September 19, 2017

آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ کا انجینیرز سینٹر رسالپور کا دورہ کے دوران لیفٹیننٹ جنرل جاوید محمود بخاری کوانجینیرنگ کور کے کر نل کمانڈنٹ کے بیج لگائے

جدت ویب ڈیسک :پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے مطابق آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ نے انجینیرز سینٹر رسالپور کا دورہ کیا جہاں انہوں نے انجینیرنگ کور کے کر نل کمانڈنٹ کوبییجز لگانے کی تقریب میں شرکت کی ۔اس تقریب میں آرمی چیف نے لیفٹیننٹ جنرل جاویدمحمودبخاری کوانجینیرنگ کور کے کر نل کمانڈنٹ کے بیج لگائے۔ لیفٹیننٹ جنرل جاویدمحمودبخاری نے پی ایم اے سے اعزازی شمشیر حاصل کر رکھی ہے۔ ،جبکہ تقریب میں رئٹائرڈ اور حاضر سروس افسروں کی ایک کثیر تعداد نے شرکت کی ۔تقریب کے بعد آرمی چیف جوانوں اور افسروں میں گھل مل گئے

Posted by Maj Gen Asif Ghafoor on Tuesday, September 19, 2017

September 19, 2017

آرمی چیف جنرل قمرجاویدباجوہ نے پانچویں آرمی چیف ینگ سولجرزانٹرسنٹرل کمبیٹ چیمپئن شپ کامعائنہ کیا اور فاتح کھلاڑیوں میں انعامات تقسیم کیے

جدت ویب ڈیسک :پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا ایبٹ آباد میں پانچویں آرمی چیف ینگ سولجرزانٹرسنٹرل کمبیٹ چیمپئن شپ کامعائنے کے دوران تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ پاک فوج دنیاکی سب سے ز یادہ جنگیں لڑنےوالی فوج ہےجبکہ پاک فوج کے افسروں اورجوانوں نے ہر قسم کے چیلنجزکامقابلہ کیا۔پانچویں آرمی چیف ینگ سولجرزانٹرسنٹرل کمبیٹ چیمپئن شپ میں 23ریجمنٹل سینٹرزکے 532 جوانوں نے شرکت کی،انجینئرزسینٹرچیمپئن شپ کی فاتح قرار جبکہ بلوچ سینٹردوسرے نمبرپررہا، سپاہی ثنات اللہ چیمپئن شپ کے بہترین کھلاڑی قرارپائےآرمی چیف جنرل قمرجاویدباجوہ نے ایبٹ آبادکے دورے کے دوران پانچویں آرمی چیف ینگ سولجرزانٹرسنٹرل کمبیٹ چیمپئن شپ کامعائنہ کیا اورفاتح کھلاڑیوں میں انعامات تقسیم کیے۔

Posted by Maj Gen Asif Ghafoor on Tuesday, September 19, 2017

September 19, 2017

چار سال میں اپنے گھر کی جتنی صفائی کی گئی تاریخ میں اس کی مثال نہیں ملتی وزیر اعظم اپنے بیان سے پاکستان کا تماشا نہ بنائیں

جدت ویب ڈیسک :سابق وفاقی وزیر داخلہ چودھری نثار نے کہا ہے کہ اپنے گھرکی صفائی سے متعلق بیان دے کر وزیر اعظم پاکستان کو تماشہ نہ بنائیں۔میڈ یا رپورٹس کے مطابق وزیراعظم کے بیان پر رد عمل دیتے ہوئے چودھری نثار نے کہا کہ وزیراعظم اپنے گھر کو درست ضرو ر کریں ،انہیں کس نے روکا ہے ،کوتاہیوں اور کمزوریوں کا علاج ہونا چاہیے لیکن ایسے بیانات نہ دیں کیونکہ اس سے دشمن کے بیانیے کو تقویت ملتی ہے ایسے بیانات سے پاکستان کا موقف عالمی سطح پر کمزور ہوتا ہے ،دشمن دہشت گردی کا ذمہ دار پاکستان کو قرار دیتا ہے ۔ان کاکہنا تھا کہ وزراءحکومت میں ہیں بیان دینے کے بجائے عملی کام کریں ۔انہوں نے کہا کہ چار سال میں اپنے گھر کی جتنی صفائی کی گئی تاریخ میں اس کی مثال نہیں ملتی ہے ،وزیر اعظم اپنے بیان سے پاکستان کا تماشا نہ بنائیں ۔واضح رہے کہ سب سے پہلے وفاقی وزیر خارجہ خواجہ آصف نے بیان دیا تھا کہ ہمیں اپنے گھر کو درست کرنا ہو گا جس پر وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے بھی ان کی حمایت کی تھی اور کہا تھاکہ ہمیں اپنے گھر کی صفائی کی ضرورت ہے

