August 15, 2018

صدر مملکت اور نگراں وزیراعظم کی سپارکو کے انجینئرز اور سائنسدانوں کو مبارکباد

کراچی : جدت ویب ڈیسک ::خلا میں بھیجی جانے والی پہلی ریموٹ سنسگ سیٹلائٹ کا مکمل کنٹرول پاکستان کے حوالے کردیا گیا، جس پر صدر مملکت اور نگراں وزیراعظم نے سپارکو کے انجینئرز اور سائنسدانوں کو مبارکباد پیش کی۔تفصیلات کے مطابق پہلی ریموٹ سنسگ سیٹلائٹ( پی آرایس ایس 1) کا مکمل کنٹرول آج پاکستان کےحوالے کر دیا گیا، اس کامیابی پر صدراورنگراں وزیراعظم نے سپارکو کے انجینئرزاور سائنسدانوں کو مبارکباد دی۔صدر مملکت ممنون حسین کا کہنا ہے کہ اہم سنگ میل ملک کے 71 ویں یوم آزادی پر حاصل کیا گیا، سیٹلائٹ کا فعال ہونا اسپیس انجینئرز کے اعتماد میں اضافہ کرے گا، مثبت قدم پاکستان کی سماجی اور معاشی ترقی میں اہم کردار ادا کرے گا۔نگراں وزیراعظم جسٹس (ر) ناصر الملک نے کہا کہ اہم سنگ میل کو حاصل کرنے پر پاکستانی قوم کو فخر ہے۔یاد رہے جولائی کے آخر میں پاکستان نے چائنہ کی مدد سے تیار کردہ سیٹلائیٹ PRSS-1 اور پاکستانی انجینئرز کا تیار کردہ سیٹلائیٹ پاک ٹیس-1 اے خلا میں بھیجے جو کامیابی سے اپنے کام کا آغاز کیا تھا۔یاد رہے جولائی کے آخر میں پاکستان نے چائنہ کی مدد سے تیار کردہ سیٹلائیٹ PRSS-1 اور پاکستانی انجینئرز کا تیار کردہ سیٹلائیٹ پاک ٹیس-1 اے خلا میں بھیجے جو کامیابی سے اپنے کام کا آغاز کیا تھا۔

August 13, 2018

جانیے کیسے ،کروڑوں موبائل صارفین کی ذاتی معلومات خطرے میں پڑ گئیں

کراچی: جدت ویب ڈیسک ::جانیے کیسے ،کروڑوں موبائل صارفین
کی ذاتی معلومات خطرے میں پڑ گئیں، کسی بھی موبائل صارف کے کوائف تک رسائی صرف ایک ایپ کی مدد سے ممکن ہوگئی ہے۔تفصیلات کے مطابق ملک کے کروڑوں موبائل صارفین کی ذاتی معلومات خطرے میں پڑ گئی ہے، کراچی کی موبائل فون مارکیٹ میں پاک ٹول کٹ نامی ایپ دستیاب ہے جو چند سو روپے میں خریدی جاسکتی ہے،، مذکورہ ایپ پاک ٹول کے حوالے سے ایف آئی اے حکام کا کہنا ہے کہ یہ ایک بہت بڑا سیکیورٹی لیپس ہے، اس سلسلے میں کچھ عرصہ قبل گرفتاریاں بھی گئی تھیں پہلے یہ ایپ ویب سائٹ پر دستیاب ہورہی تھی جس کی اطلاع ملنے پر کارروائی کی گئی تھی
ایپ گوگل پلے اسٹور پر دستیاب نہیں، آن لائن اور موبائل مارکیٹ سے باآسانی خریدی جاسکتی ہے۔نمائندہ اے آروائی نیوز سلمان لودھی کے مطابق ’پاک ٹول کٹ‘ نامی ایپ پر موبائل نمبر ڈالتے ہی شہری کا نام، شناختی کارڈ نمبر اور گھر کا پتہ مل جاتا ہے۔مذکورہ موبائل ایپ سے حساس معلومات لیک ہونے کسی کے بھی ساتھ فراڈ کا خدشہ پیدا ہوگیا ہے، ایپلی کیشن کی بندش اور مانیٹرنگ پی ٹی اے کی ذمہ داری ہے۔ذرائع کے مطابق موبائل ایپ سے متعلق شکایات پی ٹی اے کی ویب سائٹ پر درج کرائی جاسکتی ہیں پھر پی ٹی اے کی جانب سے کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

