October 11, 2020

ٹویٹر نے امریکی انتخابات سے قبل قواعد و ضوابط مزید سخت کردیے۔ ٹویٹر کا نیا فیچر، ری ٹویٹ سے قبل آئے گا اہم پیغام

نیویارک: سماجی رابطے اور مائیکروبلاگنگ کی ویب سائٹ ٹویٹر نے امریکی انتخابات سے قبل قواعد و ضوابط مزید سخت کردیے۔

ٹویٹر کے ترجمان کی جانب سے جاری ہونے والے اعلامیے میں بتایا گیا ہے کہ غلط معلومات کی روک تھام کے لیے قواعد کو مزید سخت کیا جارہا ہے، اب ایسے ٹویٹ کو ہٹا دیا جائے گا جن میں لوگوں کو تشدد پر اکسانے یا انتخابات کے عمل میں مداخلت کی تلقین کی جارہی ہوگی۔

ترجمان کی جانب سے واضح کیا گیا ہے کہ ’ٹویٹر پر آئندہ ہفتے سے شیئر ہونے والے غیر مصدقہ مواد کو  گمراہ کن قرار دیا جائے گا، کوئی بھی صارف اگر اسے ری ٹویٹ کر ے گا تو اُسے اس حوالے سے مصدقہ معلومات فراہم کی جائیں گی۔

ٹویٹر کی جانب سے پوسٹ میں بتایا گیا ہے کہ ’گمراہ کن معلومات پر مستقبل میں مزید پابندیاں عائد کی جائیں گی، صارین کو خبردار کرنے کے ساتھ ساتھ اب انتخابی مہم چلانے والی سیاسی شخصیات کے ساتھ مخصوص لیبل لگا دیا جائے گا‘۔

کمپنی نے واضح کیا کہ ’امریکی سیاسی شخصیات اور اُن امیدواروں کے اکاؤنٹس پر لیبل لگایا جائے گا جن کے ایک لاکھ سے زائد فالوورز ہوں گے‘۔

ٹویٹر نے بتایا کہ جس ٹویٹ کو لیبل لگایا جائے گا اُسے نہ ری ٹویٹ کیا جاسکے گا اور نہ ہوئی صارف اُس کو کوٹ کرسکیں گے، اس کے ساتھ ہی جواب دینے کا آپشن بھی ختم کردیا جائے گا، علاوہ ازیں ایسے ٹویٹس پر صارفین کو تنبیہی پیغام بھی دکھایا جائے گا جس کو ہٹا کر ہی ٹویٹ پڑھا جاسکے گا۔

سوشل میڈیا پلیٹ فارم کا کہنا ہے کہ اس نے ایسی ٹویٹس پر بھی لیبل لگانے کا فیصلہ کیا ہے جن میں کوئی امیدوار کامیابی کا جھوٹا اعلان کرے۔

October 5, 2020

واٹس ایپ نے صارفین کی بڑی مشکل آسان کردی

ویب ڈیسک ::واٹس ایپ کمپنی نے واٹس ایپ صارفین کی بڑی مشکل آسان کردی ہے۔
تفصیلات کے مطابق اب واٹس ایپ کے اینڈرائیڈ بیٹا ورژن 2.20.201.9 میں پہلی بار ایسا فیچر متعارف کروایا گیا ہے جو صارفین کے لیے اپنی اسٹوریج کا مسئلہ آسان بنادے گا۔
واٹس ایپ صارفین کو اکثر فون کی اسٹوریج اسپیس بھرجانے کا مسئلہ درپیش رہتا ہے جو اس ایپلی کیشن میں دوستوں کی جانب سے بھیجی جانے والی ویڈیوز اور تصاویر کا نتیجہ ہوتا ہے۔
واٹس ایپ کمپنی کی جانب سے اس نئے فیچر کے تحت اسٹوریج بار کا اضافہ ہوگا جو واٹس ایپ ویڈیوز اور تصاویر کے اسٹوریج اسپیس کی تفصیلات سے آگاہ کرے گی۔
دوسری جانب اسی طرح صارف کو یہ علم ہوگا کہ اسے کتنی بڑی دستاویزات، تصاویر اور ویڈیوز واٹس ایپ کے ذریعے موصول ہوئی ہیں۔اس فیچر سے صارفین کو ایپ کی اسٹوریج کسٹمائزر کرنے میں مدد ملے گی اور وہ ہر قسم کی میڈیا فائلز بشمول فارورڈڈ فائلز کا ڈیٹا دیکھ سکیں گے۔یاد رہے یہ نیا فیچر واٹس ایپ سیٹنگز میں ڈیٹا اینڈ اسٹوریج یوزایج سیکشن میں چھپا ہوگا اور وہاں وہ کلین اپ آپشن سے فون کی میموری خالی کرسکیں گے۔
اس کے علاوہ یہ فیچر تمام چیٹس اور گروپ کی فہرستیں بھی ان کے اسٹوریج کے مطابق بنائے گا اور صارف کے لیے گروپس یا انفرادی چیٹس کو سرچ کرنا بھی آسان ہوگا۔
واضح رہے کہ واٹس ایپ کی اپ ڈیٹس پر نظر رکھنے والے سائٹ ویب بیٹا انفو کے مطابق یہ فیچر فی الحال مخصوص بیٹا صارفین کو دستیاب ہے اور بہت جلد تمام صارفین کے لیے متعارف کروایا جاسکتا ہے۔