September 19, 2017

خواجہ آصف کی سیکریٹری جنرل عرب لیگ اورکرغستان کے ہم منصب سے ملاقاتیں دنیا میں قیام امن کے لیے پاکستانی کوششوں کی تعریف

جدت ویب ڈیسک :نیویارک(آن لائن)وزیرخارجہ خواجہ آصف نے نیویارک میں عرب لیگ کے سیکرٹری جنرل احمد ابو الغیث سے ملاقات میں مسئلہ کشمیر اور فلسطین کے حل کے لئے بات چیت پر زور دیا۔اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس کے سلسلے میں نیویارک میں موجود وزیر خارجہ خواجہ آصف نے عرب لیگ کے سیکرٹری جنرل کو مسئلہ کشمیر سے آگاہ کیا۔ انہوں نے کشمیریوں پر بھارتی مظالم پر گہری تشویش کا اظہار کیا، سیکرٹری جنرل ابوالغیث نے دنیا میں امن کیلیے پاکستان کی کوششوں کی تعریف کی، دونوں رہنماؤں نے فلسطین میں قابض افواج کی بچوں اور خواتین پر مظالم کا معاملہ عالمی سطح پراٹھانے پر اتفاق کیا۔ ادھر وزیرخارجہ خواجہ آصف نے اپنے کرغستان کے ہم منصب ارلان عبداللہ سے بھی ملاقات کی، دونوں رہنماوں میں کاسا منصوبے سمیت دو طرفہ تعلقات بڑھانے اتفاق کیا گیا۔

