Asif Zardari Pakistan PPP

حکمرانوں کی عیاشیوں کا بوجھ عوام پر نہیں ڈالنے دینگے‘پیپلزپارٹی

لاہور ‘لاڑکانہ جدت ویب ڈیسک پیپلز پارٹی پارلیمنٹرینز کے سربراہ و سابق صدر مملکت آصف زرداری نے کہا ہے کہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے سے مہنگائی بڑھے گی، موجودہ حکومت عوام کا خون نچوڑ رہی ہے۔اپنے ایک بیان میں انہوں نے آصف زرداری نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے پرموجودہ حکومت پرشدید تنقید کرتے ہوئے کہا کہ حکومت کی معاشی پالیسیاں غریب دشمن ہیں، پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ ظالمانہ اقدام ہے حکومت قیمتوں میں اضافے کو واپس لے۔انہوں نے مزید کہا کہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے سے مہنگائی بڑھے گی، موجودہ حکومت عوام کا خون نچوڑ رہی ہے۔دوسری جانب پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ عوام غربت کی چکی میں پسے جارہے ہیں جبکہ حکمران بانسری بجارہے ہیں حکمرانوں کی عیاشیوں کا بوجھ کبھی بھی عوام پر ڈالنے نہیں دینگے بدھ کے روز پٹرولیم مصنوعات میں اضافے کے خلاف اپنے جاری بیان میں بلاول بھٹو نے حکومت پر تنقید کرتے ہوئے پٹرول کی قیمت بڑھانے کی مذمت کی ہے انہوں نے کہا کہ حکومت نے ہر پاکستانی کے گھر پر پٹرول بم گرادیا قیمتیں بڑھانا عوام کے خلاف انتقامی کارروائی ہے کسینو معیشت کے ذریعے عوام کو لوٹا جارہا ہے عوام غربت کی چکی میں پسے جارہے ہیں جبکہ حکمران ایک نااہل شخص کی کرپشن بچانے کے لئےتنگ دو کررہی ہے انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ پٹرول کی قیمت فوری کم کی جاہیں ورنہ عوامی احتجاج ہونگے کیونکہ ہم حکمرانوں کی عیاشیوں کا بوجھ عوام پر ڈالنے نہیںدینگے انہوں نے مزید کہا کہ نواز حکومت نے پاکستانی عوام کو قرضوں کے دلدل میں دھونس دیا پچھلے4سالوں میں ریکارڈ قرضے لیے گئے مگر ہماری معیشت دن بدن کم ہوتی جارہی ہے اس لیے اب وقت آگیا ہے کہ عوام اٹھ کھڑے ہوں تاکہ کرپٹ حکمرانوں کا احتساب ہوسکے قبل ازیں بلاول بھٹو زرداری نے پی بی اے کے نومنتخب عہدیداروں کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ امید ہے پی بی اے عہدیداران جمہوریت کی مضبوطی کے لئے کردار ادا کریں پیپلزپارٹی کی طرف سے پی بی اے سے مکمل تعاون جاری رہے گا۔

