protest in karachi

امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کی ریلی پرتشدد رخ اختیار کرگئی

کراچی جدت ویب ڈیسک امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے پاکستان پر عائد کیے جانے والے الزامات کے خلاف امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کی ریلی پرتشدد رخ اختیار کرگئی۔پولیس ذرائع کے مطابق ایم اے جناح روڈ پر آئی ایس او کے کارکنان اور پولیس کے درمیان جھڑپ ہوگئی، مظاہرین رکاوٹیں ہٹاکر آگے بڑھنا چاہتے تھے تاہم پولیس نے انہیں روکنے کے لیے لاٹھی چارج اور آنسو گیس کی شیلنگ کی جس کے نتیجے میں متعدد مظاہرین زخمی ہوگئے۔ پولیس کے لاٹھی چارج کے بعد مظاہرین بھی مشتعل ہوگئے اور انہوں نے پولیس پر پتھرا ئوکیا۔اطلاعات کے مطابق مظاہرین امریکی قونصل خانے کی جانب جانا چاہتے تھے تاہم انہیں پولیس کی جانب سے روکا گیا، پہلے مذاکرات کے ذریعے مظاہرین کو منتشر کرنے کی کوشش کی گئی تاہم بات چیت ناکام ہونے کے بعد پولیس نے ہوائی فائرنگ اور آنسو گیس کی شیلنگ شروع کردی۔ تصادم کے نتیجے میں متعدد افراد زخمی ہوئے جنہیں قریبی اسپتالوں میں منتقل کردیا گیا۔پولیس کا کہنا ہے کہ ریلی کے شرکا کو امریکی قونصل خانے جانے کی اجازت نہیں ہے، انہیں شاہ خراساں سے نمائش چورنگی تک امریکا مخالف ریلی نکالنے کی اجازت دی گئی تھی اور مظاہرین پر امن طریقے سے نمائش چورنگی بھی پہنچ گئے تھے اور وہاں امریکا مخالف نعرے لگارہے تھے۔ تاہم بعد ازاں مظاہرین نے آگے جانے کی کوشش کی جس پر پولیس اہلکاروں نے انہیں روکنے کی کوشش کی اور معاملہ بگڑ گیا۔ پولیس کا کہنا ہے کہ پتھرائو کرنے پر 6 افراد کو حراست میں بھی لیا گیا ہے جب کہ کشیدگی ختم کرنے کے لیے ریلی کی قیادت مذاکرات جاری ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.