آئس مینWIM HOF نے دنیائے سائنس کو ورطۂ حیرت میں ڈال دیا

July 25, 2017 11:30 am

جدت ویب ڈیسک :جنہیں دنیا آئس مین کے نام سے جانتی ہے 1959میں نیدرلینڈ کے ایک علاقےStittadمیں پیدا ہوئے۔انہوں نے اپنے ناقابل تصور صلاحیتوں کو دکھاکر20سے زائد ورلڈ ریکارڈ بنائے ۔یہ انتہائی سخت ترین حالات میں یعنی نقطہ انجماد سے کئی گناہ کم سردی میں اور بے پناہ گرمی میں بھی اپنے دل کی دھڑکن،سانسوں اور اعضاء پر کنٹرول کس طرح رکھ پاتے ہیں سائنسدان حیران ہیں۔
ڈاکٹر رونڈا پیٹرک کو انٹرویو دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ میں کبھی بھی اسکول میں نام ور طالب علم نہیں تھا اورنہ ہی نفسیات، سائنس یا کسی دوسرے کلی یا تحقیق نظم و ضبط کا پیشہ اپنانے کیلئے اسکول جاتا تھاتاہم کم عمری میں ہی اس بات کا احساس تھا کہ انسانی رویے،نفسیات اور ارد گرد کے مسائل میںمجھے دلچسپی ہے۔
یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ کئی سال قبل وم ہوف کی زندگی میںایک موڑ ایسا آیا جب اس کی بیوی نے پانچ بچوں کے ساتھ خود کشی کرلی جس کے باعث اسے شدید صدمہ پہنچابیوی کے وفات کے بعد اس کی زندگی اداس گزرنے لگی تھی مگر اس نےفیصلہ کیا کہ وہ ایک”سپر ہیومن“بن کر دکھائے گا اور اس کیلئے اس نے بے حد مشقت کی اوراس قسم کی ٹریننگ کی جس سے ان کا جسم انتہائی کم درجہ اور زیادہ درجہ حرارت برداشت کرسکے۔ اور انہوں نے کئی کارنامے سرانجام دیئے جن میں ورلڈ ریکارڈ سمیت کئی اہم کارنامے درج ذیل ہیں:
ننگے پائوں برف پر میرا تھن جس کا دورانیہ 16گھنٹے 34منٹ تھا ۔
66میٹر تک برف کے نیچے پانی میں تیراکی اور ایک سانس کے بعد 120میٹر فاصلہ مکمل کیا۔
2000میٹر کی بلندی پر ایک ہاتھ پر پورے جسم کا وزن ڈال کر کھڑے رہے۔
2007میں مائونٹ ایوریسٹ کو سر کرنے کی کوشش کی 6.7کلومیٹر تقریباً 22,000فٹ کی اونچائی سر کرنے کے بعد بدقسمتی سے چوٹی سر کرنے میں ناکام رہے کیونکہ ان کا پائوں زخمی ہوگیا تھا۔ یہ بھی ایک بڑا کارنامہ تھا کہ 29,000میں سے 22,000فٹ کی بلندی تک پہنچے جبکہ اکثر کوہ پیما بیماری،ہیپوتھیرمیا کا شکار ہوجاتے ہیں۔
2008میں وم ہوف نے اپنا سابقہ ریکارڈ) 1گھنٹہ 13منٹ اور48سیکنڈ)توڑ کرایک گھنٹہ اور 52منٹ تک آئس بار میں بیٹھے رہے جو کہ حقیقت میں ایک پاگل پن سے کم نہیںاس طرح ان کو گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں درج کیا اور یہ اعزاز اب تک انہیں کے پاس ہے۔
2009 میں20°C – کے قریب درجہ حرارت میں، ایک مکمل میراتھن (42.195 کلومیٹر (26.219 میل))، فن لینڈ میں آرکٹک سرکل کے اوپر مکمل کی واضح رہے کہ انہوں نے شارٹس کے سوا کچھ نہیںپہن رکھا تھا اور یہ فاصلہ 5گھنٹے25منٹ میں طے کرکے ایک ریکارڈ قائم کیا۔
2011 ستمبرمیںWim Hofنے پانی کے بغیر Namib صحرا میں ایک مکمل میراتھن دو ڑ کر دنیا کو حيران کردیا ۔

 

متعلقہ خبریں