امریکہ اپنی ناکامیوں پر پردہ ڈالنے کےلئے پاکستان پر الزامات لگاتا ہے‘ خواجہ آصف
اسلام آباد جدت ویب ڈیسک وزیر خارجہ خواجہ آصف نے کہا ہے کہ پاکستان ایک آزاد اورخود مختار ملک ہے ، کسی بیرونی مفاد کے تحت پالیسی نہیں بنے گی، پاکستان کی خود مختاری مفادات کو مد نظر رکھیں گے اور جو گائیڈ لائن پارلیمنٹ دے گی اس کے تحت خارجہ پالیسی بنائیں گے،امریکہ اپنی ناکامیوں پر پردہ ڈالنے کے لئے پاکستان پر الزامات عائد کرتا ہے جبکہ ساری دنیا جانتی ہے کہ پاکستان نے دہشت گرد ی کے خلاف جنگ میں سب سے زیادہ کامیابیاں حاصل کی ہیں۔امریکی وزیر خارجہ کے دورہ جنوبی ایشیا پر وزیر خارجہ خواجہ آصف نے سینیٹ میں بیان دیتے ہوئے کہا کہ اسٹیٹ ڈیپارٹمنٹ اورنیشنل سیکیورٹی کے ادارے پالیسی فریم کریں،فرحت اللہ بابرنے کہا کہ امریکا کو تجویز دی گئی ہے کہ سیاستدان پالیسی اپنائیں ، میں یقین دلاتا ہوں ہم یہی پالیسی اپنے ملک میں بھی لاگو کرنے کی کوشش کر رہے ہیں، خارجہ پالیسی کا اختیار کسی ایک ادارے کے پاس نہیں، اس کے خدو خال پارلیمنٹ اور قومی سیکیورٹی کمیٹی میں مشاورت سے بن رہے ہیں، پارلیمنٹ کی دی ہوئی گائیڈ لائن کے مطابق ہی خارجہ پالیسی بنائیں گے. پاکستان اپنے مفادات کا بھرپور تحفظ کرتا ہے اور امریکا سے تعلقات میں بھی مفادات کا تحفظ کریں گے، امریکا آج یہاں ہے تو کل نہیں لہذا اس کے لیے ہم نے علاقائی حل ڈھونڈنے کی کوشش کی اور خطے کے ممالک علاقائی حل تلاش کرکے امن کو یقینی بنائیں۔الیکشن کے دوران امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا مختلف موقف تھا اسے تبدیل ہوکر نئی شکل آگئی ہے،امریکا اس پالیسی سے آزاد ہو کر نئی پالیسی بنائے تو بہتر ہوگا۔امریکی حکام جب پاکستان کو الزام دیتے ہیں تو اپنی ناکامی پر پردہ ڈال رہے ہوتے ہیں۔

 

اجازت ملے نہ ملے‘ ایم کیوایم کا جلسہ ہرحال میں ہوگا‘فاروق ستار
کراچی جدت ویب ڈیسک ایم کیوایم پاکستان کے سربراہ ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا ہے کہ مردم شماری میں سندھ کے ساتھ ناانصافیوں کے خلاف کراچی میں احتجاجی جلسے کی اجازت نہ دے کر ہمارے ساتھ ایک اور ظلم کیا جارہا ہے۔کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے فاروق ستار نے کہا ہے کہ مردم شماری کے نتائج کے خلاف احتجاج کرنا ہمارا سیاسی اور بنیادی حق ہے۔پولیس اور انتظامیہ کی جانب سے اجازت نہ ملنے کے باوجود بھی 5نومبر کو کراچی میں جلسہ ہرصورت کریں گے۔ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا کہ انتظامیہ نے بتایا کہ 5نومبر کو گرینڈ ڈیموکریٹوالائنس نے مزار قائد پر جلسے کی اجازت طلب کررکھی ہے جس کی وجہ سے بیک وقت دو جماعتوں کو ایک ہی مقام پر جلسے کی اجازت نہیں مل سکتی جس پرایم کیوایم نے انتظامیہ سے تعاون کرتے ہوئے مقام تبدیل کرنے پر آمادگی ظاہر کی اور مزار قائد سے ملحقہ شاہراہ قائدین پر جلسے کرنے پر فیصلہ کیا لیکن انتظامیہ نے یہاں بھی ہمیں جلسہ کرنے کی اجازت نہیں دی،ہمیں جلسہ کرنے سے روکنا ایک اور ظلم و زیادتی ہے۔انہوں نے کہا کہ قانونی تقاضے پورے کرنے اور انتظامیہ سے مکمل تعاون کے باوجود اجازت نہ ملنے پربہرصورت جلسہ کیا جائے گا اورمقام کا اعلان بعد بھی کیا جائے گا۔ایم کیوایم پاکستان کے سربراہ نے کہا کہ نا تو 22 اگست سے پہلے اور نا ہی 22 اگست 2016 کے بعد کوئی منی لانڈرنگ ہوئی اگر 22 اگست سے پہلے کوئی منی لانڈرنگ ہوئی ہے تو اس کا مجھے علم نہیں، وہ اس بات کی ضمانت دے رہے ہیں کہ 23 اگست کے بعد ایک پیسہ بھی لندن، یا دبئی نہیں گیا۔ خواجہ سہیل منصور، احمد علی اور ارشد وہرا بھی منی لانڈرنگ میں ملوث نہیں ان پر لگنے والا الزام بھی جھوٹاہے۔ ہمارا الطاف حسین یا لندن میں مقیم کسی شخص یا ملک میں ایم کیو ایم لندن کے لیے کام کرنے والے کسی فرد سے کوئی رابطہ نہیں۔فاروق ستار نے مزید کہا کہ سیاسی جماعتوں کے ساتھ ہماری پنجہ آزمائی ہوتی رہتی ہے لیکن اگر معذرت کے ساتھ میڈیا کے کچھ اینکر بھی ایک فریق بن رہے ہیں۔ ہمارے آئینی اور قانونی ماہرین کا مشورہ ہے کہ ہم پر کسی بھی الزام کی تردید لازمی ہے کیونکہ یہ قانونی ضرورت ہے۔ ہم ان الزامات کی تردید کررہے ہیں۔

