شاہد خاقان عباسی 29ویں وزیر اعظم بن گئے

جدت ویب ڈیسک : شاہد خاقان عباسی 29ویں وزیر اعظم بن گئے  ن لیگ کے امیدوار کو 187 ووٹ کی برتری حاصل ہےسپریم کورٹ آف پاکستان کی جانب سے نواز شریف کی نا اہلی کے بعد آج نئے وزیر اعظم کا انتخاب کیا جارہا جس کے لیے قومی اسمبلی میں ووٹنگ کا عمل مکمل ہوگیا۔تفصیلات کے مطابق نئے وزیر اعظم کے انتخاب کے لیے قومی اسمبلی کا اجلاس اسپیکر ایاز صادق کی زیر صدارت ہورہا ہے۔ اجلاس میں قائد ایوان منتخب کرنے کے لیے رائے شماری کا عمل مکمل ہوگیا۔حکمران جماعت مسلم لیگ ن کی جانب سے شاہد خاقان عباسی کو وزیر اعظم کے عہدے کے لیے امیدوار نامزد کیا گیا ہے جبکہ حکومت کو جمعیت علمائے اسلام ف کی حمایت بھی حاصل ہے۔تحریک انصاف کی جانب سے عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید کا نام دیا گیا ہے۔ انہیں ق لیگ کی حمایت بھی حاصل ہے۔پیپلز پارٹی کی جانب سے اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ اور سید نوید قمر نے وزارت عظمیٰ کے لیے کاغذات نامزدگی جمع کروائے تاہم اجلاس سے کچھ دیر قبل خورشید شاہ نے اپنے کاغذات نامزدگی واپس لے لیے۔جماعت اسلامی کے صاحبزادہ طارق اللہ بھی وزیر اعظم کے عہدے کے لیے امیدوار ہیں۔آج صبح مسلم لیگ ن اور ایم کیو ایم پاکستان کے وفود کے درمیان بھی ملاقات ہوئی جس کے بعد ایم کیو ایم نے وزارت عظمیٰ کے لیے شاہد خاقان عباسی کی حمایت کرنے کا اعلان کردیا۔ تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے وزارت عظمیٰ کیلئے اپنے امیدوار کو ووٹ کاسٹ کرنے کی حامی بھر لی۔پی ٹی آئی رہنما شفقت محموداور شیریں مزاری نے کہا ہے پارلیمانی پارٹی نے عمران خان کو وزارت عظمیٰ کے انتخاب میں ووٹ دینے کی درخواست کی ، جس پر عمران خان نے ووٹ ڈالنے کیلئےپارلیمنٹ ہائوس آنے کی یقین دہانی کرائی ہے اور وہ وزارت عظمیٰ کےاپنے امیدوار شیخ رشید کیلئے اپنا ووٹ کاسٹ کریں گے۔واضح رہے کہ اس سے پہلے چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے پارلیمنٹ ہاؤس سے معذرت کی تھی لیکن پارلیمانی پارٹی کی درخواست پر پارلیمنٹ ہاؤس آنے کی حامی بھر لی۔مسلم لیگ ن کے رہنما چودھری نثار پارلیمنٹ ہاؤس پہنچ گئے،وزارت عظمیٰ کیلئے ن لیگ کے امیدوار کیلئے ووٹ کاسٹ کرینگے۔میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چودھری نثار نے کہا کل گھر والوں کیساتھ کھانا کھانے باہر گیاتوعمران خان سے اتفاقیہ ملاقات ہوگئی،تفصیلات کے مطابق نواز شریف کی نااہلی کے بعد وزارت عظمیٰ کیلئے ووٹنگ آج ہو گی جس کیلئے مختلف سیاسی جماعتوں نے اپنے اپنے امیدوار نامزد کر رکھے ہیں ۔نمبر گیم میں ن لیگ کو واضح اکثریت حاصل ہیں جبکہ اپوزیشن جماعتوں میں متفقہ امیدوار پر اتفاق رائے نہیں ہو سکے جس کے بعد پیپلزپارٹی کی طرف سے نوید قمر ،تحریک انصاف کی جانب سے شیخ رشید اور جماعت اسلامی کے امیدوار بھی انتخاب میں حصہ لیں گے اے این پی کے دوارکان نے ووٹنگ میں حصہ نہیں لیامسلم لیگ ن کے نامزد کردہ امیدوار شاہد خاقان عباسی نے 221 ووٹ حاصل کر کے فتح حاصل کرلی۔پیپلز پارٹی کے نوید قمر نے 47 ووٹ، پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے نامزد کردہ شیخ رشید نے 33 جبکہ جماعت اسلامی کے امیدوار صاحبزادہ طارق اللہ نے 4 ووٹ حاصل کیے۔

 

Leave a Reply

Your email address will not be published.