July 18, 2019

کلبھوشن قونصلر رسائی کا مستحق نہیں, پاکستان کے ایڈہاک جج کا اختلافی نوٹ

دی ہیگ (جدت ویب ڈیسک )پاکستان کے ایڈہاک جج جسٹس تصدق جیلانی نے کلبھوشن جادیو کیس کے فیصلے پر اختلافی نوٹ لکھا جس کے مطابق نہتے پاکستانیوں کو بدترین دہشت گردی کا نشانہ بنانے والا بھارتی دہشت گرد کلبھوشن جادیو کسی قونصلر رسائی کا مستحق نہیں۔
عالمی عدالت میں بھارت کا وکیل ہریش سالو یہ ثابت کرنے میں ناکام ہو گیا کہ کلبھوشن جاسوس نہیں ۔ پاکستانی وکیل خاور قریشی نے کمانڈر کلبھوشن کو نیوی کا حاضر سروس افسر ،جاسوس اور تخریبی کارروائیوں میں ملوث ثابت کردیا،پاکستانی وکیل نے تاریخی عدالتی فیصلوں کے حوالے دیے ۔
پاکستانی وکیل نے بین الاقوامی قانون کے پیرائے میں ثابت کیا کہ جاسوس اور تخریب کار کو قونصلر رسائی کا حق حاصل نہیں ، پاکستانی وکیل نے امریکہ اور روس کے مابین قیدیوں کے تبادلے کی مثال دی۔
امریکا اور روس کے مابین تحویل مجرمان کے دوران قونصلر رسائی فراہم نہیں کی گئی۔ بھارت 60 سالہ تاریخ میں عالمی عدالت سے ویانا کنونشن کے تحت ایسی رعایت مانگنے والا پہلا ملک ہے۔پاکستان اور بھارت کے مابین 1982 اور 2008 کے در طرفہ معاہدے موجود ہیں۔
ویانا کنونشن کے تحت قونصلر رسائی فراہم کربھی دی جائے تو بھی رہائی یا مقدمہ ختم ہونے کا سوال ہی نہیں پیدا ہوتا۔
بھارت 2017 تک کمانڈر کلبھوشن یادیو کو اپنا شہری ماننے کو ہی تیار نہ تھا۔قونصلر رسائی مانگنے سے قبل بھارت کو یہ تسلیم کرنا تھا کہ کلبھوشن ان کا شہری ہے۔بھارتی شہری کلبھوشن یادیو ہے یا حسین مبارک پٹیل، شناخت مبہم ہے،جب شناخت ہی واضح نہیں تو قونصلر رسائی کیسے دی جائے۔
پاکستان کے ایڈہاک جج جسٹس تصدق جیلانی کا فیصلے پر اختلافی نوٹ سامنے آ گیا ، جسٹس تصدق جیلانی کہتے ہیں ویانا کنونشن جاسوسوں پر لاگو نہیں ہوتا ،
بھارتی درخواست قابل سماعت قرار نہیں دی جانی چاہیے تھی ،بھارت مقدمے میں حقوق سے ناجائز فائدہ اٹھانے کا مرتکب ہوا۔

July 17, 2019

کرتار پور راہداری اچھا منصوبہ ہے،امریکا کا خیرمقدم

جدت ویب ڈیسک ::اس منصوبے پر اسی فیصد کام مکمل ہوچکا ہے، اس کا باقاعدہ افتتاح 23 نومبر کو باباگرونانک کے 550 ویں یوم پیدائش پر کیا جائے گا۔امریکا نے بھی کرتار پور راہداری منصوبے کا خیر مقدم کر دیا ، کہا کہ کرتار پور راہداری اچھا منصوبہ ہے ۔ محکمہ خارجہ کی ترجمان مورگن اورٹیگس کہتی ہیں امریکا ایسے تمام اقدامات کی حمایت اور حوصلہ افزائی کرتا ہے، جن سے پاکستان اور بھارت کے عوام کے درمیان رابطوں میں اضافہ ہو۔
امریکی محکمہ خارجہ کی ترجمان مورگن اورٹیگس کہتی ہیں پاکستان کا کرتارپور راہداری منصوبہ یقیناً ایک اچھی خبر ہے، امریکا ہر اس اقدام کی حمایت کرتا ہے جس سے پاکستان اور بھارت کے عوام قریب آئیں۔
مورگن اورٹیگس نے ایک سوال کے جواب میں واضح کیا کہ وزیر اعظم عمران خان وائٹ ہاؤس کا سرکاری دورہ کر رہے ہیں۔
کرتارپور سکھ برادری کیلئے انتہائی مقدس مقام ہے، بھارتی سکھوں کو آسان رسائی دینے کیلئے وزیراعظم عمران خان نے گذشتہ سال 28 نومبر کو یہاں راہداری بنانے کا اعلان کیا تھا۔

July 16, 2019

مراد سعید کے اہم انکشافات زرداری اور نواز شریف پر قومی خزانے سے کتنے پیسے خرچ ہوئے؟

