تیسرے ون ڈے میں محمد حفیظ نے ایک وکٹ حاصل کی تھی۔ خیال رہے کہ اس سے قبل جولائی 2015 میں بھی محمد حفیظ کا بالنگ ایکشن مشکوک قرار دیکر انہیں بالنگ کرانے سے روک دیا گیا تھا۔ محمد حفیظ نے بالنگ ایکشن میں تبدیلی کر کے نومبر 2015 میں آسٹریلیا میں اپنے نئے بالنگ ایکشن کا ٹیسٹ دیا تھا جسے آئی سی سی نے کلیئر قرار دیدیا تھا۔آئی سی سی کے قوانین کے مطابق بالنگ کراتے وقت بالر کے ہاتھ کا خم 15 ڈگری کے اندر ہونا چاہیے۔ آئی سی سی کی جانب سے پابندی کے باوجود پاکستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے حفیظ کو 2016 میں قائد اعظم ٹرافی میں بالنگ کی اجازت دی گئی تھی لیکن ٹرافی کے فائنل میچ میں بھی ان کا ایکشن رپورٹ ہو گیا تھا۔ قائداعظم ٹرافی کے فائنل میں بالنگ ایکشن رپورٹ ہونے کے بعد پی ایس ایل انتظامیہ نے انہیں لیگ کے پہلے ایڈیشن میں بالنگ سے روک دیا تھا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.