متحدہ بانی کو رقوم بھیجنے کیلئے کون کون سائن کرتا تھا‘ جانئے
کراچی جدت ویب ڈیسک متحدہ بانی پر منی لانڈرنگ کے مقدمے کی تلوار بدستور لٹک رہی ہے۔ ڈپٹی میئر کراچی کو بھی ہنوز کلین چٹ نہیں ملی۔ تفتیشی ذرائع کہتے ہیں ارشدہ وْہرہ سمیت کسی کا نام مقدمے سے نہیں نکالا گیا۔ بیانات کے لئے ارشد وْہرہ اور دیگر کو خطوط لکھ دیئے گئے ہیں۔ ایف آئی اے کی تحقیقاتی رپورٹ کے مطابق منی لاںڈرنگ کے لئے 13 جوائنٹ بینک اکاؤنٹس استعمال کئے گئے جو کہ عزیز ا?باد کے نجی بینکوں میں کھولے گئے۔ اکاؤنٹس بنانے کیلئے کے کے ایف، سن اکیڈمی، نذیر حسین یونیورسٹی اور طارق میر کے نام استعمال کئے گئے۔ 13 میں سے 1 اکاؤنٹ ختم جبکہ 4 غیر فعال ہو چکے ہیں۔ ڈاکٹر فاروق ستار اور ارشد وہرہ تمام اکاؤنٹس کے چیکس پر دستخط کرنے کے مجاز تھے جبکہ مصطفیٰ کمال بھی چار اکاؤنٹس کے چیکس دستخط کرتے رہے۔ بابر غوری، رؤف صدیقی، خالد مقبول صدیقی، کنور خالد یونس اور دیگر بھی یہ اختیار رکھتے تھے۔ تفتیشی ذرائع کا کہنا ہے کہ تفتیش کے دوران مزید نئے نام بھی شامل ہو سکتے ہیں

آصف زرداری ٹولہ سیاست کے نام پر کلنک کا ٹیکہ ہے،ڈاکٹر عارف علوی
کراچی جدت ویب ڈیسک پاکستان تحریک انصاف سندھ کے صدر و رکن قومی اسمبلی ڈاکٹر عارف علوی نے کہا ہے کہ آصف زرداری ٹولہ سیاست کے نام پر کلنک کا ٹیکہ ہے۔ 05نومبر کو ضلع گھوٹکی اوباڑو میں ہونے والا جلسہ سندھ کی سیاست میں اہم سنگ میل ثابت ہوگا۔ سندھ سے کرپشن اور لوٹ مار کے خاتمے کے لئے تحریک انصاف کے قائد چیئرمین عمران خان سندھ کا بار بار دورہ کریں گے اور شہر تحصیل میں عوامی اجتماعات سے خطاب کریں گے۔ تحریک انصاف کی سیاست جدوجہد سے ہی موروثی اور روایتی سیاست کا خاتمہ ہوگا۔ سیاست کے نام پر لوٹ مار کرنے والوں کے دن ختم ہوچکے ہیں ۔ یہ باتیں انہوں نے پارٹی سیکریٹریٹ ’’انصاف ہائوس ‘‘ کراچی میں ایک اہم اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہیں۔ اجلاس میں کراچی ڈویژن کے صدر فردوس شمیم نقوی ،دیوان سچل، الیاس شیخ ، دوا خان صابر ، اظہر لغاری، طاہر ملک اور دیگر رہنمائوں نے بھی شرکت کی۔ ڈاکٹر عارف علو ی نے مزید کہا کہ سندھ حکومت اور انکے آقائوں کا ایک ہی کام رہ گیا ہے اور وہ کام صرف سندھ کے عوام کے وسائل لوٹنا ہے۔ حکمرانوں کی کرپشن اور جان بوجھ کر گنے کی کرشنگ کا آغاز نہ کرنا آبادگاروں کے ساتھ زیادتی ہے۔ سارا سال محنت کر کے گنا اگاتے ہیں لیکن شوگر ملز مالکان جان بوجھ کر گنا وقت پر نہیں خریدتے اور آبادگاروں کو مناسب معاوضہ نہیں ملتا ۔ ڈاکٹر عارف علو ی نے مزید کہا کہ سندھ حکومت اپنے آقائوں کو فائدہ پہنچانے کے بجائے ہوش کے ناخن لیں اور بلا تاخیر شوگر ملیں چلانے کا نوٹیفکیشن جاری کر کے گنے کی قیمت میں بھی مناسب اضافہ کریں تاکہ آبادگاروں اور کسانوں کو انکی محنت کا سلہ مل سکے ۔

