July 20, 2017

گورنمنٹ سندھ کا انتہائی احسن اقدام ، ’’این آئی سی وی ڈی ‘‘میں تمام علاج مفت کردیا

کراچی جدت ویب ڈیسک کراچی کی عوام کیلئے سندھ گورنمنٹ کی جانب سے بڑی خوشخبری اس مہنگائی کے دور میں جہاں عوام اپنے زندگی کے دیگر مسائل سے دوچار ہے وہاں پر علاج کی سہولیات مفت میسر ہونا کیسی نعمت سے کم نہ ہوگا ۔ اس سے قبل ادارہ برائے امراض میں دل کے مرض میں مبتلا مریضوں کو علاج کروانے کیلئے شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا تھا جس میں ادویات اور آپریشن کے اخراجات نے تو علاج کروانا ہی مشکل کردیا تھا ان تمام تر مسائل کو دیکھتے ہوئے سندھ گورنمنٹ نے انتہائی احسن اقدام اٹھایا ہے ۔ سندھ گورنمنٹ نے قومی ادارہ برائے امراض قلب NICVDمیں مریضوں کا تمام تر علاج مفت کر دیاگیاہے۔ عوام کا فیصلے کا خیر مقدم تفصیلات کے مطابق قومی ادارہ برائے امراض قلب میں جنرل وارڈ میں مریضوں کو صحت کی تمام ترسہولیات مفت فراہم کرنے کا اعلان کردیا گیا ہے ۔،جس میں بائی پاس سرجری، انجیو پلاسٹی، انجیوگرافی مفت میں کی جائیگی ادویات سے لیکر تمام اخراجات اسپتال کے ذمے ہوگا جنرل وارڈ کے اخراجات بھی اسپتال انتظامیہ برداشت کرے گی۔ طبی سہولیات کو فری کرنا عوام کو صحت کی سہولیات فراہم کر نا ہے یاد رہے اس سے پہلے تمام سہولیات کے لیے مریضوں کو بھاری بھر رقم علاج کے لیے اداکر نی پڑتی تھی فیصلے سے عوام میں خوشی کی لہر دوڑ گئی۔