اسلام آباد: جدت ویب ڈیسک :: وفاقی وزیر برائے مواصلات مراد سعید نے کہا ہے کہ خرچوں کے معاملے میں آصف زرداری قوم پر سب سے زیادہ بھاری پڑے.
ان خیالات کا اظہار انھوں نے فردوس عاشق اعوان کے ساتھ خصوصی پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا. ان کا کہنا تھا کہ آصف زرداری کے پاس 2016 میں 246 سیکیورٹی گاڑیاں تھیں.
مراد سعید نے کہا کہ آصف زرداری کے پاس2017 میں 286، 2018 میں 156 سیکیورٹی گاڑیاں تھیں، 556 پولیس اہل کار تعینات تھے. صاف پانی کے مسئلے سب سے زیادہ سندھ اور پھرپنجاب میں ہیں، سب سےزیادہ غربت سندھ میں ہے.
انھوں نے کہا کہ آصف زرداری صدر نہیں تھے، پھربھی دو کیمپ آفس رکھےہوئے تھے، 2016 میں اینٹ سے اینٹ بجانے کے چکرمیں زرداری بھاگ گئے تھے.
وفاقی وزیر نے کہا کہ 2015 میں نوازشریف کا ایک دن کا خرچہ 4 لاکھ 65 ہزار ڈالر تھا، 2016 میں نوازشریف علاج کے لئے باہرگئے، تو 3 لاکھ 27 ہزار پاؤنڈ خرچ کیے، جاتی امراکے سیکیورٹی کیمروں پر6 کروڑ 66 ہزار خرچ کیے گئے، نوازشریف کی سیکیورٹی پر 431 کروڑ اور43 لاکھ خرچ کیا گیا.
عمران خان کے گھر کی سڑک اپنے پیسوں سے بنی ہے، وہ وزیراعظم ہاؤس میں نہیں رہے، وہ بنی گالہ میں رہتے ہیں اوراپنا خرچہ خود اٹھاتے ہیں، جب کہ نوازشریف کےگھر کی فینسنگ کے لئے 24 کروڑ روپے خرچ کیے گئے. 431 کروڑ 83 لاکھ نااہل ہونے کے بعد نوازشریف پرخرچ ہوئے۔مراد سعید نے بتایا کہ 872 کروڑ 69 لاکھ 59 ہزار شہباز شریف نے خرچے کیے. ان کے بھی 5 کیمپ آفسز تھے، چھوٹے میاں نے بڑے میاں کا خرچہ سنبھالا، بڑے میاں نے چھوٹے بھائی کے لئے ہیلی کاپٹر لیا، شہبا زشریف نےہیلی کاپٹر کا 526 مرتبہ ملک کے اندرہی استعمال کیا، ان لوگوں نے ملک کولوٹااورآج ان پیسوں کےتحفظ کی بات ہورہی ہے.

July 14, 2019

لاہور سمیت پنجاب کے مختلف علاقوں میں بارش سے موسم خوشگوار

لاہور جدت ویب ڈیسک : پنجاب کے مختلف شہروں میں موسلا دھار بارش نے موسم خوشگوار اور ہفتہ وار چھٹی کا لطف دوبالا کردیا ہے۔ لاہور کے علاوہ مریدکے، شیخوپورہ، فیصل آباد،ساہیوال، خوشاب، ننکانہ صاحب، سانگلہ ہل، پنڈدادن خان اور پھول نگر سمیت دیگر علاقوں میں بھی بارش کا سلسلہ وقفے وقفے سے جاری ہے۔ بارش نے ہفتہ وار چھٹی کا لطف دوبالا کردیا ہے۔ عوام کی بڑی تعداد نے تفریحی مقامات کا رخ کرلیا ہے جب کہ موسم کی مناسبت سے روایتی کھانوں کی دکانوں پر لوگوں کا رش بڑھ گیا ہے۔بارش سے جہاں موسم خوشگوار ہوگیا ہے وہیں اس کے باعث نشیبی علاقے زیر آب آگئے ہیں، سڑکیں تالاب کا منظر پیش کررہی ہیں جب کہ بجلی کا نظام بھی شدید متاثر ہوا ہے۔ محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ پنجاب کے مختلف علاقوں میں بارشوں کا سلسلہ آئندہ چند روز تک جاری رہے گا۔ حالیہ تیز بارشوں سے ہزارہ، راولپنڈی، ڈی جی خان،کشمیر کے مقامی ندی نالوں میں طغیانی جب کہ ہزارہ اور کشمیر میں لینڈ سلائیڈنگ کا بھی خدشہ ہے۔