نیب نے پوری سندھ حکومت کو عدالتوں میں بٹھایا ہوا ہے،سید مراد علی شاہ
کراچی جدت ویب ڈیسک وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ نیب نے پوری سندھ حکومت کو عدالتوں میں بٹھایا ہوا ہے۔ہم احتساب کے مخالف نہیں ہیں ، احتساب کریں لیکن کسی کو سیاسی اور انتقامی کارروائی کا نشانہ بنایا جائے گا اور سب کے لےے الگ الگ قانون بنائے جائیں تو ہم احتجاج کریں گے۔ مقدمات سے نہیں ڈرتے ۔ میرے خلاف جو مقدمات بنانا ہیں ، بنا لیں ۔ نیب کوئی عدالت نہیں ہے ، جس کے خلاف کوئی بات نہ کی جا سکے ۔ یہ ایک ایسا ادارہ ہے ، جسے ڈکٹیٹر نے قائم کیا تھا ۔ میں بڑے احترام سے سندھ ہائیکورٹ سے استدعا کرتا ہوں کہ وہ شرجیل میمن کی عدالت کے احاطے سے گرفتاری کا نوٹس لے اور اسی طرح کارروائی کرے ، جس طرح ذولفقار مرزا کے گارڈز کی گرفتاری پر کی گئی تھی ۔ وہ بدھ کو سندھ اسمبلی میں پیپلز پارٹی کے رکن خورشید جونیجو کی نیب کے خلاف پیش کردہ قرار داد پر پالیسی بیان دے رہے تھے ۔ وزیر اعلیٰ سندھ نے کہاکہ ہم اسمبلی میں نیب کے امتیازی اور متعصبانہ سلوک کے خلاف قرار داد لائے ہیں ۔ نیب کے متعصبانہ اور امتیازی سلوک کا ذکر سپریم کورٹ کے ایک فیصلے میں بھی ہے ۔ نیب کے اس رویہ پر بات کرنے کا مطلب عدالتوں پر تنقید نہیں ہے ۔ وزیر اعلیٰ سندھ نے کہاکہ شرجیل میمن نے عدالتوں میں اپنے آپ کو پیش کیا ۔ وہ کہیں بھاگے نہیں ۔ نیب نے کس طرح انہیں ہائیکورٹ کے احاطے سے گرفتار کیا ۔ نیب نے یہ کارروائی کرکے سندھ ہائیکورٹ کی تذلیل کی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اگر کوئی کام غلط کرے گا تو ہم تنقید کر سکتے ہیں ۔ سندھ حکومت کو سندھ کے لوگوں نے منتخب کیا ہے ، اس پر تنقید ہو سکتی ہے تو نیب پر کیوں نہیں ۔ وزیر اعلیٰ سندھ نے اپوزیشن ارکان کو مخاطب کرتے ہوئے کہاکہ اسمبلی کے اندر عدالتیں نہ لگائی جائیں اور بغیر ثبوت کے کسی کو کرپٹ نہ کہا جائے ۔ یہ رویہ درست نہیں ہے ۔ انہوں نے کہاکہ جس کے اوپر الزام ہے ، اس پر مقدمہ چلنا چاہئے لیکن جس پر مقدمہ چل رہا ہو ، اس پر یہاں بیٹھ کر فیصلہ نہیں کیا جا سکتا ۔ انہوں نے کہاکہ اپوزیشن ارکان سے کہاکہ آپ لوگ ڈرتے ہیں ۔ اس لےے غلط کو غلط نہیں کہتے ۔ ہم نہیں ڈرتے ہیں ، ہم نتائج کا مقابلہ کریں گے اور غلط کو غلط کہیں گے ۔ انہوں نے کہاکہ نیب کا دہرا معیار ہے اور امتیازی سلوک ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم عدالتوں کا احترام کرتے ہیں ۔ ہم وہ نہیں ہیں ، جو عدالتوں میں نہ جائیں ۔ ہم وہ نہیں ہیں ، جو معافی نامے لکھ کر دیں ۔ قرار داد منظور کرنے کا مطلب یہ بھی نہیں ہے کہ شرجیل میمن کے مقدمات ختم کر دیئے جائیں ۔ ہم نیب کے غیر قانونی اقدام کے خلاف قرار داد منظور کر رہے ہیں ۔ وزیر اعلیٰ سندھ نے کہاکہ ہم وفاق سے کہیں گے کہ نیب اپنا رویہ درست کرے ۔ نیب نے پوری سندھ حکومت کو عدالتوں میں بٹھایا ہوا ہے ۔ ہم احتساب کے مخالف نہیں ہیں ، احتساب کریں لیکن کسی کو سیاسی اور انتقامی کارروائی کا نشانہ بنایا جائے گا اور سب کے لےے الگ الگ قانون بنائے جائیں تو ہم احتجاج کریں گے ۔ وزیر اعلیٰ سندھ نے کہا کہ سندھ کے عوام سب سے بڑے منصف ہیں ، جو ہمارے بارے میں کارکردگی کی بنیاد پر اگلے عام انتخابات میں فیصلہ کریں گے ۔ انہوں نے کہا کہ سندھ اسمبلی کوئی عدالت نہیں کہ کچھ لوگ یہ کہہ رہے ہیں کہ یہاں قرآن شریف لا کر یہ کہہ دیا جائے کہ ہم نے کوئی کرپشن نہیں کی ۔ انہوں نے خرم شیر زمان کا نام لےے بغیر کہا کہ اب میں کچھ لوگوں کے ٹھیکوں کے بارے میں تحقیقات کروں گا اور اب ٹھیکے لینے والوں کو نہیں چھوڑوں گا ۔ انہوں نے قائد حزب اختلاف خواجہ اظہار الحسن کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے یہاں شرجیل انعام میمن کے خلاف مقدمہ واپس لینے کی کوئی بات نہیں کی ۔ اسے عدالت میں چلنا ہے ۔ ہم ہر قسم کے نتائج بھگتنے کے لےے تیار ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ایک صاحب روزانہ رات 8 بجے ایک ٹی وی چینل پر آکر مضحکہ خیز دعوے کرتے ہیں ۔ ان کا کہنا ہے کہ میں وعدہ معاف گواہ بن گیا ہوں ۔ اب مجھے ایسی باتوں پر غصہ آنے کے بجائے ہنسی آتی ہے کیونکہ بعض ٹی وی چینلز کے ٹاک شو اب انٹرٹینمنٹ شو بن چکے ہیں ۔