July 20, 2017

شاہراہ فیصل انڈر پاس کی تعمیر مکمل ، 22 جولائی کو افتتاح

کراچی جدت ویب ڈیسک ڈرگ روڈ اسٹیشن کے سامنے شاہراہ فیصل انڈر پاس کی تعمیر مکمل ہوگئی ہے ۔22 جولائی بروز بروز ہفتہ کو ٹریفک کیلئے کھول دیا جائے گا، جبکہ شہر یوں نے منگل کے روز سے ہی از خود استعمال کرنا شروع کردیا ہے ، تاہم محکمہ بلدیات سندھ لوکل گورنمنٹ کے حکام کا کہنا ہے کہ 22 جولائی بروز بروز ہفتہ کو انڈرپاس کو باقاعدہ ٹریفک کے لئے کھول دیا جائے گا جبکہ تعمیر کی گئی شاہراہ فیصل پر لین مارکنگ اورکیٹ آئی لگانے کا کام بھی جلد شروع کیا جا رہا ہے ۔شاہراہ قائدین فلائی اوور نرسری سے اسٹار گیٹ تک شاہراہ فیصل کی کارپٹنگ کا عمل بھی مکمل ہوگیا ہے جبکہ اسٹارگیٹ سے ناتھا خان پل تک سڑک کی کارپٹنگ آئندہ دو تین روز میں مکمل کر لی جائے گی اس کے بعد شاہراہ قائدین فلائی اوور سے ایف ٹی سی تک دونوں ٹریک کی کارپیٹنگ کا کام انجام دیا جائے گا۔ذرائع نے بتایا کہ انڈر پاس کے اندر اور راشد منہاس روڈ سے صدر جانے کیلئے سڑک کی کارپٹنگ اور دیگر ضروری کام مکمل کر لئے گئے ہیں جبکہ وزیراعلیٰ سندھ نے بھی انڈر پاس کھولنے کی حتمی تاریخ 22 جولائی دی ہے ،شاہراہ فیصل کو کشادہ کرنے کے منصوبے کے تحت ناتھا خان پل سے اسٹارگیٹ اور اسٹارگیٹ سے ناتھا خان پل تک سڑک کی کارپٹنگ کیلئے ٹھیکیدار کو چھ روز دیئے گئے تھے جبکہ شاہراہ قائدین سے ایف ٹی سی فلائی اوور تک شاہراہ فیصل کے دونوں ٹریک کی ازسرنو کارپٹنگ کا کام بھی جلد شروع کیا جا رہا ہے ، واضح رہے کہ شہری جنہوں نے تعمیراتی کاموں کے دوران گھنٹوں ٹریفک جام میں گزارے ہیں شدت سے سڑکوں کی تعمیر مکمل ہونے کا انتظار کر رہے ہیں حکومت سندھ نے پہلے کراچی میں جاری میگا منصوبوں کی تکمیل کی مدت 30 جون تک مقرر کی تھی کیونکہ ان منصوبوں پر دسمبر 2016ئمیں کام شروع ہو گیا تھا اب تک صرف طارق روڈ اورمنزل پمپ فلائی اوور کی تعمیر مکمل ہو سکی ہے جبکہ بقیہ منصوبوں این ای ڈی تا صفورا چورنگی یونیورسٹی روڈ، صفورا سے ملیر کینٹ چیک پوسٹ نمبر6 تک سڑک کی تعمیر نامکمل ہے ، سرجانی تا مدینہ الحکمت منگھو پیر، بلدیہ ٹاؤن کے سامنے حب ریور روڈ کی تعمیرجیسے منصوبے بھی ادھورے ہیں،بلدیہ عظمیٰ کراچی کے زیرانتظام ایئرپورٹ تا قائدآباد این فائیو روڈ اور جامعہ ملیہ جانے کے لئے فلائی اوور کی تعمیر بھی شہریوں کے لئے دردِ سر بنی ہوئی ہے ،اس منصوبے پر دو ڈھائی سال سے کام جاری ہے ،میئر، ڈپٹی میئر کو آئے ہوئے بھی دس ماہ سے زائد کا عرصہ گزر چکا ہے لیکن تاحال سڑک اور ملیر پندرہ فلائی اوور کے بقیہ حصے کا کام مکمل نہیں ہو سکا،لوگ دن رات این فائیو پر گھنٹوں ٹریفک جام میں پھنسے اور دھول مٹی کا شکار رہتے ہیں۔

