دہشتگردی کیخلاف جنگ میں شہید ہونیوالے سیاستدان ہارون بلور کی آج پہلی برسی

July 10, 2019 11:27 am

پشاور ۔جدت ویب ڈیسک :: دہشت گردی کے خلاف جنگ میں والد کے نقش قدم پر چل کر جان قربان کرنے والے عوامی نیشنل پارٹی کے رہنماء ہارون بلور کوبچھڑے ایک سال بیت گیا۔
عام انتخابات 2018 کے دوران انتخابی مہم اپنے عروج پر تھی، پشاور کے حلقہ پی کے78 پراے این پی نے اپنے شہید رہنماء بشیربلور کے صاحبزادے ہارون بلور کو اپنا امیدوارنامزد کیا، ہارون بلور حلقے میں انتخابی مہم پر تھے کہ اس دوران یکہ توت میں خودکش حملہ آور نے ہارون بلور کے قریب آکرخود کو دھماکے سے اڑا دیا،ہارون بلور اس حملے میں جان کی بازی ہارگئے۔ اس حملے میں اے این پی کے 13 کارکن بھی جان سے ہاتھ دھو بیٹھے۔بشیربلور کے ہاں 1970 میں آنکھ کھولنے والے بیرسٹرہارون بلور اپنے والد کی شہادت کے بعد سیاسی وارث بنے۔ ٹاؤن ون پشاور کے ناظم کی حیثیت سیاسی سفر کا آغاز کیا،سیاست میں والد کی جگہ تو نہ ملی شہادت میں والد کے برابر مقام پالیا۔ہارون بلور کے والد بشیربلور کو دسمبر 2012 میں ایسے ہی ایک خود کش حملے میں شہید کیا گیا ،ہارون بلور کے صاحبزادے دانیال بلور اپنے والد اور دادا کے سیاسی مشن کو آگے بڑھانے کےلئے پرعزم ہیں۔

متعلقہ خبریں