July 3, 2020

کرکٹرزبہترین تیاری کے ساتھ زبردست پرفارمنس دیں گے، وقار یونس

لاہور: جدت ویب ڈیسک :بولنگ کوچ وقار یونس نے امید ظاہر کی ہے کہ انگلینڈ کے خلاف سیریز میں قومی کرکٹرز بہترین تیاری کے ساتھ میدان میں اتر کر زبردست پرفارمنس دیں گے۔ سابق کپتان کا کہنا ہے کہ کوویڈ 19 ٹیسٹنگ کے نتائج آنے کے فوری بعد کھلاڑیوں نے ٹریننگ کا آغاز کر دیا تھا جو بہت خوش آئند ہے۔ کھیل کے میدان میں دوبارہ آنا اچھا لگا، کھلاڑیوں نے اچھے اندازسے ٹریننگ شروع کی کھلاڑی پرجوش دکھائی دے رہے ہیں، سیریز میں اچھا کھیلیں گے۔ کوویڈ 19 سے کرکٹ کوجھٹکا لگا ہے جب کہ دیگر کھیلوں کوبھی نقصان پہنچا ہے۔وقاریونس نے کہا کہ کوشش کی ہے کہ گزشتہ ساڑھے تین ماہ کھلاڑیوں سے رابطہ رکھا جائے کھلاڑیو ں کی رہنمائی جاری رکھی کہ کیا کرنا ہے یہی وجہ ہے کھلاڑی فٹ ہیں۔ وقار یونس کے مطابق نئی پلئینگ کنڈیشنز میں عادتوں کو تبدیل کرنے میں وقت لگے گا۔ ساری زندگی تھوک سے گیند چمکاتے رہے، اب خود کو تبدیل کرنا ہو گا۔ وقت کی ضرورت ہے۔ پہلی امید یہ ہے کہ کوویڈ 19 سے چھٹکارا ملے گا، اگر وائرس لمبا چلا تو ہوسکتا ہے کہ آئی سی سی کو گیند چمکانے کے لیئے کوئی اورطریقہ بھی تلاش کرنا پڑے۔

July 2, 2020

بیٹنگ کوچ گرانٹ فلاور نے سابق کپتان یونس خان پر گردن پر چھری رکھنے کا الزام لگادیا۔

ہرارے: ویب ڈیسک ::سابق پاکستانی بیٹنگ کوچ گرانٹ فلاور نے پانچ سال کوچنگ کے مزے اڑانے کے بعد قومی کرکٹرز پر ہرزہ سرائی شروع کردی۔
رپورٹ کے مطابق سابق زمبابوین کرکٹر اور پاکستانی ٹیم کے سابق بیٹنگ کوچ گرانٹ فلاور نے سابق کپتان یونس خان پر گردن پر چھری رکھنے کا الزام لگادیا۔
گرانٹ فلاور کا کہنا ہے کہ 2016 میں دورہ آسٹریلیا میں سیریز کے دوران یونس خان کو ٹپس دے رہا تھا کہ اس دوران وہ آپے سے باہر ہوگئے اور میری گردن پر چھری رکھ دی۔سابق بیٹنگ کوچ کا کہنا تھا کہ یونس خان کی اس حرکت پر اس وقت کے ہیڈ کوچ مکی آرتھر نے بیچ بچاؤ کرایا تھا۔
اینڈی فلاور ان دنوں سری لنکا کے بیٹنگ کوچ کی حیثیت سے خدمات انجام دے رہے ہیں، انہوں نے اپنے بھائی اینڈی فلاور اور میزبان نیل مانتھورپ کے ساتھ گفتگو کے دوران یونس خان پر یہ الزامات لگایا۔واضح رہے کہ 49 سالہ گرانٹ فلاور نے 2014 سے 2019 کے دوران قومی کرکٹ ٹیم کے بیٹنگ کوچ کے فرائض انجام دئیے تھے۔
فلاور نے بایا کہ ٹیسٹ کے دوران ناشتے کے وقت میں نے یونس کو تھوڑی بیٹنگ ٹپس دینے گیا تو اس نے میرے مشورے پر عمل نہیں کیا اور میرے گلے پر چھری رکھ دی اس موقع پر مکی آرتھر بیٹھے ہوئے انہیں مداخلت کرنا پڑی۔