کراچی کے20 مرکزی ہوٹلز میں ریڈ آئی سافٹ ویئر نصب
کراچی جدت ویب ڈیسک آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ نے سینٹرل پولیس آفس میں سی پیک سیکیورٹی فالو اپ اجلاس کی صدارت کے دوران بتایا کہ کراچی کے بیس بڑے مرکزی ہوٹلز میں ریڈآئی ہوٹلز سافٹ ویئر کی تنصیب کے تحت سیکیورٹی کے مجموعی امور کو مذید غیرمعمولی بنانے کے عمل کا باقاعدہ آغاز کردیا گیا ہے جبکہ اس سافٹ ویئر کی حیدرآباد اور سکھر کے مرکزی ہوٹلز میں تنصیب کے اقدامات بھی جلد اٹھائے جائیں گے۔اجلاس میں ایڈیشنل آئی جی اسپیشل برانچ،ایڈمن کراچی، ہیڈکوارٹرزسندھ،آرآرایف، فائنانس،اور میرپورخاص کے ڈی آئی جیزسمیت آپریشنز، اسٹیبلشمنٹ اور ایڈمن کے اے آئی جیزکے علاوہ حیدرآباد،گھوٹکی،ٹھٹہ،مٹھی اورتھرپارکر کے ایس ایس پیز نے بھی شرکت کی۔انہوں نے ایس ایس پیز کو ہدایات دیں کہ تمام چیمبرز/ صنعتی زونز کے عہدیدارن/نمائندوں سے ضلعی سطح پر جلد سے جلد شیڈول اجلاس ترتیب دیں اور انھیں اسٹینڈنگ آپریٹنگ پروسیجرز(SOPs) کے جملہ امور کے ساتھ ساتھ اسکے تحت سی پیک اور نان سی پیک سے وابستہ چائینیز/غیر ملکیوں کے سیکیورٹی اقدامات میں اسپانسرز کی ذمہ داریوں سے بھی باقاعدہ آگاہی کو یقینی بنایا جائے۔انہوں نے ڈی آئی جی آرآرایف کو سی پیک پروجیکٹ کی ہر پندرہ دنوں پر مشتمل سیکیورٹی آڈٹ رپورٹ جبکہ تمام ضلعی ایس ایس پیز کو نان سی پیک پروجیکٹ کی ماہانہ بنیاد پر سیکیورٹی آڈٹ رپورٹ ترتیب دینے اور باقاعدہ ارسال کرنیکی ہدایات دیں۔دریں اثنا انہوں نے ضلعی ایس ایس پیزکوصوبے میں جاری تمام نان سی پیک پروجیکٹس اور اس ضمن میں پولیس ڈپلائمنٹ کی تفصیلات بھی تیار کرنے اور ارسال کرنیکے احکامات دیئے۔