September 18, 2017

ضمنی الیکشن‘ ڈاکٹر نے تشویشناک خبرسناکر ’’مریضہ‘‘ کی خوشیاں چھین لیں

لاہور جدت ویب ڈیسک پاکستان تحریک انصاف کی این اے 120 کی امیدوار ڈاکٹر یاسمین راشد نے ضمنی انتخابات کے نتائج ماننے سے انکار کردیا ، تحریک انصاف نے الیکشن کمیشن میں پیٹیشن جمع کرادی ہے، 29 ہزار ووٹوں کی تصدیق ہونے تک نتائج کا اعلان قبول نہیں، الیکشن کمیشن میں 25 پٹیشنز دائر کروا رکھی ہیں، الیکشن پیٹیشنز پر فیصلہ نہ ہونے تک نتائج نہیں آسکتے، حلقے میں ترقیاتی کام، سرکاری وسائل، وفاقی اور پنجاب گورنمنٹ کو استعمال کیاگیا، حکومتی وزرائ نے نوکریاں بانٹیں، زکوۃ کمیٹی کے چئیرمین فراست پراچہ نے کہا کہ زکوۃ دینے کے بدلے لوگوںسے ووٹ مانگے گئے ، ان خیالات کااظہار ڈاکٹر یاسمین راشد نے چیئرمین سیکرٹریٹ گارڈن ٹائون میںاعجازاحمدچوہدری، شعیب احمد صدیقی، عندلیب عباس ، مسرت جمشید چیمہ، عائشہ چوہدری، عدنان جمیل کے ہمراہ پریس کانفرنس کے موقع پرکیا، انہوں نے کہاکہ حلقے میں ن   لیگ کی بے ضابطیگیوں پرایکشن نہ لینے پر الیکشن کمیشن کو بھی عدالت میں لے کر جاوں گی، اختیارات ہونے کے باوجود الیکشن کمیشن نے جانبدارانہ رویہ اپنایا جو قابل مذمت ہے،حلقے میں غریب آدمی کو روٹی اور پینے کا صاف پانی میسر نہیں ہے ، ڈاکٹر یاسمین راشد کاکہنا تھاکہ میں ہاری ضرور ہوں مگر عوام کے لیے آواز ضروربلند کرتی رہوں گی ، حلقے کے عوام کی جتنی بھی مدد کرسکی کروںگی، شریف فیملی بیرون ملک بیٹھی ہے مگر میں اپنی عوام کے ساتھ موجود رہوں گی ، الیکشن سے قبل کہا تھا کہ جیتنے یا ہارنے دونوں صورتوں میں الیکشن کمیشن جانے کا کہا تھا، 29 ہزار غیر تصدیق شدہ ووٹوں کے ساتھ الیکشن غیر اخلاقی ہے ، ہمیں کا جولسٹیں فراہم کی گئی تھیںان میںووٹر نمبر اور گھرانہ نمبر درج نہیں تھا ، الیکشن کمیشن نے 58 ہزار روپے لے کر بھی ہارڈ کاپی دی اور سافٹ کاپی مہیا نہیں کی ، میں میڈیا کاشکریہ ادا کرتی ہوں جن کو میںنے120 کی تمام گلیاں دکھائیں اور پھرایا اور  ن  لیگ کی کارکردگی کا پردہ چاک کیا، فوج ، رینجر اورمیڈیا کا بھی شکریہ ادا کرتی جن کی وجہ سے پولنگ پرامن رہی، ورنہ یہاں جھگڑے ہوسکتے تھے اور کسی کی جان جانے کابھی خطرہ تھا، ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہاکہ میں حلقے کے ووٹروں کی شکرگزار ہوں جنہوں نے ن لیگ کو بتا دیا کہ یہ ان کا گڑھ نہیں رہا، حلقے میں عوام کا بڑا دھڑا  ن   لیگ سے ناخوش ہے اور ان کے خلاف کھڑا ہے ،میں چیئرمین عمران خان اور مرکزی و صوبائی قیادت اور ورکروں کی بھی نہایت مشکور ہوں جنہوں نے دن رات میرا ساتھ دیا ، امیدوار کا حلقے میں ہونا انتہائی اہم ہے ،  ن  لیگ نے شروع کے نتائج سے گھبرا کر ایسے بیانات دیے جس سے  ن  لیگ نے دھاندلی کی باتیں شروع کردیں اور کہاکہ ہمارے بندے اٹھائے گئے ہیں، حلقے کی بڑی عوام نے بتایا کہ ہم مفاد پرست نہیں نوے فی صد مفاد پرستوں نے ن لیگ کو ووٹ دیے ،حلقے کی خواتین سے ان کے خاوندوں نے آئی ڈی کارڈ لے کر پی ٹی آئی کو ووٹ دینے سے روکا، ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہاکہ 180 ایچ اور 90 شاہراہ کو کیمپئن کے لئے استعمال کیاگیا اور وہاں حلقے کی عوام کو کھانے کھلائے گئے نیب کی کاروائی پر پیش نہ ہونے والے عدالت میں بھی پیش نہیں ہوئے ، مریم بی بی سے یتیموںکے مال کی ایک ایک پائی کا حساب لیں گے، ن  لیگ اور پیپلزپارٹی چوروں کا ٹولہ علی الاعلان اکٹھا ہوگیا ہے ، آئندہ انتخابات پھر چوروں کے درمیان گٹھ جوڑ ہوگیا ہے ۔ تحریک انصاف پنجاب کے سابقہ صدر اعجاز چودھری نے کہاکہ ایک ماہ کی کمپین نے  ن  لیگ کی تیس سال کی حکمرانی میں شگاف ڈال دیا ہے، ضمنی الیکشن مین تحریک انصاف کے ووٹوں میں 6 فیصد اضافہ ہوا ہے جبکہ  ن  لیگ کے ووٹوں میں 11 فیصد کمی آئی ہے ، انہوں نے کہاکہ مریم نواز جو سازش کی باتیں کرتی ہیں وہ کھل بتائیں کون ان کے خلاف سازشیں کررہا ہے ، وفاقی اور پنجاب حکومت ان کی اور پھر بھی سازشوں کی باتیں کرنا ن   لیگ کا وطیرہ بن چکاہے ، انہوں نے کہاکہ  لیگ نے 276 ووٹ 20 لاکھ میں خریدے ہیں ان کا ثبوت بھی جلد سامنے لائوںگا، حلقے میں سرکاری وسائل بے دردی سے استعمال کیے گئے ۔ تحریک انصاف کے مرکزی نائب صدر و ایم پی اے شعیب صدیقی نے کہاکہ انتخابی اصلاحات کے حوالے سے کمیٹی بنی ہے اس پر تحریک انصاف بھرپور کام کررہی ہے اورپی ٹی آئی کی طرف سے اس کمیٹی کو تجاویز بھیجی جا چکی ہیں ، تحریک انصاف کی پوری کوشش ہوگی انتخابی اصلاحات کے بغیر جنرل الیکشن نہ ہوں اور پی ٹی آئی چاہتی ہے کہ ملک میں شفاف انتخابات منعقد ہوں، انہوں نے کہاکہ تحریک انصاف 2018ئ سے قبل انتخابی اصلاحات کرواکر الیکشن میں جائے گی۔