August 11, 2018

سوشل میڈیا ویب سائٹ ’’فیس بک‘‘ کی مقبولیت کا گراف تیزی سے نیچے کی طرف گامزن

کیلیفورنیا:جدت ویب ڈیسک :: دنیا بھر میں مقبول سوشل میڈیا ویب سائٹ ’’فیس بک‘‘ کی مقبولیت کا گراف تیزی سے نیچے آرہا ہے۔ اب ایک محتاط اندازے کے مطابق گزشتہ دو برس میں اس پر آنے والے وزیٹرز کی تعداد یعنی ’’ٹریفک‘‘ میں 50 فیصد تک کمی واقع ہوگئی ہے۔دو سال پہلے تک فیس بک پر وزٹس کی ماہانہ تعداد 8.5 ارب (آٹھ ارب پچاس کروڑ) تھی جو اس سال یعنی 2018 کے وسط تک کم ہو کر 4.7 ارب (چارارب ستر کروڑ) ماہانہ رہ گئی ہے۔ اس بات کا انکشاف ویب سائٹ ٹریفک پر نظر رکھنے اور تجزیہ کرنے والے آزاد پلیٹ فارم سمیلر ویب کی ذیلی ویب سائٹ ’’مارکیٹ انٹیلی جنس ڈاٹ آئی او‘‘ پر ایک تجزیہ نگار نے اپنے تازہ جائزے ’’پیراڈائم شفٹ‘‘ میں کیا ہے۔ جائزے کے مطابق ایک طرف فیس بُک پر آنے والے صارفین کی تعداد میں نمایاں کمی واقع ہوئی ہے جبکہ دوسری جانب یوٹیوب پر آنے والے افراد کی تعداد میں غیرمعمولی اضافہ ہوا ہے۔
سمیلر ویب کے مطابق گزشتہ ماہ جولائی میں یوٹیوب پر ساڑھے چار ارب افراد آئے تھے اور اگر اسی رفتار سے یہ گراف بڑھتا رہا تو بہت جلد فیس بک دوسری اور یوٹیوب پہلی مقبول ترین ویب سائٹ بن جائے گی؛ جبکہ دنیا کے سب سے بڑے ویب سرچ انجن (گوگل) پر گزشتہ ماہ وزیٹرز کی تعداد 15 ارب 20 کروڑ نوٹ کی گئی۔فیس بک صارفین براؤزر کے بجائے بہت تیزی سے ایپس کی جانب متوجہ ہورہے ہیں۔ اسی طرح فیس بک ایپ کے صارفین بھی تیزی سے بڑھ رہے ہیں، لیکن یہ اضافہ براؤزر چھوڑنے والوں کی تعداد کے لحاظ سے بہت کم ہے۔ اسی بنا پر کہا گیا ہے کہ فیس بک ٹریفک میں مجموعی طور پر کمی واقع ہوئی ہے۔اسی طرح فیس بک کے دیگر پلیٹ فارمز مثلاً انسٹاگرام اور میسنجر پر بھی صارفین کی تعداد بڑھ رہی ہے۔ البتہ فیس بک تجزیہ کاروں نے کہا ہے کہ شاید اس کی وجہ یہ بھی ہے کہ ادارہ فیس بک اپنے مرکزی پلیٹ فارم کے بجائے اپنی دیگر اور مختلف اقسام کی سروسز پر توجہ دے رہا ہے۔
اگرچہ یہ فیس بک کے لیے ایک بری خبر تو ہے جو پرائیویسی کے معاملات، امریکی انتخابات میں جعلی خبروں اور اسٹاک مارکیٹ میں گرتے حصص کی وجہ سے پہلے ہی بہت نقصان اٹھا چکا ہے تاہم سمیلر ویب نے فیس بک کو موبائل ایپس میں بہترین قرار دیا ہے۔

