MQM

فاروق ستار نے ایسا کیا کردیا کہ الیکشن کمیشن کا عملہ بھی چکرا کررہ گیا‘ تفصیلات جانئے

کراچی جدت ویب ڈیسک متحدہ قومی موومنٹ پاکستان میں اختیارات،سربراہی کی جنگ نے ایم کیوایم کے رہنماؤں کو ذہنی واعصابی مریض بنادیا کئی ارکان پارلیمان سیاسی مستقبل سے پریشان اور بیمار ہونے لگے ایم کیوایم پاکستان رابطہ کمیٹی اور ڈاکٹر فاروق ستار کی جانب سے الیکشن کمیشن میں ایک دوسرے کے خلاف خط وکتابت نے الیکشن کمیشن کے عملے کو بھی پریشان کرکے رکھ دیا ہے ۔الیکشن کمیشن کا عملہ ایم کیوایم کے نام پر آنے والی ڈاک کھولنے یا لیٹر وصول کرنے سے ہچکچاتا رہتا ہے اور بالا افسر کے حوالے کردیتا ہے ۔پانچ فروری سے کراچی میں ایم کیوایم پاکستان کے ڈاکٹر فاروق ستار اور بہادرآباد گروپ کے درمیان اختلافات نے عجب صورتحال اختیار کرلی ہے دونوں فریقین کی جانب سے اپنی پارٹی کے رہنماوں،ذمہ داروں و کارکنان کو آئے روز موبائل پیغامات اور ٹیلفون کالز موصول ہوتی ہیں جسمیں حمایت کرنے کا کہا جاتا ہے اور مخالف گروپ کی طرف نہ جانے کا حکم دیا جاتا ہے قریبا پندرہ روز سے جاری متحدہ قومی موومنٹ کے اندر محاذ آرائی ،پریس کانفرنسوں ،الزامات جوابی الزامات اور اختیارات و سربراہی کی جنگ نے خود ایم کیوایم کے سینئر رہنماوں کو چکرا کر رکھ دیا ہے ۔رابطہ کمیٹی کے ایک رکن کے مطابق ذاتی انا اور اختیار کے لیے جاری جنگ نے انہیں ذہنی واعصابی مریض بنادیا ہے ایم کیوایم رابطہ کمیٹی نے پی آئی بی کے انٹرا پارٹی الیکشن اور انکی سرگرمیاں رکوانے کے لیے کئی رہنماوں کو مختلف علاقوں اور شہروں کی طرف جانے کی ہدایت کی تاہم پارٹی رہنماوں نے بیماری کے باعث جانے سے انکار کردیا ہے جبکہ کچھ تنظیمی عہدیدار،ارکان پارلیمان نے پی آئی بی یا بہادر آباد جانے کے بجائے خاموشی اختیار کرلی ہے دوسری طرف ایم کیوایم پی آئی بی اوربہادر آباد کی جانب سے الیکشن کمیشن آف پاکستان کے صوبائی دفتر کو موصول ہونیوالی خط وکتابت نے الیکشن کمیشن کے عملے کو چکرا کر رکھ دیا ہے الیکشن کمیشن کا عملہ کوریئر یا دستی آنیوالی ایم کیوایم کی ڈاک کو کھولنے سے گریزاں رہتا ہے اور معاملے کو آگے بڑھا دیتا ہے ۔ پیر روز ریٹرننگ افسر کے دفتر میں کاغذات نامزدگی واپس لینے کے آخری روز ایم کیوایم رابطہ کمیٹی کے رکن زاہد منصوری مبہم متن اور مشکوک خط لیکر پہنچے جس میں نو امیدواروں سے پارٹی ٹکٹ واپس لینے اور پانچ کو پارٹی امیدوار تسلیم کرنے کی درخواست کی گئی زاہد منصوری نے ابتدا میں مبہم خط کو الیکشن کمیشن کے غیر متعلقہ سیکشن کے سپرد کرنے کی کوشش کی پھر زاہد منصوری نے صوبائی الیکشن کمشنر کو وصول کرانے کی کوشش کی تاہم مبہم لیٹر کو الیکشن کمیشن نے وصول کرنے سے انکار کیا الیکشن کمیشن حکام نے ایم کیوایم رہنما کو باور کرایا کہ وہ قانونی طریقہ کار اختیار کریں معاملات کو الجھانے سے گریز کریں

Leave a Reply

Your email address will not be published.