دودھ کی قیمتوں میں اضافہ

October 15, 2019 4:44 pm

مصنف -

محمد یاسین صدیقی

کراچی میں ایک بار پھر دودھ کی قیمت میں اضافہ کی بات ہورہی ہے جبکہ اس سے مضافاتی علاقوں لانڈھی، کورنگی، ملیر ،اورنگی ٹائون ،نیوکراچی کے عوام زیادہ متاثر نظر آتے ہیں جبکہ کمشنر کراچی کے اعلان کے مطابق دودھ 94فی لیٹر ہی فروخت ہوگا جبکہ دودھ فروشوں کا کہنا ہے کہ جانوروں کے چارے اور دیگر مہنگائی کی وجہ سے دودھ 110روپے فی لیٹر فروخت کرنا ضروری ہوگیا ہے اور شہر کی کئی دوکانوں پر دودھ 110روپے فی لیٹر ہی فروخت ہورہا ہے غریب عوام بسوں ،منی بسوںاور مجبوری کے تحت ٹیکسی اور رکشوں کے زائد کرایہ سے پہلے ہی پریشانی میں مبتلا ہیں زیادہ تر غریب مضافاتی علاقوں میں رہائش پذیر ہیں اور روزانہ اجرت پر کام کرتے ہیں یہاں علاقوں میں لوم پر کپڑے بنانے کا کام سلائی کڑھائی اور دیگر مزدوری پر روزانہ اجر ت پر کام کرنے والے مزدور زیادہ تر متاثر نظر آتے ہیں۔کیونکہ بجلی کی لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے ان کی مزدوری بھی کم بنتی ہے جب تھکا ہارا مزدور صبح سے شام گھر کو پہبچتا ہے پھر گھر کا چولہا جلتا ہے سبزی گوشت ہرا مصالحہ اور پرچون کاروزانہ کا سودا اس کی کمر توڑ دیتا ہے وہ غریب تھک ہار کر ایک وقت کی چائے بھی نہیں پی سکتا ہے وہ چھوٹے بچوں کو دودھ کیا پلائے گا 110روپے فی لیٹر دودھ اور چینی پتی بھی مہنگی ہوگئی ہے ٹیپال کی ایک کلو سے کم فیملی مکسچر 600روپے سے 900روپے کی ہوگئی ہے جو کہ ایک کلو سے کم ہے اب غریب کا مزدوری کے بعد تھکن مٹانے کیلئے چائے پینا بھی مشکل ہوگیا ہے اب وہ اتنا مہنگا دودھ ،چینی ،پتی ،کس طرح لائے گا کمشنر کراچی کا یہ بیان دودھ 94روپے فی لیٹر ہی فروخت ہوگا مہنگا دودھ فروخت کرنے والوں کے خلاف کاروائی ہوگی میرا ایک کالم کراچی کی ڈائری کے ذریعے متعلقہ حکام سے کہنا ہے کہ اگر دودھ کی قیمت بڑھانی ہے تو وہ 100روپے فی لیٹر کردی جائے جو کہ اکثر دودھ فروش اسی نرخ پر پہلے ہی سے دودھ فروخت کر رہے ہیں دوسری طرف پتی والی کمپنیوں اور ٹیپال چائے والوں کو کہنا ہے کہ وہ زیادہ سے زیادہ 700روپے فی کلو ٹیپال فیملی مکسچر کردیں یہ زیادہ مناسب ہوگا اتنی مہنگی پتی غریب عوام کے لیے پینا مشکل ہوگیا ہے۔
امید ہے کہ متعلقہ حکام قیمتوں پر نظر رکھیں گے ۔شہر کراچی کے فیڈریل بی ایریا، گلشن ،نارتھ کراچی ،اور لیاقت آباد کے گھروں میں پورشن بن کے بک رہے ہیں جبکہ کورٹ نے پورشن کی لیز پر پابندی لگائی ہوئی ہے پراپرٹی کے ایجنٹ عظیم قریشی 12سال سے اس کام سے وابستہ ہیں انہوں نے کہا کہ سیل ڈیڈ کرانے کے لیے مشکلات ہیں اب سیل ڈیڈ کرانے کے لیے رشوت بڑھ گئی ہے اقبال گارڈن اور فاطمہ فلیٹ بفرزون کے بلڈرز وہاب الدین کے بیٹے کی دعوت ولیمہ گزشتہ دنوں گلشن مسکن چورنگی کے شادی ہال میں ہوئی مکمل رپورٹ قریبی اشاعت میں شائع ہوگی ۔