September 18, 2017

خواجہ سرائوں نے حکومت کو نئی مشکل میں ڈال دیا

ملیر سے رحیم شاہ کی رپورٹ٭خواجہ سرائوں کا سرکاری ملازمتوں میں کوٹہ نہ ملنے کے خلاف وزیر اعلیٰ ہائوس کے سامنے احتجاج کرنے کا اعلان،سوشل ویلفیئر ڈپارٹمنٹ مکمل طور پر ناکام ثابت ہوا ہے،سپریم کورٹ کے واضح احکامات کے باوجود خواجہ سرائوں کو سرکاری ملازمتوں میں شامل نہیں کیا جا رہا، ان خیالات کا اظہار خواجہ سرائوں کی تنظیم جیا کے صدر بندیا رانی کے ہمراہ خواجہ سرا نیلی، مظہر انجو، چاہت اور دیگر نے ملیر پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کئے،انہوں نے کہاکہ ہم بھی پاکستانی شہری ہیں اور پاکستانی محکموں میں عام شہری کی طرح روزگار پر ہمارا بھی حق ہے جس کے حوالے سے ہمارا حق تسلیم کرتے ہوئے ملک کی اعلیٰ عدلیہ سپریم کورٹ نے بھی احکامات جاری کئے تھے،مگر سندھ حکومت نے سپریم کورٹ کے احکامات کو بھی خاطر میں نہ لاتے ہوئے خواجہ سرائوں کو نظر انداز کر رکھا ہے، سندھ گورنمنٹ کا سوشل ویلفیئر ڈپارٹمنٹ مکمل طور پر ناکام ہو چکا ہے،ہم خواجہ سرا بھیک مانگ کر اور مختلف محفلوں میں لوگوں کو محظوظ کرکے گذر بسر کرنے پر مجبور ہیں اگر ہمیں بھی بہتر روزگار دیا جائے تو ہم بھی باعزت زندگی گذار سکتے ہیں مگر ایسا محسوس ہوتا ہے کہ خواجہ سرا مکمل طور پر لاوارث اور اس ملک کے شہری ہی نہیں ہیں،اگر سندھ حکومت نے خواجہ سرائوں کو سرکاری اداروں میں ملازمتوں کو کوٹہ نہ دیا تو ہم وزیر اعلیٰ ہائوس کے سامنے کثیر تعدا د میں جمع ہوکر احتجاج کرینگے۔

