نوٹس جاری ،سیمنٹ فیکٹریوں کی زیر زمین پانی کے استعمال سے متعلق رپورٹ سپریم کورٹ میں پیش

November 8, 2018 5:55 pm

جدت ویب ڈسیک ) سیمنٹ فیکٹریوں نے زیر زمین پانی کے استعمال سے متعلق رپورٹ سپریم کورٹ میں پیش کر دی۔اٹارنی جنرل، ڈی جی ایف آئی اے، پراسیکیوٹر جنرل نیب اور ایڈووکیٹ جنرل سندھ کو نوٹسز جاری کر دیئے ہیں۔رپورٹ کے مطابق سیمنٹ فیکٹریوں نے صنعتی استعمال کیلئے زیر زمین پانی کا استعمال بند کر دیا۔ صرف فیکٹری ملازمین کے ذاتی استعمال کیلئے پانی نکال رہے ہیں۔
اس پر عدالت نے ڈپٹی کمشنر چکوال کو رپورٹ کی تصدیق کرانے کا حکم دے دیا۔  کٹاس راج مندر ازخودنوٹس کی سماعت کے دوران جسٹس اعجاز الاحسن نے استفسار کیا سیمنٹ فیکٹریاں لگانے کے خلاف تحقیقات کہاں تک پہنچی جس پر ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل پنجاب نے بتایا تحقیقات جاری ہیں۔سیمنٹ فیکٹریوں کے وکیل کی تحقیقات کے دوران حراساں نہ کرنے کی درخواست عدالت نے منظور کر لی۔ کیس کی سماعت بدھ تک ملتوی کر دی گئی۔ کچی آبادیوں سے متعلق کیس پر عدالت نے چاروں صوبائی حکومتوں کو عدالتی معاون کی سفارشات پر دس روز میں جواب جمع کرانے کا حکم دے دیا اور سماعت غیرمعینہ مدت تک کیلئے ملتوی کر دی۔سپریم کورٹ نے جعلی بینک اکاؤنٹس کیس 12 نومبر کو سماعت کیلئے مقرر کر دیا۔ چیف جسٹس کی سربراہی میں تین رکنی بینچ سماعت کرے گا۔

متعلقہ خبریں