ایسی پڑھائی سے موت اچھی‘ درجنوں طلبہ نے جان دیدی لیکن کیوں؟ جانئے // #Indian #IndianStudent

نئی دہلی  جدت ویب ڈیسک  انڈین میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارتی ریاستوں تلنگانہ اور آندھرا پردیش میں گزشتہ دو ماہ سے بھی کم عرصہ کے دوران 50 طلبہ نے اپنی جانوں کو خود اپنے ہی ہاتھوں سے ختم کر کے موت کو گلے لگا لیا ہے۔ ایسا ہی ایک واقعہ رواں ہفتے پیش آیا جس نے پھندا لگا کر خود کشی کر لی تھی۔ خود کشی کرنے والی ایک طالبہ جس کا نام سمیوکتا بتایا جا رہا ہے۔ اس نے اپنی آخری تحریر میں واضح لکھا تھا کہ وہ پڑھائی کے دباؤ کو برداشت نہیں کر پا رہی ہے۔ خود کشی کرنے والی سمیوکتا کے والد پیشہ کے اعتبار سے ڈرائیور ہیں کا خواب تھا کہ ان کی بیٹی ڈاکٹر بنے۔ چائلڈ رائٹس ایکٹویٹس جو ایسے کیسز کی جانچ پڑتال کر رہی ہے اپنی رپورٹ میں تعلیمی نظام کو ہی موردِ الزام قرار دیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.