October 3, 2020

پاکستان نے اپنا خلائی پروگرام شروع کرنے کا فیصلہ کرلیا

ویب ڈیسک ::پاکستان نے اپنا خلائی پروگرام شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے، اس پروگرام کے ذریعے بلین ٹری سونامی سمیت پلاننگ ڈویژن کے تمام منصوبوں کو مانیٹر کیا جائے گا۔
اس حوالے سے گزشتہ روز وزیراعظم عمران خان نے وفاقی وزراء کے ہمراہ اسٹریٹجک پلانز ڈویژن کا دورہ کیا جہاں وزیر اعظم کو سپارکو کی جانب سے پاکستان کی خلائی صلاحیت کے بارے میں آگاہ کیا گیا۔
اس موقع پر وزیراعظم کو بریفنگ دی گئی کہ پاکستان اپنا خلائی پروگرام شروع کرے گا، بریفنگ میں بتایا گیا کہ اس پروگرام سے بلین ٹری سونامی منصوبے سمیت پلاننگ ڈویژن کے تمام منصوبوں کو مانیٹر کیا جائے گا۔
وفاقی وزرا اسد عمر، فواد چوہدری، حماداظہر، عمرایوب اور مشیر خزانہ حفیظ شیخ، معاون خصوصی ملک امین اسلم بھی وزیراعظم کے ہمراہ تھے، دورے کے موقع پر وزیراعظم عمران خان کو سپارکو کی جانب سے پاکستان کی خلائی صلاحیت کے بارے میں آگاہ کیا گیا۔
اس حوالے سے اے آر وائی نیوز کے پروگرام باخبر سویرا میں ڈائریکٹر انسٹی ٹیوٹ آف اسپیس سائنس اینڈ ٹیکنالوجی پروفیسر جاوید اقبال نے بتایا کہ پاکستان اسپیس سینٹر کے قیام کے بعد ہمارا ملک اسپیس ٹیکنالوجی میں خود کفیل ہوگا اور ہم نہ صرف سیٹیلائٹ بنائیں گے بلکہ لانچنگ پیڈ بھی بنائے جائیں گے۔

October 1, 2020

گوگل نے اپنی ویڈیو کانفرنسنگ سروس میٹ میں لامحدود وقت تک مفت کالز کی مدت میں توسیع کردی ۔

نیویارک: گوگل نے اپنی ویڈیو کانفرنسنگ سروس میٹ میں لامحدود وقت تک مفت کالز کی مدت میں 31 مارچ تک توسیع کردی۔

تفصیلات کے مطابق گوگل کی جانب سے ایک بلاگ پوسٹ میں کہا گیا ہے کہ کورونا وائرس کے باعث لوگوں کا ملنا جلنا کم ہوگیا ہے اور اس کی جگہ ویڈیو کالنگ کے لیے ذریعے گفتگو کی جارہی ہے، ہم ان لوگوں کی مدد جاری رکھنا چاہتے ہیں جو گوگل میٹ پر انحصار کرتے ہوئے اپنے پیاروں سے رابطے میں رہتے ہیں۔

گوگل نے اعلان کیا کہ مفت ورژن میں لامحدود ویڈیو کالز (چوبیس گھنٹے تک) جی میل اکاؤنٹس پر دستیاب رہیں گی۔

گوگل انتظامیہ کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ صارفین میٹ کالز ٹی وی کے ذریعے بھی کرسکتے ہیں، اس کے علاوہ انتظامیہ نے بیک گراؤنڈ دھندلا اور ڈیجیٹل وائٹ بورڈ کا ذکر بھی کیا۔