September 18, 2017

ہم سے مطالبہ کرنےوالے اب خود ڈور مور کریں ،آرمی چیف

اسلام آباد جدت ویب ڈیسک پاک فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا ہے کہ سول ملٹری تعلقات مین کوئی تنائو نہیں ہے ہمیں مل کر دشمن کا مقابلہ کرنا ہے دہشت گردی اور انتہا پسندی کو شکست دینے کے لیے تمام شراکت داروں کو باہمی تعاون کرنا ہوگا جمہوری اداروں کیمضبوطی کا حامی ہوں ، امریکہ کو پتہ چل چکا ہے کہ ہمیں ٹرمپ پالیسی پر اعتراضات ہیں پارلیمنٹ کی قراردادوں کا اس معاملے پر متفقہ پاس ہونا خوش آئند ہے بھارت کا محدود وسائل کے باوجود مقابلہ کر رہے ہیں افغانستان سے کوئی اختلاف نہیں انھیں اپنی طرف دہشت گردوں کے خلاف کاروائی کرنا ہوگی ان خیالات کا اظہار انہوں نے سینیٹ اور قومی اسمبلی کی دفاعی کمیٹیوں کے اراکین سے گفتگو کرتے ہوئے کیا جنھوں نے قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے دفاع کے چئیرمین شیخ روحیل اصغر اور سینیٹ کی دفاعی پیداوار کی کمیٹی کے چئیرمین عبد القیوم کی سربراہی میں پیر کو جی ایچ کیو کا دورہ کیا ، کمیٹی اراکین نے یاد گار شہدا پر حاضری دی ، پھول چڑھائے اور وطن کے لئے جانیں قربان کرنے والوں کو خراج تحسین پیش کیا آن لائن سے گفتگو میں قومی اسمبلی کی دفاعی کمیٹی کے چئیرمین شیخ روحیل اصغر نے کہا کہ ارمی چیف نے ہر سوال کا جواب دیا بڑے اوپن ماحول میں گفتگو ہوئی ڈی جی ملٹری آپریشنز میجر جنرل ساحر شمشاد مرزا نے پاک بھارت تعلقات۔پاک افغان تعلقات پر بریفنگ دی جبکہ ارمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے سوال و جواب کا طویل سیشن ہوا شیخ روحیل اصغر نے بتایا کہ کہ ارمی چیف کا کہنا تھا کہ سول ملٹری تعلقات مین کوئی تنائو نہیں ہے۔اس معاملے پر کنفیوڑن نہیں ہونی چاہیے۔دشمن کے خلاف ہمیں مل کر کام کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ میں جمہوری ا داروں کی مضبوطی کا حامی ہوں جبکہ نئی امریکی پالیسی کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ ٹرمپ پالیسی کے خلاف پارلیمنٹ کا قراردادیں پاس کرنا خوش ایند ہے امریکہ کو پتہ چل چکا کہ ہمیں یہ پالیسی پسند نہیں۔ڈو مور کا امریکی مطالبہ درست نہین ہے۔ ہم سے زیادہ کس نے ڈو مور کیا اب کہنے والے ڈو مور کریں ان کا کہنا تھا کہ افغانستان سے ہمارا کوئی اختلاف نہیںافغانستان کی حکومت سے کہا ہے کہ وہ دراندازی ر وکے ہم نے اپنی طرف سے دہشتگردی کا خاتمہ کیا وہ بھی کریںبھارت کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ وہ دنیا کی توجہ کشمیر میں اپنے مظالم سے ہٹانے کے لئے کنٹرول لائن پر حالات خراب کرتا ہے مگر پاکستان اس کا بھرپور جواب دیتا ہے اور ہم بھارت کا محدود وسائل کے باوجود مقابلہ کر رہے ہیںدفاعی کمیٹیوں نے پاک فوج کی تیاریون پر اظہاد اطمینان کیا اور اس بات پر اتفاق کیا گیا کہ : دہشتگردی اور انتہا پسندی کے خاتمے کے لیے مل کر کوشیش جاری رکھی جائیں گی۔چئیرمین کمیٹی نے بتایا کہ ڈی جی ملٹری اپریشن کی بریفنگ بہت اچھی تھی۔ترجمان پاک فوج کے مطابق اس بات پر اتفا ق تھا کہ ہر ایک کو اپنی ذمہ داری نبھانی اور باپمی شراکت داری کے تحت اگے بڑھنا ہوگا اور پوری قوم کی حمایت سے انتہا پسندی کا خاتمہ کیا جائے گا۔