August 8, 2018

ایلیسا مریخ پر پہلا قدم رکھنے کو تیار، جانیے

جدت ویب ڈیسک ::ناسا کے سائنسدانوں کا خیال ہے کہ مریخ پر جانے کے سفر کے دوران چاند پر عارضی پڑاؤ ڈالا جاسکتا ہے، لہٰذا چاند گاؤں بنانے کا کام بھی جاری ہے،امریکی خلائی ایجنسی ناسا مریخ پر پہلا پڑاؤ ڈالنے کے لیے تیاریوں میں مصروف ہے۔ ایسے میں ایک 17 سالہ دوشیزہ بھی مریخ پر قدم رکھنے والی پہلی انسان کا اعزاز حاصل کرنے والی ہیں۔
ایلیسا کارسن صرف 17 سال کی ہیں جو اس وقت ناسا میں خلا باز بننے کی تربیت حاصل کر رہی ہیں۔
وہ مریخ پر قدم رکھنے والی پہلی انسان بننا چاہتی تھیں اور ان کے خواب کی تعبیر انہیں اس طرح مل رہی ہے کہ سنہ 2033 میں وہ مریخ پر بھیجے جانے والے اولین انسانی مشن کا حصہ ہوں گی۔
ناسا کے سائنسدانوں کا خیال ہے کہ مریخ پر جانے کے سفر کے دوران چاند پر عارضی پڑاؤ ڈالا جاسکتا ہے، لہٰذا چاند گاؤں بنانے کا کام بھی جاری ہےامریکی ریاست لوزیانا سے تعلق رکھنے والی ایلیسا ابتدائی خلائی تربیت مکمل کرنے والی سب سے کم عمر ترین طالبہ ہیں جس کے بعد اب وہ ناسا کا باقاعدہ حصہ ہیں۔ایلیسا 4 زبانوں یعنی انگریزی، فرانسیسی، ہسپانوی اور چینی زبان میں عبور رکھتی ہیں جبکہ پرتگالی اور ترکی زبان بھی کچھ کچھ جانتی ہیں، اس کے علاوہ روسی زبان کی باقاعدہ تعلیم حاصل کر رہی ہیں۔ ایلیسا بچپن سے کچھ منفرد کرنا چاہتی تھیں، جب اسے معلوم ہوا کہ انسان چاند کو تسخیر کرچکا ہے لیکن مریخ تاحال ناقابل تسخیر ہے تو مریخ پر جانا ان کی زندگی کا سب سے بڑا خواب بن گیا۔وہ بخوبی جانتی ہیں کہ ایک بار مریخ پر جانے کے بعد اس کا زمین پر لوٹنا شاید ممکن نہ ہو، پھر بھی زمین سے تقریباً40 کروڑ کلومیٹر دور مریخ پر پہنچنے ان کی ضد برقرار ہے۔

Image result for 17years old alisa nasa

Related image

Image result for 17years old alisa nasa

August 7, 2018

ٹویٹر سے گستاخانہ مواد ہٹوانے کیلئے ایف آئی اے اور وزارت قانون کو 4 ستمبر تک مہلت

اسلام آباد جدت ویب ڈیسک ::: ہائی کورٹ نے سوشل میڈیا پر گستاخانہ مواد کی تشہیر روکنے کے لئے ایف آئی اے اور وزارتِ قانون کو 4 ستمبر تک مہلت دے دی۔
، عدالت نے ٹویٹر سے گستاخانہ مواد ہٹانے کے لئے 4 ستمبرکی مہلت دیتے ہوئے سماعت ملتوی کردی۔ اسلام آباد ہائی کورٹ میں سوشل میڈیا پر گستاخانہ مواد کی تشہیر روکنے سے متعلق فیصلے پر عملدرآمد کیس کی سماعت ہوئی۔ جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے سماعت کی۔ ایف آئی اے اور وزارتِ قانون کے حکام عدالت میں پیش ہوئے۔ دورانِ سماعت جسٹس شوکت صدیقی نے ایف آئی اے اور وزارت قانون کے حکام پر اظہارِ برہمی کرتے ہوئے استفسار کیا کہ عدالتی حکم کے باوجود ٹوئٹر حکام کو خط کیوں نہیں لکھا گیا؟۔جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے ریمارکس دیئے کہ ایف آئی اے کی دلچسپی صرف پیسے کے لین دین میں ہے، سپریم کورٹ نے حکم دیا تو نوکری بچانے کے لئے فوری جعلی اکاوٴنٹس ٹریس کر لیے، اس کیس میں ایف آئی اے کا کردار روایتی سا ہے، آئندہ سماعت تک عدالتی حکم پر عملدرآمد نہ ہوا تو سیکرٹری قانون کو توہین عدالت نوٹس جاری کریں گے