واضح رہے کہ حال ہی میں گوگل میٹ کی جانب سے 49 افراد کو ایک ویڈیو کانفرنس میں شامل کرنے کا آپشن فراہم کیا گیا تھا، جس کو آٹو اور ٹائلڈ موڈز کے ذریعے ان ایبل کیا جاسکتا ہے۔

یہ فیچر آئندہ چند ہفتوں کے دوران جی سیوٹ اور پرسنل یوزرز کے لیے دستیاب ہوگا، علاوہ ازیں گوگل کی جانب سے ویڈیو میٹنگز کے لیے نوائز کینسلنگ کا فیچر بھی متعارف کرایا گیا، یہ فیچر ابھی جی سیوٹ پر دستیاب ہے مگر جلد اینڈرائیڈ اور آئی او ایس صارفین کو بھی دستیاب ہوگا۔

یاد رہے کہ گوگل نے رواں سال اپریل میں اپنی ویڈیو کانفرنسنگ سروس میٹ کو تمام صارفین کے لیے مفت کردیا تھا جس کا مقصد کورونا وائرس کی وبا کے دوران باہمی رابطوں میں لوگوں کو سہولت فراہم کرنا تھا، اس سے قبل یہ سروس 6 ڈالر ماہانہ پر ہی دستیاب تھی۔

September 18, 2020

سسٹم بیٹھ گیا,دنیا بھر کے مختلف ممالک میں فیس بک اور انسٹاگرام کے صارفین کو اسٹوریز، لاگ ان کے مسائل کا سامنا

سان فرانسسکو: دنیا بھر میں سماجی رابطے کی سب سے بڑی ویب سائٹ فیس بک کی سروس میں اچانک تعطل آگیا جس کی وجہ سے  ہزاروں صارفین کو ذہنی اذیت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹ کے مطابق امریکا، یورپ، کینیڈا سمیت دنیا بھر کے مختلف ممالک میں فیس بک اور انسٹاگرام کے صارفین کو اسٹوریز، لاگ ان کے مسائل کا سامنا ہے۔

امریکا، یورپ، جنوبی امریکا اور کینیڈا کے مختلف حصوں میں جمعرات کی دوپہر سے دونوں پلیٹ فارم کی سروس متاثر ہوئی جس کے بعد سے صارفین کو نیوز فیڈ، لاگ ان کا سامنا ہے جبکہ کچھ صارفین تو سسٹم تک رسائی ہی حاصل نہیں کرپارہے۔

سوشل میڈیا پلیٹ فارمز کی نگرانی کرنے والی کمپنی نے بھی فیس بک اور انسٹاگرام کی سروس متاثر اور معطل ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے جمعرات کی دوپہر رپورٹ جاری کی۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ دیگر ممالک کے مقابلے میں امریکا کے صارفین کو زیادہ مشکلات کا سامنا ہے۔کیلی فورنیا، نیویارک سٹی، جنوبی فلوریڈا سمیت دیگر علاقوں میں سروس بالکل ہی بند ہے۔

دنیا کے دوسرے بڑے سمندر پر واقع ممالک جیسے آئرلینڈ، پرتگال، برطانیہ اور سوئیڈین سے بھی سروس متاثر ہونے کی تصدیق ہوئی۔ فیس بک نے اس حوالے سے کوئی بیان جاری نہیں کیا۔

ابھی تک سروس متاثر یا معطل ہونے کی وجہ سامنے نہیں آسکی اور نہ ہی کمپنی نے اس حوالے سے کوئی بیان جاری کیا۔

September 17, 2020

گوگل میٹ استعمال کرنے والے صارفین کے لیے زبردست فیچر متعارف

نیویارک:ویب ڈیسک :: گوگل میٹ استعمال کرنے والے صارفین کے لیے زبردست فیچر متعارف کروادیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق گوگل میٹ استعمال کرنے والے صارفین کے لیے نیا فیچر متعارف کروایا گیا ہے جس میں صارفین ویڈیو کال کے دوران پیچھے کے منظر کو دھندلا کرسکتے ہیں۔

گوگل نے نئے بلاگ میں بتایا کہ گوگل میٹ میں ایک نئے فیچر کا اضافہ کیا جارہا ہے، اس فیچر کے ذریعے پس منظر دھندلا ہوجائے گا مگر صارف کال میں شامل دیگر افراد کو صاف طور پر نظر آئے گا۔

شور کو فلٹر آؤٹ کرنے کی صلاحیت کی طرح یہ نیا فیچر گوگل کی جانب سے کانفرنس کالز کے دوران انتشار کو محدود کرنے کی کوششوں کا حصہ ہے۔