July 19, 2017

بارش کو شہریوں کےلئے رحمت ہونا چاہیے زحمت نہیں

کراچی جدت ویب ڈیسک میئر کراچی وسیم اختر نے متعلقہ افسران کو ہدایت کی کہ جن مقامات پر بارش کا پانی جمع ہے اس کی فوری نکاسی کے لئے اقدامات کئے جائیں تاکہ شہریوں کو پریشانی نہ ہو، مزید بارش کی پیشگوئی کے پیش نظر احتیاطی اقدامات کئے جائیں رین ایمرجنسی سینٹر کو 24 گھنٹے فعال رکھا جائے اور شہریوں کی طرف سے موصول ہونے والی شکایات پر فوری اقدامات کئے جائیں، یہ بات انہوں نے بدھ کی سہ پہر ہونے والی بارش کے بعد شہر کی صورتحال کا جائزہ لینے کے لئے برنس روڈ، صدر، ایمپریس مارکیٹ، نمائش، ایم اے جناح روڈ اور دیگر علاقوںکے دورے اور بعدازاں کشمیر روڈ پر اسپورٹس کمپلیکس میں قائم رین ایمرجنسی سینٹر کے دورے کے موقع پر کہی، اس موقع پر سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر خواجہ اظہار الحسن بھی ان کے ہمراہ تھے۔ میئر کراچی نے رین ایمرجنسی سینٹر پہنچ کر وہاں موصول ہونے والی شہریوں کی شکایات کو دیکھا اور متعلقہ عملے کو ان فوری دور کرنے کے احکامات دیئے انہوں نے ضلع شرقی کے چیئرمین معید انور کو یونیورسٹی روڈ پر جمع برساتی پانی کی فوری نکاسی کی ہدایت بھی کی اور کہا کہ رین ایمرجنسی سینٹر میں تمام متعلقہ افسران اور دیگر عملہ موجود رہے تاکہ مزید بارشوں کے صورت میں نکاسی آب کے ساتھ ساتھ شہریوں کی شکایات دور کی جاسکیں، انہوں نے ہدایت کی کہ ماضی کے تجربات پیش نظر رکھتے ہوئے انڈرپاسز اور سڑکوں کے ایسے مقامات جہاں برساتی پانی جمع ہوتا ہے وہاں خاص نظر رکھی جائے،انہوں نے کہا کہ شہر میں موجودہ بارش کے بعد کی صورتحال اگرچہ مکمل طور پر کنٹرول میں ہے تاہم متعلقہ افسران اور عملہ اپنے فرائض انجام دینے میں کوئی کوتاہی نہ برتے اور نکاسی آب کے لئے فوری اور موثر اقدامات جاری رکھے،بارش کے دوران سڑکوں پر ٹریفک کی روانی برقرار رکھنے کے لئے سٹی وارڈنز ٹریفک کنٹرول کرنے میں ٹریفک پولیس کی مدد کریں۔ میئر کراچی نے کہا کہ بارش کو شہریوں کے لئے رحمت ہونا چاہئے زحمت نہیں لہٰذا میونسپل سروسز، پارکس، ورکس اور دیگر محکمے باہمی کوآرڈینیشن کے ذریعے بارش سے متعلق شہریوں کے مسائل بلاتاخیر حل کرنے کے لئے اقدامات کریں اور اس سلسلے میں کوئی کوتاہی نہ کی جائے، انہوں نے کہاکہ کے الیکٹرک اور واٹر بورڈ بارشوں کے حوالے سے شہر میں اپنی ذمہ داریوں کو پورا کریں تاکہ کسی بھی ناخوشگوار صورتحال سے بچا جاسکے اور شہری بارشوں کو مکمل انجوائے کرسکیں، انہوں نے کہاکہ برساتی نالوں کی صفائی کے بعد نکاسی آب کی صورتحال کافی بہتر ہوگئی ہے جبکہ انڈرپاسز میں بھی اندرونی نالوں کی صفائی کے بعد نکاسی آب کا نظام ٹھیک کام کر رہا ہے انہوں نے ہدایت کی کہ مزید بارشوں کی صورت میں تمام متعلقہ محکمے 24 گھنٹے الرٹ رہیں۔میئر کراچی نے کہا کہ حالیہ بارشوں کے بعد مستقل بنیادوں پر رین ایمرجنسی اور ریسکیو ٹیم بنائی گئی ہے تاکہ نکاسی آب اور ہنگامی صورتحال میں امدادی کاموں کی انجام دہی میں کوئی تاخیر نہ ہو، شہر کی سڑکوں پر پہلے کی نسبت صورتحال بہترہے، ہمارا تمام ڈسٹرکٹس سے رابطہ ہے اور ہم سب کو ساتھ لے کر چل رہے ہیں، میئر کراچی نے کہا کہ بارش کے حوالے سے شہری اپنی شکایات رین ایمرجنسی سینٹر کے نمبر0335-7553976،0332-2685090پر درج کراسکتے ہیں جہاں افسران و عملہ 24 گھنٹے ان کی خدمت کےلئے موجود ہے، انہوں نے کہاکہ وسائل محدود ہونے کے باوجود ہم شہر اور شہریوں کی بہتری کے لئے جو بھی ممکن ہوا اقدامات کرتے رہیں گے۔