August 6, 2018

کیاکسی نئے ماڈل کے اسمارٹ فون میں دو سم لگانے کی سہولت میسر ہوگی؟

کیلیفورنیا: جدت ویب ڈیسک ::اس بات کے بہت زیادہ امکانات ہیں کہ اس سال ایپل کے کسی نئے ماڈل کے اسمارٹ فون میں دو سم لگانے کی سہولت میسر ہوگی۔ اس بات کا انکشاف ایپل کی خبریں چھاپنے والی ویب سائٹ نائن ٹو فائیو میک نے کیا ہے۔ویب سائٹ کے مطابق اس بات کا انکشاف آئی او ایس 12 کے بی ٹا ورژن میں کیا گیا ہے جس میں ایک جگہ ’سیکنڈ سِم اسٹیٹس‘ کا لفظ استعمال کیا گیا ہے۔ ویب سائٹ نے پورے آئی او ایس کو دیکھتے ہوئے کہا ہے کہ ایک جگہ ’سیکنڈ سِم ٹرے‘ اور ’ڈیوئل سِم اسٹیٹس‘ بھی لکھا گیا ہے۔ایک جانب تو اس سے خود امریکی اور یورپی صارفین ایک سے زائد سِم استعمال کرسکیں گے تو دوسری جانب ڈبل سِم کی سہولت سے بین الاقوامی سفر کرنے والے افراد بھی مستفید ہوسکیں گے۔ علاوہ ازیں اس تبدیلی کا ایک اور مقصد دنیا کے کئی ممالک میں ایک سے زائد سِم فون استعمال کرنے والے ایپل صارفین کو بھی ڈبل سِم کی سہولت فراہم کرنا ہے۔ پھر ایپل ترقی پذیر ممالک میں بھی اپنے قدم جمانا چاہتا ہے جہاں دو سِموں والے موبائل عام استعمال کئے جاتے ہیں۔ تاہم بعض تجزیہ نگاروں نے کہا ہے کہ شاید سیکنڈ سِم کے تحت ایپل ایک ای سِم کارڈ بھی پیش کرے گا جو وہ پہلے ہی اسمارٹ واچ میں پیش کرچکا ہے۔ ایپل مصنوعات کی پیش گوئی کرنے والے مشہور ماہر مِنگ چی کواؤ کا اصرار ہے کہ ستمبر میں ایپل کم ازکم تین نئے فون پیش کررہا ہے جن میں ساڑھے چھ ایچ اسکرین کا آئی فون ایکس پلس، 6.1 انچ کا سادہ آئی فون اور اس سے کم اسکرین کا ایسا ماڈل بھی ہوگا جو آئی فون ایکس سے مشابہ ہوگا۔اس سے قبل ایپل کی مدِمقابل اسمارٹ فون کمپنیاں مثلاً سام سنگ، ہواوے اور ون پلس بھی اپنے جدید فونز میں دوہری سِم کی سہولت پیش کرتی آرہی ہیں۔