گوگل کا کہنا ہے کہ بیک گراؤنڈ کو دھندلا کرنے سے ہوسکتا ہے ڈیوائس کی رفتار کم ہوجائے تو دیگر ایپس کو صحیح طریقے سے چلانے کے لیے ٹرن آف رکھنا بہتر ہے۔

گوگل انتظامیہ کے مطابق یہ فیچر ابھی کچھ صارفین کو دستیاب ہے، آئندہ ہفتوں میں یہ اس فیچر کو دیگر صارفین بھی استعمال کرسکیں گے۔

واضح رہے کہ رواں سال مئی میں گوگل کی جانب سے پریمیئم ویڈیو کانفرنسنگ سروس گوگل میٹ کو صارفین کے لیے مفت کردیا گیا تھا۔

یہ کانفرنسنگ سروس پہلے صرف جی سیوٹ کے صارفین کے لیے مخصوص اور 6 ڈالر ماہانہ پر ہی دستیاب تھی۔

خیال رہے کہ میٹ کے ذریعے بیک وقت 100 افراد ایک ویڈیو کال کا حصہ بن سکتے ہیں جبکہ شیڈولنگ، اسکرین شیئرنگ اور رئیل ٹائم کیپشن جیسے فیچرز بھی اس میں دستیاب ہیں۔

August 31, 2020

دنیا کا پہلا شفاف ٹی وی رواں ماہ فروخت کے لیے پیش کیا جائے گا

بیجنگ: ویب  ڈیسک :: اب آپ ٹی وی کے آر پار  بھی دیکھ سکتے ہیں ،دنیا کا پہلا مکمل طور پر شفاف (ٹرانسپیرنٹ) ٹی وی اس ماہ فروخت کے لیے پیش کیا جائے گا جسے شیاؤمی کمپنی نے بنایا ہے اور اسے مائی ٹی وی لکس کا نام دیا گیا ہے۔
بند ہونے کی صورت میں یہ شفاف شیشہ بن جاتا ہے اور کسی سائنس فکشن فلم کی کوئی ایجاد دکھائی دیتا ہے۔ اگر ٹی وی نہ چل رہا ہو تو اس کے آرپار دیکھا جاسکتا ہے۔ قبل ازیں سام سنگ اور ایل جی وغیرہ نے شفاف ٹی وی پیش کیے لیکن شیاؤمی کے مطابق یہ پہلا شیشہ ٹی وی ہے جو بڑے پیمانے پر تیار کیا جارہا ہے اور اس کی فروخت اگلے چند دنوں میں متوقع ہے۔
ٹی وی کی لمبائی 55 انچ ہے اور اس کا پورا پینل او ایل ای ڈی پر مشتمل ہے۔ ٹی وی اسکرین کی موٹائی صرف 5.7 ملی میٹر ہے۔ ٹی وی بند ہوتے ہی کھڑی کا شیشہ بن جاتا ہے۔ شیاؤمی کے مطابق اس کا سیاہ رنگ واضح اور اسکرین بہت روشن ہے۔ ٹی وی اسکرین ایک ارب سے زائد رنگ دکھاتا ہے۔ اس کا ریفریش ریٹ 120 یرٹز ہے اور ایک ملی سیکنڈ میں ٹی وی اسکرین ریفریش ہوجاتا ہے۔
اس کا دس بٹ پینل مجموعی طور پر ہموار اور خوبصورت تصویر ظاہر کرتا ہے ۔ اس طرح کے ٹی وی اسکرین میں متحرک منظر دھندلا جاتے ہیں لیکن شیاؤمی کے ٹی وی میں یہ نقص موجود نہیں جس کی وجہ سے ٹی وی گیم کھیلنے کے لیے بھی بہترین ہے۔

Mi TV LUX Transparent Edition: World's first 'transparent' TV is here - Times of India

Out of series! Xiaomi presented the world's first transparent TV + Video – World Today News

Xiaomi Mi TV LUX Transparent Edition – SCDW

August 25, 2020

ٹویٹر کا نیا فیچر متعارف

نیویارک: ویب ڈیسک ::سماجی رابطے اور مائیکرو بلاگنگ کی ویب سائٹ ٹویٹر نے صارفین کے لیے نیا فیچر متعارف کروادیا۔

تفصیلات کے مطابق مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹویٹر نے صارفین کو اپنے ٹویٹر سپورٹ اکاؤنٹ سے ڈائریکٹ میسج (ڈی ایم) کے نئے فیچر کو سائٹ میں شامل کرنے سے آگاہ کیا ہے۔