July 19, 2017

سی پیک میں رکاوٹوں سے پاکستان اور چین ملکر نمٹیں گئے‘تہمینہ جنجوعہ

اسلام آباد جدت ویب ڈیسک سیکریٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نے کہا ہے کہ چین-پاکستان اقتصادی راہداری منصوبہ کے حوالے سے جو بھی رکاوٹیں پیش آئیں گی ان کو پاکستان اور چین مشترکہ طور پر نمٹیں گے، ان خیالات کا اظہار انہوں نے سی پیک منصوبہ کے حوالے سے بدھ کے روز پاکستان کونسل آف چائنا کی جانب سے منعقدہ فورم سے خطاب کرتے ہوئے کیا، سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نے کہا کہ سی پیک منصوبہ چین اور پاکستان کے درمیان تعاون دنیا کے دیگر ممالک کے لئے مثال ہے، پاکستان اور چین دونوں ممالک باہمی تعاون سے خطے کے دیگر ممالک کو بھی فائدہ ہوگا اور اس منصوبہ سے نہ صرف پاکستان اور چین کے درمیان ایک دوسرے سے منسلک ہوں گے بلکہ خطے کے درمیان بھی رابطہ بڑھے گا، انہوں نے بھارت کا نام نہ لیتے ہوئے کہا کہ پاکستان کا ایک مشرقی پڑوسی ملک نے مخالفت کی ہے اور ہم اس چیلینج سے اچھی طرح واقف ہےں، سیکریٹری خارجہ نے کہا کہ پاکستان خطے میں امن استحکام اور ترقی کی سوچ پر گامزن ہے، چین کے پاکستان میں ناظم الامور لی جئان زاؤ نے فورم سے خطاب میں کہا کہ چین کی جانب سے بیلٹ اور روڈ کا آغاز دنیا کے مختلف براعظموں اور خطوں کو ایک دوسرے سے منسلک کرنا ہے اور یہ اقدامات ایک دوسرے سے تعاون، شراکت، ایک دوسرے سے سیکھنے اور تعاون کے بنیاد پر ہیں، انہوں نے سی پیک منصوبہ کو پاکستان اور چین کے درمیان بے مثال قدم قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس منصوبہ کے خلاف جو آوازیں آرہی ہے ان سے کوئی اثر نہیں پڑی گا، انہوں نے کہا کہ سی پیک کے تحت پاکستان میں توانائی، روڈس اور دیگر پر تیزی سے کام جاری ہے، گوادر میں بین الاقوامی ایئرپورٹ کا افتتاح رواں سال ہو جائے گا، فورم سے خطاب کرتے ہوئے سابق سیکرٹری خارجہ انعام الحق نے کہا کہ منصوبہ کے حوالے سے پاکستانی حکومت کو خود باریک بینی سے دیکھنا ہوگا کہ سی پیک منصوبہ کو کس طرح سے مزید اپنی مفادات میں کیا جا سکتا ہے۔

July 19, 2017

سندھ حکومت کا بےنظیر پارک میں وائی فائی لگانے کا فیصلہ

کراچی جدت ویب ڈیسک وزیر اعلیٰ سندھ کے معاون خصوصی برائے انفارمیشن سائنس اینڈ ٹیکنالوجی ڈاکٹر سکندر شورو نے کہا ہے کہ سندھ حکومت نے آئی ٹی کی جدید سہولیات بلامعاوضہ فراہم کرنے کے لیے پہلے مرحلے میں کراچی کے علاقہ کلفٹن میں واقع شہید بے نظیر بھٹو پارک میں وائی فائی لگانے کا فیصلہ کیا ہے جس کے لیے رواں مالی سال کے بجٹ میں 50 ملین روپے مختص کئے گئے ہیں-یہ بات انہوں نے اپنے دفتر میں آئے ہوئے عمادین شہر سے ملاقات کے دوران کہی۔ڈاکٹر سکندر شورو نے کہا کہ موجودہ سندھ حکومت آئی ٹی کے شعبے کو مزید فعال کرنے اور جدید خطوط پر استور کرنے کے لیے تمام وسائل برو ئے کار لا رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگلے مرحلے میں شہر کے دیگر علاقوں میں بھی وائی فائی کی مفت سہولیاتبہم پہنچا نے کی منصوبہ بندی کی جارہی ہے تاکہ شہر بھر کے عوام اس سہولیات سے استفادہ حاصل کرسکےں۔ ڈاکٹر سکندر شورو نے مزید کہا کہ طلبہ و طالبات میں تحقیقی کلچر مزید فروغ دینے کے لیے پہلے مرحلے میں جامشورو میں واقع سرکاری یونیورسٹی میں ریسرچ انکیوبیٹر کے قیام کے لیے 40.51 ملین روپے مختص کئے ہیں تاکہ نوجوانوں میں تحقیق کے رجحان کو بڑھانے اور جدید انداز سے تحقیق کرنا ممکن بنایا جاسکے۔