Image result for dual sim iphone

August 6, 2018

سماجی رابطہ کٹ ،فیس بک کا سسٹم کریش، صارفین کو مشکلات کا سامنا

سانس فرانسکو: جدت ویب ڈیسک ::سماجی رابطے کی سب سے بڑی ویب سائٹ فیس بک کا سسٹم کریش کرگیا جس کے باعث صارفین کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔فیس بک کے ترجمان نے سسٹم میں پیدا ہونے والی خرابی کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ ’سسٹم کریش ہونے کی وجہ سے انٹرنیٹ براؤزر اور موبائل ایپ پر صارفین کو مشکلات کا سامنا کرنا ہے‘۔اُن کا کہنا تھا کہ کمپنی نے تکنیکی ماہرین کی خدمات حاصل کرلی ہیں جو سسٹم کریش کرنے کی وجوہات اور اس کی خرابی کو دور کرنے پر کام کررہے ہیں۔فیس بک ترجمان نے امید ظاہر کی کہ جلد خرابی کو دور کردیا جائے گا جس کے بعد دنیا بھر میں بسنے والے تمام ہی لوگ آئی ڈیز تک رسائی حاصل کرسکیں گے۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر صارفین نے فیس بک کے اچانک بند ہونے پر تحفظات کا اظہار بھی کیا اور کمپنی کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔ فیس بک کی سروس امریکا ، برطانیہ، جاپان سمیت تقریبا تمام ہی ممالک میں بند ہوئی۔

August 4, 2018

فیس بک نے نوعمر صارفین کےلئے ڈیجیٹل لائبریری پیش کردی

کیلیفورنیا جدت ویب ڈیسک :فیس بک نے نوعمر صارفین کےلیے مفت ڈجیٹل لائبریری قائم کردی ہے جس میں انٹرنیٹ سیکیورٹی، انٹرنیٹ پرائیویسی اور فیس بک پر صحتمندانہ دوستی اور روابط پر اسباق اور ویڈیوز رکھی گئی ہیں۔پہلے مرحلے میں 18 اسباق انگریزی میں موجود ہیں جنہیں بہت جلد دنیا کی 45 مختلف زبانوں میں ترجمہ کیا جائے گا۔ اسے فیس بک کی ’یڈجیٹل لٹریسی لائبریری‘ کا نام دیا گیا ہے۔ لیکن حیرت انگیز طور پر اس میں جعلی خبروں اور افواہوں کے تدارک کےلیے کوئی رہنمائی شامل نہیں جس کے تحت فیس بک پر روسی پروپیگنڈا کرکے 2016 کے امریکی صدارتی انتخابات پر اثر ڈالا گیا تھا۔فیس بک اس نئی سہولت سے نوعمر صارفین کو انٹرنیٹ کا استعمال ذمے داری کے ساتھ سکھانا چاہتا ہے۔ فیس بک نے کہا ہے کہ اس لائبریری کا مقصد دنیا بھر میں موجود 83 کروڑ نوعمر بچوں اور نوجوانوں کو ڈیجیٹل خواندگی، اس کے اصول اور حفاظتی اقدامات سے آگاہ کرنا ہے۔لائبریری کے اسباق میں سوشل میڈیا کی خوفناک عادت، آن لائن بدتمیزی، پرائیویسی اور آن لائن سیکیورٹی جیسے امور پر رہنمائی فراہم کی گئی ہے۔ فیس بک نے ہارورڈ یونیورسٹی میں واقع برکمان کلائن سینٹر کی ٹیم کی مدد سے یہ ڈیجیٹل لائبریری بنائی ہے۔ان اسباق کو مفت میں ڈاؤن لوڈ کرکے اسکولوں اور گھروں میں پڑھا جاسکتا ہے۔ فیس بک کے مطابق اس کی تیاری میں نوعمر لڑکے لڑکیوں سے مدد لی گئی ہے اور اسے پانچ زمروں میں تقسیم کیا گیا ہے جن میں پرائیویسی، شناخت، مثبت برتاؤ، سیکیورٹی اور کمیونٹی سے وابستگی شامل ہے۔#/s#