بھارت میں13 ماہ قبل گرفتار 9 پاکستانی ماہی گیر رہا ہوکر آج واپس وطن پہنچیں گے
کراچی جدت ویب ڈیسک سمندری حدود کی خلاف ورزی کی آڑ میں بھارتی سیکورٹی اہلکاروں کے ہاتھوں 13 ماہ قبل گرفتار 9 پاکستانی ماہی گیر رہا ہوکر آج واپس وطن پہنچ رہے ہیں۔ رہائی پانے والے ماہی گیروں میں تین سگے بھائی ناخدا عبدالستار ولد حسین تھیمور، اصغر ولد حسین تھیمور، رشید ولد حسین تھیمور، دو 10 سالا بچے سکندر ولد سومار گھنو اور اکبر ولدد محسن گھنو، 12 سالا علی نواز ولد الہہ ڈنو تھیمور، ابراہیم ولد سومار تھیمور، علی ولد علو تھیمور اور شوکت ولد فیق تھیمور شامل ہیں۔ مذکورہ ماہی گیروں کا تعلق ضلع سجاول کے گائوں باجھریو تھیمور سے ہے۔ اس سلسلے میں پاکستان فشر فوک فورم کے مرکزی چیئرمین محمد علی شاہ نے کہا ہے کہ رہائی حاصل کرنے والے ماہی گیروں کو گذشتہ برس اکتوبر میں بھارتی سیکورٹی اہلکاروں نے متنازعہ سمندری حدود سیر کریک کے قریب سے گرفتار کرلیا تھا۔ انہوں نے بتایا کہ ماہی گیر بچوں کے روزگار کیلئے مچھلی کی تلاش میں سیر کریک پہنچ جاتے ہیں، جہاں سے دونوں ممالک کے سیکورٹی اہلکار انہیں گرفتار کر کے سالوں تک جیلوں میں بند کر دیتے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ ریڑھی گوٹھ کراچی سے تعلق رکھنے والے 3 ماہی گیر زمان جت، عثمان سچو اور عثمان جت گذشتہ 18 سالوں سے بھارتی جیلوں میں قید کی اذیت برداشت کر رہے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ گذشتہ روز حکومت پاکستان کی طرف سے کراچی کی جیلوں سے 68 سے زائد بھارتی ماہی گیروں کو رہا کر کے واطن روانہ کیا گیا ہے، لیکن بھارتی حکومت نے ہمیشہ کی طرح سنگدلی کا ثبوت دیتے ہوئے چند پاکستانی ماہی گیروں کو آزاد کیا ہے۔ انہوں نے دونوں ممالک کی حکومت سے مطالبہ کیا کہ دونوں ممالک کی جیلوں میں قید تمام ماہی گیروں کو رہا کر کے انہیں سمندر سے بچوں کی روزی حاصل کرنے کا حق مہیا کیا جائے۔