September 18, 2017

ہمیشہ حق کیلئے لڑنے کا درس دینے والے کپتان نے ’’ہار‘‘مان لی

اسلام آباد جدت ویب ڈیسک چیئر مین تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے کہ این اے 120ضمنی انتخابات میں شکست تسلیم کرتے ہیں۔ ہم نے الیکشن مہم دیر سے شروع کی اگر پہلے شروع کرتے تو نتائج مختلف ہوتے۔ ن لیگ نے سرکاری وسائل کا بے دریغ استعمال کیا اس کے باوجود ن لیگ کو اتنے کم ووٹ پڑے۔ جن لوگوں نے ن لیگ کو ووٹ دیئے انہوں نے کرپشن کا ساتھ دیا۔ آرٹیکل 62ایف ون مجھ پر لاگو نہیں ہو سکتا۔ میری نا اہلی نا ممکن ہے۔ فارن فنڈنگ کیس کی تفصیل الیکشن کمیشن کو دیدی ہے۔ پیر کے روز نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے چیئر مین تحریک انصاف عمران خان نے کہا کہ مجھے کیوں نکالا کی مہم جی ٹی روڈ سے شروع ہوئی۔ این اے 120میں ن لیگ کے 30فیصد ووٹ کم ہوئے ہیں۔ این اے 120میں سرکاری وسائل کا بے دریغ استعمال کیا گیا۔ وزیر الیکشن مہم چلا رہے تھے ۔ مجھے اور تحریک انصاف کے اراکین اسمبلی کو این اے 120میں جانے سے روکا گیا۔ سرکاری مشنری کے استعمال کے باوجود ن لیگ اتنے کم مارجن سے جیتی۔ عمران خان نے کہا کہ ن لیگ کو جو ووٹ پڑیں ، وہ ان لوگوں کے ووٹ ہیں جن کو ن لیگ نے نوازا ہوا تھا۔ تحریک انصاف کی مقبولیت بڑھی ہے۔ ن لیگ کی نہیں، عام انتخابات اور ضمنی انتخابات میں فرق ہوتا ہے، حمزہ شہباز بچوں کو کہتے ہیں کرپشن ہوتی ہے۔ نواز شریف کہتے ہیں کرپشن روکو گے تو ترقی رک جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں صادق اور امین ولگوں کی ضرورت ہے ، ن لیگ کو کم ووٹ پڑے، عدالت کی جیت ہوئی۔ جس قوم کی اخلاقیات نہ ہوں، وہ قوم ترقی نہیں کر سکتی۔ ن لیگ کو ووٹ دینے والوں نے کرپشن کی حمایت کی۔ این اے120میں ہم نے الیکشن مہم دیر سے شروع کی اگر پہلے شروع کرتے تو ووٹوں کا مارجن کم کر سکتے تھے۔ ڈاکٹر یاسمین نے بڑی محنت کی انہوں نے کہا کہ ہم نے کے پی کے میں احتسابی عمل بہتر کیا، ضیائ اللہ آفریدی کے الزامات غلط ہیں۔ اپنے وزیروں کو کرپشن کے الزامات پر نہیں نکال سکتا۔ میں ضیائ اللہ آفریدی سے دوبار ملا ان سے وضاحت مانگی کہ آپ پر کرپشن کے الزامات لگ رہے ہیں۔ میں نے حامد خان کو کہا کہ صوبے میں جو بھی کرپشن میں ملوث ہوا اسے پکڑیں۔ پرویز خٹک پر کرپشن کے الزامات لگے لیکن ثبوت نہیں ملے۔ این اے120کے ضمنی الیکشن میں شکست تسلیم کرتے ہیں، 3یونین کونسلر کے نتائج غیر معمولی ہیں۔ ہم نتائج کا جائزہ لے رہے ہیں۔ عمران خان نے کہا کہ 2013ئ کے بعد عوام کی سوچ میں بہت تبدیلی آئی ہے، این اے120مسمل لیگ ن کا گڑھ ہے۔ اس کے باوجود ن لیگ کو ووٹ کم پڑا۔ نواز شریف کے گڑھ میں ان کا ووٹ کم ہوا ہے۔ اس سے لگتا ہے ن لیگ کا ووٹ اور کم ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ سمجھتا ہوں کہ ہمارا ووٹ بڑھا ہے اور یہ ووٹ اور بڑھے گا۔ مسلم لیگ ن کوئی نظریاتی یا سیاسی جماعت نہیں ہے۔ یہ مفاد پرست لوگوں کا ٹولہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ چوہدری نثار سے کوئی رابطہ نہیں ہے۔ بلکہ مجھے ان پر غصہ ہے۔ چوہدری نثار نے ہم پر شیلنگ کرائی تھی۔ چوہدری نثار نے مریم نواز کے بارے میں جو کہا اس پر خوش ہوں۔ چوہدری نثار سے پارٹی میں آنے کے لئے کوئی بات نہیں ہوئی۔ چیئر مین تحریک انصاف نے کہا کہ لندن فلیٹ کی منی ٹریل عدالت کو دے دی ہے۔ لندن فلیٹ 35سال قبل خریدار گیا۔ میں کرکٹر تھا۔ میاں صاحب بھی بتاتے کہ انہوں نے فلیٹ کیسے خریدے۔ ایک آدمی باہر پیسہ کما کر پاکستان لایا تو وہ نا اہل کیسے ہو سکتا ہے؟ میں نے فارن فنڈنگ کی تفصیل40ہزار لوگوں کے نام جنہوں نے تحریک انصاف کو فنڈنگ کی اس کی تفصیل الیکشن کمیشن تحریک انصاف کے خلاف تعصب سے کام کر رہا ہے۔ آرٹیکل 62ایف ون مجھ پر لگنا نا ممکن ہے۔ ہمیں حلال کی کمائی دولت پاکستان لیکر آیا ہوں۔ مجھے کیسے کوئی نا اہل کر سکتا ہے۔ کرپشن کے خلاف اگر ہم مہم چلائی گے تو اس میں آصف زرداری کے خلاف بھی مہم چلائیں گے۔ میری نواز شریف سے ذاتی دشمنی نہیں کرپشن کے خلاف مہم چلائی ہے۔