July 1, 2020

دورہ انگلینڈ کے دوران شائقین کی گرانڈ میں کمی محسوس ہوگی، فواد عالم

لندن:جدت ویب ڈیسک : قومی کرکٹ ٹیم کے مڈل آرڈر بیٹسمین فواد عالم نے کہا ہے کہ دورہ انگلینڈ کے دوران شائقین کی گرانڈ میں کمی محسوس ہوگی۔ میڈیا سے بات کرتے ہوئے فواد عالم نے کہا کہ ملک کے لیے کھیلنا اعزاز ہے، کرکٹ کے میدان میں واپسی ہمیشہ ہی ایک خوشگوار تجربہ ہوتی ہے، ملک کی نمائندگی کے لیے ہی کھلاڑی کلب اور فرسٹ کلاس کرکٹ کھیلتا ہے۔ مڈل آرڈر بیٹسمین کا کہنا تھا کہ اس سے بڑی خوشی کی بات کیا ہوسکتی ہے کہ جن لیجنڈز کو کھیلتے دیکھ کر کرکٹر بننے کا شوق پیدا ہوا، ان کی کوچنگ میسر آرہی ہے، مصباح الحق اور یونس خان کے تو ساتھ بھی کھیل چکا ہوں۔ فواد عالم کا کہنا تھا کہ شائقین کی گرانڈ میں کمی محسوس ہوگی، کیونکہ شائقین کرکٹ نے ہمیشہ ہماری ٹیم کو سپورٹ کیا ، کھلاڑیوں کو اگلے دو ماہ تک ایک ساتھ ہی رہنا ہے، خود کو ایک فیملی سمجھ رہے ہیں، ٹیم میں سب ایک دوسرے کی مدد کررہے ہیں، ٹریننگ اور قیام کے دوران ایس او پیز کا مکمل خیال رکھیں گے،امید ہے کہ ٹور خوشگوار انداز میں ختم ہوگا، فیملی کی یاد تو آئے گی لیکن کیلئے قربانیاں دینا پڑتی ہیں۔

June 25, 2020

قومی ٹیم کے تجربہ کار آل راؤنڈر محمد حفیظ کو کرونا کی شدید علامات ظاہر ہونے لگیں۔ ٹیسٹنگ کے عمل پر سوالات اٹھ گئے

جدت ویب ڈیسک ::رپورٹ کے مطابق محمد حفیظ کو کرونا کی علامات ظاہر ہونا شروع ہوگئیں، ایک، دو نہیں محمد حفیظ 13 مرتبہ ٹیلی کانفرنس میں کھانستے رہے۔ صحافی نے محمد حٖفیظ سے سوال کیا کہ خیریت ہے جس پر انہوں نے جواب دیا کہ معمول کی کھانسی ہے۔
واضح رہے کہ پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) سے منسلک لیب نے سابق کپتان محمد حفیظ کے پہلے سیمپل کا دوبارہ ٹیسٹ کیا تو وہ بھی پازیٹو آگیا جس کے بعد قومی کھلاڑی کا کرونا ٹیسٹ معمہ بن چکا ہے۔
ذرائع کا کہنا تھا کہ محمد حفیظ کے پہلے سیمپل میں بھی کروناوائرس پایا گیا ہے، لیبارٹری انتظامیہ نے پی سی بی سے رابطہ کرکے دوسری رپورٹ سے بھی آگاہ کردیا۔ محمد حفیظ کا باضابطہ ری ٹیسٹ کل ہوگا۔
لیبارٹری حکام کا کہنا ہے کہ محمدحفیظ کے عمل سے لیبارٹری کی ساکھ برقرار رکھنے کے لیے دوبارہ ٹیسٹ کیا، کرکٹر کے اقدام سے پاکستان میں ٹیسٹنگ کے عمل پر سوالات اٹھ گئے ہیں۔

Mohammad Hafeez says private test shows him negative for coronavirus | The Cricketer

June 24, 2020

وسیم خان نے اسٹاف کو نکالنے کی غلطی کا اعتراف کر لیا

لاہور: وسیم خان نے اسٹاف کو نکالنے کی غلطی کا اعتراف کر لیا جب کہ پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیف ایگزیکٹیو کا کہنا ہے کہ احساس ہوتے ہی ہم نے فیصلہ تبدیل کر لیا۔وسیم خان نے کہا کہ میں اعتراف کرتا ہوں کہ نچلے درجے کے اسٹاف کو نکالنے کا فیصلہ درست نہیں تھا، اسی لیے ہم نے فوری طورپر اسے تبدیل کرتے ہوئے ان کی بہتری کے لیے سپورٹ فنڈز میں رقم دینے کا اعلان کیا۔ انھوں نے کہا کہ ہمارا مقصد پاکستان کرکٹ کی نیک نامی میں اضافہ کرنا ہے، سسٹم کی بہتری کے لیے نئی تقرریاں کیں لیکن انھیں زیادہ تنخواہیں دینے کا تاثر درست نہیں، مجھے یقین ہے کہ جلد اچھے نتائج سامنے آنا شروع ہوجائیں گے، ہم چاہتے ہیں کہ پاکستانی ٹیم ہمیشہ درجہ بندی میں ٹاپ پر رہے، انھوں نے کہا کہ قومی ٹیم کا دورہ انگلینڈ بہت اہم ہے لیکن ہمارے لیے کھلاڑیوں کی حفاظت اولین ترجیح ہوگی، اس سلسلے میں کوئی کوتاہی نہیں کرسکتے، میزبان بورڈ نے پلیئرز اور کوچنگ اسٹاف کے لیے تمام احتیاطی تدابیر اپنانے کی یقین دہانی کرائی ہے۔