ٹویٹر کے مطابق اب صارف کو جب بھی ڈائریکٹ میسج (ڈی ایم) ریکویسٹ موصول ہوں گی تو ساتھ ہی میسج کرنے والے صارف کے اکاؤنٹ کی تفصیل بھی سامنے آئے گی۔

نئے فیچر کے تحت ڈائریکٹ میسج ریکویسٹ موصول ہونے والے شخص کو یہ بھی بتایا جائے گا کہ آپ ٹویٹر پر اس شخص سے کیسے جڑے ہیں۔

جیسے ہی کوئی بھی صارف ریکویسٹ میسج پر ٹیپ کرے گا تو اسے فوراً میسج بھیجنے والے شخص کی پروفائل کی معلومات بھی نظر آئیں گی۔

واضح رہے کہ ٹویٹر کے اس فیچر کے آنے سے قبل ڈی ایم ریکویسٹ بھیجنے والے شخص کی پروفائل تلاش کرنے میں صارف کا کافی وقت ضائع ہوتا تھا۔

یاد رہے کہ سوشل میڈیا پلیٹ فارمز میں ٹویٹر کو دیگر کے مقابلے میں منفرد حیثیت حاصل ہے کیونکہ یہاں صارف کو دوسرے شخص ایڈ نہیں کرنا پڑتا بلکہ وہ صرف مینشن کر کے اپنی بات متعلقہ شخص تک پہنچا سکتا ہے جو سامنے والے کے پاس نوٹی فائی بھی ہوجاتی ہے۔

August 24, 2020

. آف لائن فائندنگ ::گم ہوجانے والے سام سنگ فون اب آف لائن ہونے پر بھی تلاش کرنا ممکن

ویب ڈیسک ::سام سنگ کی جانب سے گلیکسی اسمارٹ فونز میں ایک نئے فیچر کا جلد اضافہ کیا جارہا ہے جس کی بدولت صارفین کسی ڈیوائس کے گم ہونے پر اس وقت بھی تلاش کرسکیں گے جب وہ آف لائن ہوگی۔

ویسے تو سام سنگ کے گلیکسی فونز میں 2018 سے فائنڈ مائی موبائل نامی فیچر موجود ہے جو گمشدہ فونز کی تلاش میں مدد دیتا ہے۔

اس فیچر کو استعمال کرنے کے لیے سام سنگ اکاﺅنٹ پر سائن ان ہونا ہوتا ہے، جو کہ عام طور پر نئے فون کو استعمال کرنے سے قبل ہی بن جاتا ہے۔

ویسے اگر نہیں بھی ہوا تو بھی کوئی مسئلہ نہیں کیونکہ اس کے لیے چند منٹ ہی درکار ہوتے ہیں اور اپنے فائنڈ مائی موبائل کو کسی بھی گلیکسی سیریز کے لیے ان ایبل کیا جاسکتا ہے۔

یہ درست ہے کہ گوگل کی جانب سے بھی تمام اینڈرائیڈ فونز کے لیے یہ سروس ایک ایپ کی شکل میں موجود نہیں اور اس میں کوئی خرابی بھی نہیں، مگر سام سنگ کی جانب سے اپنے فونز کے لیے دی جانے والی سروس زیادہ مدد فراہم کرسکتی ہے۔

تاہم اب اس کو ایک اپ ڈیٹ سے مزید بہتر بنایا جارہا ہے جو فی الحال تمام صارفین کو دستیاب نہیں۔

ایک ٹوئٹ میں بتایا اس نئے فیچر کے اسکرین شاٹس شیئر کیے گئے جس میں واضح لکھا تھا ‘اس سے آپ اپنے فون کو دیگر افراد کے گلیکسی فونز سے اس وقت بھی تلاش کرسکیں گے جب وہ نیٹ ورک سے کنکٹ نہیں ہوگا، اس کے علاوہ اس اپ ڈیٹ سے آپ اپنے فون کو قریب موجود گمشدہ گلیکسی ڈیوائسز کو اسکین کرنے کے لیے بھی استعمال کرسکیں گے’۔

اس فیچر کو آف لائن فائندنگ کا نام دیا گیا ہے۔

ایپل نے بھی اس سے ملتا جلتا گزشتہ سال آئی او ایس 13 میں متعارف کرایا تھا جسے فائنڈ مائی کا نام دیا گیا تھا، جس کی مدد سے صارف گم ہونے والے آئی فونز کو آف لائن ہونے پر بھی تلاش کرسکتے ہیں۔

ابھی یہ واضح نہیں کہ سام سنگ کا یہ نیا فیچر تمام صارفین کو کب تک دسیتاب ہوگا۔