July 14, 2019

کرتارپور مذاکرات: منصوبہ بروقت مکمل کرنے کیلئے پرعزم ہیں، ڈاکٹر فیصل

لاہور جدت ویب ڈیسک : پاکستان اور بھارت کے درمیان کرتارپور راہداری منصوبے پر مذاکرات میں اہم امور زیرغور آئے، بھارت سے آنے والے سکھوں کیلئے کرنسی کی مقدار، رجسٹریشن اور ویزوں کی معیاد پر بات چیت ہوئی۔ منصوبے کے افتتاح کی تقریب کیلئے تاریخ کے تعین کے معاملے پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔کرتاپور راہداری منصوبے پر پاکستان اور بھارت میں مذاکرات کا دوسرا راؤنڈ واہگہ بارڈ پر ہوا، بارہ رکنی پاکستانی وفد کی قیادت ترجمان ڈاکٹر فیصل نے کی۔ بھارت کی جانب سے جوائنٹ سیکریٹری داخلہ ایس سی ایل داس آٹھ رکنی وفد کے ہمراہ شریک ہوئے۔دونوں ممالک کے وفود میں راہداری منصوبے سے منسلک مختلف امور پربات چیت ہوئی، بھارت سے آنے والے سکھوں کی رجسٹریشن، ویزے کے طریقہ کار اور معیاد پر بات ہوئی۔ مذہبی رسومات کیلئے آنے والے سکھ یاتریوں کیلئے کرنسی کی مقدار پر بھی تبادلہ خیال ہوا۔راہداری کے افتتاح کی تقریب کیلئے تاریخ کے تعین کا معاملہ بھی زیر غور آیا، منصوبے کی تعمیر کیلئے پاکستان کی جانب سے سڑک کی تعمیر اوردریا راوی پر پل کا کام بھی کافی حد تک مکمل ہو گیا ہے۔

July 14, 2019

حکومت کی جانب سے جج ارشد ملک کی حمایت پر فواد چوہدری کو تحفظات

جدہ جدت ویب ڈیسک :وفاقی حکومت کی جانب سے احتساب عدالت کے جج ارشد ملک کی حمایت پر وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے تحفظات کا اظہار کیا ہے۔جدہ میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ جب معاملہ عدالتوں اور ن لیگ کے درمیان ہے تو حکومت کیوں جج ارشد ملک کے بیان کی حمایت میں پریس کانفرنس کر رہی ہے۔فواد چوہدری نے مزید کہا کہ وزرائ کو ان معاملات پر نہیں بولنا چاہیے، یہ غلط ہے۔مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے چند روز قبل پریس کانفرنس کے دوران احتساب عدالت کے جج ارشد ملک کی ایک مبینہ ویڈیو دکھائی تھی جس میں وہ ن لیگ کے ایک کارکن سے ملاقات کے دوران اس بات کا اعتراف کر رہے ہیں کہ نواز شریف کے خلاف العزیزیہ ریفرنس کا فیصلہ انہوں نے دباؤ میں آ کر دیا۔مریم نواز کے الزامات کے اگلے ہی روز جج ارشد ملک نے ایک پریس ریلیز کے ذریعے مریم نواز کے الزامات کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ ن لیگ کی نائب صدر کے الزامات جھوٹ اور مفروضے پر مبنی ہیں۔پاکستان پیپلز پارٹی اور جماعت اسلامی کی جانب سے جج کی ویڈیو کے معاملے پر جوڈیشل کمیشن بنانے کا مطالبہ کیا گیا تھا جب کہ حکومت کی جانب سے کہا گیا تھا کہ اس ویڈیو کا فارنزک آڈٹ کرا کے دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی کیا جائے گا۔بعد ازاں احتساب عدالت کے جج ارشد ملک کی جانب سے ایک بیان حلفی بھی جاری کیا گیا جس میں کہا گیا کہ ن لیگ نے انہیں نواز شریف کے خلاف فیصلہ نہ کرنے کے لیے 50 کروڑ روپے کی پیش کش جسے انہوں نے مسترد کر دیا۔ویڈیو کا معاملہ سامنے آنے کے بعد جج ارشد ملک کی پریس ریلیز اور ان کے بیان حلفی کے بعد اسلام آباد ہائیکورٹ نے وزارت قانون کو خط لکھ کر جج ارشد ملک کی خدمات واپس ان کے پرانے ادارے لاہور ہائیکورٹ کو واپس کرنے کی تجویز دی جسے وزارت قانون نے تسلیم کرتے ہوئے ارشد ملک کی خدمات لاہور ہائیکورٹ کے سپرد کر دیں۔سپریم کورٹ نے بھی معاملے کا نوٹس لیتے ہوئے 16 جولائی کو ارشد ملک کی ویڈیو ٹیپ سے متعلق کیس 16 جولائی کو سماعت کے لیے مقرر کر دیا ہے۔ چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں تین رکنی بینچ معاملے کی سماعت کرے گا۔پاکستانی کمیونٹی سے خطاب میں فواد چوہدری نے سابق حکومتوں کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ سابقہ حکومتوں نے جو 10 سال میں قرض لیا وہ لگا کہاں؟انہوں نے کہا کہ دوست ممالک سعودی عرب اور چین کے تعاون سے پاکستان کو مشکلات سے نکال رہے ہیں۔وفاقی وزیر نے کہا کہ حکومت انڈسٹری قائم کرنے کی کوشش کر رہی ہے تاکہ نوجوانوں کو روزگار ملے۔فواد چوہدری نے کہا کہ سعودی عرب میں پاکستانی قیدیوں کی رہائی سے متعلق قوم بہت جلد خوشخبری سنے گی۔