August 3, 2018

ناسا کی رپورٹ ، خلا کی انتہاؤں میں’پاکستان کے بارے‘میں تیرتی آوازیں اورمعلومات

جدت ویب ڈیسک ::ناسا کی رپورٹ ، خلا کی انتہاؤں میں’پاکستان کے بارے‘میں تیرتی آوازیں اورمعلومات …..امریکی خلائی تحقیقاتی ادارے ناسا کی جانب سے خلا کی وسعتوں کو کھنگالنے کے لیے بھیجے جانے والے مشن وائجر -1 میں پاکستان سمیت دنیا بھر کی تصاویر اور آوازوں کا ڈیٹا بھی رکھا گیا تھا۔تفصیلات کے مطابق آج سے لگ بھگ 41 سال قبل خلا میں جانے والے اس عظیم مشن میں دنیا کے تمام ممالک کی معلومات کے ساتھ ہمارے وطن سے متعلق معلومات بھی اسٹو ر کی گئی ہیں تاکہ مستقبل میں یہ خلائی گاڑی کسی اور مخلوق کے ہاتھ لگے تو وہ ہمارے بارے میں سمجھ پائیں۔آوازیں اور دیگر اقسام کا ڈیٹا اسٹور کرنےکا مقصد یہ بھی تھا کہ اگر وہ خلائی مخلوق ہم سے زیادہ قابل ہو تو وہ ہماری لوکیشن کے بارے میں جان سکے اور ہم سے رابطہ کرسکے۔بتایا جاتا ہے کہ وائجر – 1 میں جو ڈیٹا اسٹور کیا گیا تھا ، اس میں دنیا بھر کے ممالک کی اہم تصاویر، اس وقت کے شہرہ آفاق گانے اور کچھ اہم آڈیو پیغامات اسٹور کیے گئے تھے اور اس وقت یہ خلائی گاڑی ، خلا کی وسعتوں میں سب سے طویل فاصلہ طے کرنے والی انسانی مشین ہے۔
یہاں اپنے قارئین کی دلچسپی کے لیے اہم وائجر سے زمین اور چاند کی کھینچی ہوئی ایک تصویر بھی شیئر کررہے ہیں جو کہ اس نے اپنا سفر شروع کرنے کے 13 دن بعد یعنی 18 ستمبر 1977 کو ناسا کو بھیجی تھی، تیرہ دنوں میں اس نے1 کروڑ 17 لاکھ کلومیٹر کا فاصلہ طے کرلیا تھا۔اب جبکہ اس سفر کے آغاز کو 41 سال گزر گزر چکے ہیں اور یہ خلائی گاڑی ہمارے نظام ِ شمسی کے آخری معلوم سیارے پلوٹو کو کراس کرتے ہوئے ہمارے نظام شمسی کے کناروں کو چھو رہی ہے، اب تک یہ 21 ارب کلومیٹر کا سفر طے کرچکی ہے اور انسانی تاریخ میں سب سے دور بھیجی جانے والی انسانی مشین بن چکی ہے۔
اگرچہ اب ’نیو ہوریزون ‘ سپیس شپ وائجر کی نسبت بہتر ٹیکنالوجی اور تیز تر رفتار سے خلا میں روانہ کی جا چکی ہے اور اس وقت وائجر -1 زمین سے جس فاصلے پر ہے ، ہوریزون پروب کی اس مقام پر رفتار تیرہ کلومیٹر فی سیکنڈ ہوگی پھر بھی یہ کسی صورت ممکن نہیں کہ ہوریزون ، وائجر ون کو کراس کرتے ہوئے اس سے آگے نکل جائے۔ لہذاٰ انسانی تاریخ میں جو مقام ’وائجر انٹرسٹیلر مشن ‘اور’وائجر ون ‘خلائی جہاز کو حاصل ہوا ‘ وہ امر رہے گا۔دلچسپ بات یہ ہے کہ اب بھی یہ مشین انسانوں سے مکمل رابطے میں ہے، اس کی رفتار 17.25 کلومیٹر فی سیکنڈ ہے!!! (یعنی 62,140 کلومیٹر فی گھنٹہ) اس سے ملنے والی معلومات میں سب سے اہم معلومات اس متعلق ہیں کہ ہمارے نظام شمسی کا کنارہ کیسا ہے؟، سائنسدانوں کے مطابق اتنی تیز رفتاری کے باوجود اس کے راستے میں اگلے 40,000 سال تک کوئی رکاوٹ (کوئی سیارہ یا ستارہ) نہیں آئے گا جبکہ اسے ہماری کہکشاں ملکی وے سے نکلنے کے لئے ابھی بھی لاکھوں سال کا عرصہ درکار ہے۔