July 19, 2017

وزیراعظم کا دفاع کرنےوالے دانیال عزیز خود پھنس گئے

اسلام آباد جدت ویب ڈیسک پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنمائ دانیال عزیز پانامہ کیس میں وزیراعظم نواز شریف کی عوام کے سامنے بے گناہ ہی ثابت کرتے کرتے خود لاکھوں روپے کے نادہندہ نکلے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق مسلم لیگ ن سے تعلق رکھنے والے رکن پارلیمنٹ دانیال عزیز گن اینڈ کنٹری کلب کے ان 32 ممبران مین شامل ہیں جن کے ذمہ دار کلب کے لاکھوں روپے واجب الادا ہیں۔ یکم جولائی کو کلب انتطامیہ کی جانب سے یار کی گئی فہرست میں گن اینڈ کنٹری کلب کے ایڈمنسٹریٹر دنیال عزیز کے علاوہ ایس ڈی پی آئی کے سابق ایگزیکٹو ڈائریکٹر عابد قیوم کے علاوہ تنویر الیاس ‘ راجہ ہارون راشد ‘ ریاض چیمہ‘ سید اسد عباس سمیت دیگر کئی ممبران شامل ہیں۔ جنہوں نے کلب کے لاکھوں روپے ادا کرنے ہیں۔ فہرست کی تفصیلات کے مطابق دانیال عزیز نے 419,501 روپے اور عابد قیوم نے 263,171 روپے کلب کو ادا کرنے ہیں کلب کی ویب سائٹ پر تمام ممبران کو 28 فروری 2017 ئ سے قبل تمام واجبات ادا کرنے کا کہا گیا تھا کلب کے قواعد و ضوابط کے مطابق 90 دن کے بعد واجبات ادا نہ کرنے کی صورت میں ممبران کی رکنیت ادائیگی تک معطل کردی جاتی ہے۔ اس حوالے سے دانیال عزیز نے کہا ہے کہ انہوں نے 14 تاریخ کو 5 لاکھ روپے ادا کردیئے تھے اس سے قبل گھر او ر پتہ تبدیل کرنے اور مصروفیات کی بنا پر ادائیگی نہیں کر سکا۔ تاہم کلب کے ایک کائونٹر پر 15 جولائی کو بھی ڈیفارلٹرز کی فہرست آویزاں تھی جس میں دانیال عزیز کا نام بھی شامل تھا۔

July 19, 2017

سندھ حکومت 2سوبلین کے اہداف عبور کرلے گی‘ وزیراعلیٰ سندھ

کراچی جدت ویب ڈیسک وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ نے کہاہے کہ سیلز ٹیکس کی مجموعی وصولی کا کام صوبوں کے حوالے کیا جائے، صوبے ٹیکس دہندگان کے قریب ہونے سے وفاقی حکومت سے بہتر وصولی کریں گے۔سندھ حکومت خدمات پر سیلز ٹیکس کی محصولات میں وفاقی حکومت سے بہتر کام کر رہی ہے۔ سندھ خدمات پر ٹیکس وصول کرتا ہے۔ رواں مالی سال حکومت سندھ کو ٹیکسوں کی مد میں 200 بلین کے اہداف کو عبور کرنا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے بدھ کو وزیراعلی ہائوس میں آئی ایم ایف کے ملکی نمائندے مسٹر توقیر مرزیوâMr Tokhir Mirzoev áسے ملاقات کرتے ہوئے کی۔ اس موقع پر وزیراعلی سندھ کے ہمراہ پرنسپل سیکرٹری سہیل راجپوت، سیکرٹری خزانہ حسن نقوی اور آئی ایم ایف کے حکام بھی موجود تھے۔وزیراعلی سندھ نے کہا کہ صوبائی محصول ادارہ سندھ ریوینیو بورڈنے رواں سال 78 بلین وصول کئے ہیں جبکہ محکمہ ایکسائیز نے 58 بلین جمع کیے ہیں، صرف بورڈ آف روینیو کے اہداف کچھ کم رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت اپنے اہداف پورے نہیں کر پاتی تو کیش فلو مینجمنٹ میں صوبوں پر اثر پڑتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ رواں سال 200 بلین کے اہداف کو عبور کرنا ہے جوکہ ہم وصول کرلیں گے۔ انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت نے پراپرٹی ٹیکس کو مزید مستحکم اور فعال بنانے کیلئے ضلعی سطح پر اختیار منتقل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ پراپرٹی ٹیکس میں بڑی صلاحیت موجود ہے، اس کی اصلاحات میں بہتر وصولی ہوگی۔ انہوں نے متعلقہ افسران کو ہدایت کی کہ اس کے قیام کے مقصد کو کامیاب بنانے کے لئے اپنا کردارادا کریں تاکہ نچلی سطح پر عوام کے مسائل حل ہوں اور عوام کو ریلیف میسر آ سکے۔ بعدازاں انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت نے مثر اور منظم مالی انتظام کاری کو بنایا ہے۔