53ارب روپے کرپشن کیس ، ملزمان کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری
کراچی جدت ویب ڈیسک احتساب عدالت نے سندھ میں زمینوں کے ریکارڈ میں 53 ارب روپے کی کرپشن میں سابق سینئر ممبر بورڈ آف ریونیو و سیکریٹری لینڈ یوٹیلائیزیشن شاہ ذر شمعون، قاسم تھیم اور اسماعیل بلوچ کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کردیئے۔ سندھ میں زمینوں کے ریکارڈ میں 53 ارب روپے کی کرپشن سے متعلق سماعت احتساب عدالت کے روبرو ہوئی۔ ملزم عبد الطیف بروہی کے وکیل نے کہا کہ وعدہ معاف گواہ کے لیے درخواست ڈی جی نیب کو بھیج دی ہے۔ جب تک درخواست کا جواب نہیں آتا فرد جرم عائد نہیں کیا جائے۔ عدالت نے ریفرنس کی مزید سماعت 6 نومبر تک ملتوی کردی۔ ملزمان سابق ڈپٹی کمشنر ملیر، عبید اللہ پنہور اور عبد الطیف بروہی سمیت دیگر پیش ہوئے۔ نیب کے مطابق شاہ ذر شمعون نے اپنے اختیارات کا ناجائز استعمال کیا۔ملزمان نے سی شوردیہہ کورنگی کی 530 ایکڑ زمین کی جعلی اور بوگس انٹریاں کیں۔

عدالت نے خاتون پولیو ورکر کوہراساں کرنے والے ملزم کو جیل بھیج دیا
کراچی جدت ویب ڈیسک کراچی کی مقامی عدالت نے خاتون پولیو ورکر کوہراساں کرنے والے ملزم کو جیل بھیج دیا ہے ۔بدھ کو پولیو ورکر کو ہراساں اور زخمی کرنے والے ملزم شرافت کو کورنگی پولیس نے عدالت میں پیش کیا ملزم پر الزام ہے کہ اس نے خاتون پولیو ورکر کو مہم کے دوران گھر میں لے جاکرچھری دکھا کر زیادتی کی کوشش کی عدالت نے ملزم کو 14 روز کے لیے عدالتی تحویل پر جیل بھیجنے کا حکم دے دیاعدالت نے مقدمہ کا چالان آئندہ سماعت پر طلب کرلیا

ڈی جی رینجرز نے ’’فاطمہ جناح گورنمنٹ گرلز اسکول‘‘میں کمپیوٹر لیب کا افتتاح کردیا
کراچی جدت ویب ڈیسک ڈی جی رینجرزسند میجر جنرل محمدسعید نے ” زندگی ٹرسٹ” کے زیرِ انتظام ’’فاطمہ جناح گورنمنٹ گرلز اسکول‘‘ کا دورہ کیاجس کے دوران معروف گلوکار اورپاکستان میں اقوام متحدہ کے نامزد کردہ خیر سگالی کے سفیر شہزاد رائے اور اسکول انتظامیہ نے ڈی جی رینجرز کو اسکول کی نصابی سرگرمیوں اور ٹرسٹ کے انتظامی امور کے متعلق آگاہ کیا۔ اس موقع پر ڈی جی رینجرز نے اسکول میں پاکستان رینجرزâسندھáکے تعاون سے کمپیوٹر اور ریاضی کی تعلیم کے لیے قائم کی گئی جدید لیبارٹری کا افتتاح کیا ۔ ڈی جی رینجرز نے اپنے خیالات کا اظہار کر تے ہوئے اس بات کو اجاگر کیا کہ تعلیمی اداروں میں جدید سہولیات تعلیم کے معیار کو بلند کر نے میں اہم حثییت رکھتی ہیں۔ اس سلسلے میں یہ جدید لیباٹری طالبات میں کمپیوٹر اور ریاضی کی تعلیم کے فروغ میں مثبت کردار ادا کرے گی۔ ڈی جی رینجرز نے اسکول کی طالبات کی اعلی کارکردگی میں زندگی ٹرسٹ اور اسکول انتظامیہ کی کاوشوں کو سراہا اورنیک تمناں کا اظہار کیا۔

 

Leave a Reply

Your email address will not be published.