Israeli Forces Firing 10 Citizens Killed

اسرائیلی فوج نے العراقیب گاؤں 133 ویں مرتبہ مسمار کردیا

جزیرہ نما النقب جدت ویب ڈیسک :اسرائیلی فوج نے العراقیب گاؤں 133 ویں مرتبہ مسمار کردیا ، فلسطینی قصبے کی مسماری کا سلسلہ جولائی 2010ئ کے بعد سے جاری ہے اور اب تک اسے 133 بار مسمار کیا جا چکا ہے۔اطلاعات کے مطابق العراقیب گاؤں کی تازہ مسماری کی کارروائی گزشتہ روز کی گئی۔ عینی شاہدین نے بتایا کہ صہیونی فوج، پولیس اور اسپیشل فورسز کے سیکڑوں اہلکاروں نے بھاری میشنری اور بلڈوزروں کی مدد سے شہریوں کے مکانات کی مسماری شروع کی ور سینکڑوں فلسطینیوں کو ایک مرتبہ پھر سخت موسم کے باوجود ان کی کچی جھونپڑیوں سے بھی محروم کردیا گیا۔شہریوں نے بتایا کہ انہدامی کارروائی سے قبل اسرائیلی فو کی کئی گاڑیاں وہاں آ کر رکیں جس کے بعد بلڈوزر اور دیگر بھاری مشینری وہاں لائی گئی اور چند منٹ کے اندر اندر فلسطینیوں کے عارضی شیلٹرز گرا دیے گئے۔العراقیب جزیرہ نما النقب کی ان 51 بستیوں میں سے ایک ہے جنہیں صہیونی حکومت نے غیرقانونی قرار دے رکھا ہے اور وہاں پر رہنے والوں کے کچے مکانات اور جھونپڑیاں آئے روز مسمار کی جاتی ہیں۔ مجموعی طورپر جزیرہ النقب میں اڑھائی لاکھ فلسطینی عرب بدو آباد ہیں۔ اسرائیل صدیوں سے آباد ان فلسطینیوں کو غیرقانونی باشندے قرار دیتا ہے۔ یہ جزیرہ کل فلسطینی رقبے کا 40 فیصد ہے جس کا کل رقبہ 12 ہزار 577 مربع کلو میٹر ہے اور اس میں دو لاکھ فلسطینی آباد ہیں۔ اسرائیل اس جزیرے کی فلسطینی آبادی کو 8دیہاتوں تک محدود کرنے کےلئے کوشاں ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.