June 25, 2019

ٹرمپ نے کانگریس کے انکار پر ایران پر حملے کا حکم واپس لیا امریکی ذرائع ابلاغ

جدت ویب ڈیسک : امریکی صدر ٹرمپ نے ایران کے خلاف فضائی حملہ اور امریکہ میں مقیم غیر قانونی تارکین وطن کی ڈیپوٹیشن کے احکامات واپس اس لئے واپس لئے کیونکہ امریکی کانگریس کے علاوہ کئی ریاستوں نے انکے احکامات ماننے سے انکار کر دیا تھا ۔فیصلے سے یہ خدشہ پیدا ہو گیا تھا کہ اگر یہ روش چل پڑی تو پھر ٹرمپ انتظامیہ کی رٹ کو چیلنج کرنے سے وائٹ ہاؤس کی ساکھ بُری طرح مجروح ہو گی۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ صدر کے دونوں احکامات سے ظاہر ہوتا ہے کہ یہ فیصلے عجلت میں کئے گئے کیونکہ اس سے امریکی مفادات اور امیج کو نقصان پہنچ سکتا تھا سعودی عرب اور اسرائیل مسلسل اپنا دباؤ بڑھا رہے ہیں کہ ایران کے ساتھ مذاکرات کرنے کی بجائے اس پر حملہ کر دیا جائے لیکن پینٹاگون کے بعض اعلٰی حکام اس کے حق میں نہیں ۔
اگر امریکی فضائیہ ایران کے بعض ٹھکانوں کو ٹارگٹ کرتی تو اس سے افغان مصالحتی عمل متاثر ہو سکتا تھا ۔امریکی اتحادی ممالک نے ایک بار پھر صدر ٹرمپ کو تحمل اور ” میں نہ مانوں ” پالیسی کو ترک کرنے کا مشورہ دیا ہے ۔
دوسری طرف نیویارک اور شکاگو سمیت کئی ریاستوں نے صدر ٹرمپ پر واضح کر دیا ہے کہ اگر امیگریشن حکام نے غیر قانونی افراد کے خلاف کریک ڈاؤن شروع کیا تو وہ اسکی نہ صرف مخالفت کرینگے بلکہ ان ریاستوں کی پولیس امیگریشن حکام کے ساتھ کسی قسم کا تعاون نہیں کریگی ۔امریکی ذرائع ابلاغ نے اس یوٹرن کو صدر ٹرمپ کی ناکامی قرار دیا ہے ۔

June 25, 2019

خامنہ ای کے بعد جواد ظریف بھی امریکی پابندیوں کی زد میں آ گئے،امریکا

واشنگٹن جدت ویب ڈیسک :امریکی وزیرخزانہ سٹیون منوچن نے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے ایران پر پابندیوں کے نئے ایگزیکٹو آرڈر جاری کرنے کے بعد کہا ہے کہ رواں ہفتے ایرانی وزیرخارجہ جواد ظریف پربھی امریکی پابندیاں عاید کی جائیں گی۔امریکی فوجی ڈرون مار گرائے جانے کا واقعہ ایران کی ایک دانستہ کارروائی اور سوچا سمجھا منصوبہ تھا۔عرب ٹی وی کے مطابق امریکی وزیرخزانہ نے کہا کہ ایرانی وزیرخارجہ جواد ظریف پر پابندیاں انٹیلی جنس معلومات کی بنیاد پر کی گئی ہیں تاہم انہوں نے انٹیلی جنس کے ذریعے حاصل ہونے والی معلومات کے بارے میں مزید کوئی بات نہیں کی۔سٹیون منوچن کا کہنا تھا کہ ایرانی وزیرخارجہ پر عاید کی جانے والی بعض پابندیاں تیاری کی مرحلے میں ہیں اور بعض ایران کی حالیہ سرگرمیوںپرعاید کی جائیں گی۔قبل ازیں امریکی وزارخزانہ کی طرف سے جاری بیان میں کہا تھا کہ امریکا نے ایرانی سپاہ پاسداران انقلاب کے آٹھ سینئر عہدہ داروں پر امریکا نے پابندیاں عاید کرنے کا اعلان کیا تھا۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایرانی سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای پر پابندیوں کے نفاذ کے لیے ایگزیکٹو آرڈر جاری کیا ہے۔انہوں سٹیون منوچن ایران پر دہشت گردی کی پشت پناہی ختم کرنے کا مطالبہ کیا اور کہا کہ تہران پر نئی اقتصادی پابندیاں گذشتہ جمعرات کو امریکی ڈرون طیارہ مارگراے جانے کا رد عمل ہیں۔

June 24, 2019

بھارتی فورسز کی طرف سے پلوامہ میں پرامن مظاہرین پرطاقت کا وحشیانہ استعمال ، متعدد زخمی

سرےنگر جدت ویب ڈیسک :مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں نے پلوامہ قصبے میں پرامن مظاہرین پر پیلٹ گن اورآنسو گیس سمیت طاقت کا وحشیانہ استعمال کیا ہے۔ کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق بھارتی فورسز نے قصبے میں پولیس سٹیشن کے نزدیک مظاہرین پر پیلٹ فائر کئے اور آنسو گیس کے گولے داغے جس کے نتیجے میں متعدد افراد زخمی ہوگئے۔ بھارتی فوجیوں نے ضلع پلوامہ کے علاقے تملہ ہال میں بھی محاصرے اورتلاشی کی کارروائی شروع کردی۔ فوجیوں نے علاقے کے تمام داخلی اورخارجی راستوں کو بند کردیااور گھر گھر تلاشی شروع کردی۔ دریں اثنائ گزشتہ روزبھارتی فوجیوں کے ہاتھوں چارنوجوانوں کی شہادت پر پیر کے روز پلوامہ اور شوپیان قصبوں میں مکمل ہڑتال کی گئی۔ قصبوں میں تمام دکانیں اور کاروباری ادارے بند رہے جبکہ سڑکوں پرگاڑیوں کی آمدورفت معطل رہی۔ سینکڑوں لوگوں نے شہیدنوجوانوں کے گھر جاکر سوگوار خاندانوں سے اظہار یکجہتی کیا۔

June 23, 2019

ٹرمپ کی منظوری کے بعد امریکی ہیکرزکے ایرانی میزائل سسٹم پرسائبرحملے

واشنگٹن جدت ویب ڈیسک :امریکی اخبارنے دعویٰکیا ہے کہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ ایران پر بمباری کے فیصلے سے تو پیچھے ہٹ گئے تھے مگر انہوں نے ایران کے میزائل کمپیوٹر سسٹم پر سائبرحملے کی منظوری دے دی ہے۔امریکی اخبارکی رپورٹ کے مطابق صدر ٹرمپ نے فوجی ڈرون مار گرائے جانے کے بعد ایران کے میزائل پروگرام کے کمپیوٹرسسٹم کو نشانہ بنانے کی اجازت دی جس کے بعد ایرانی کمپیوٹرسسٹم پر سائبر حملہ کیا گیا۔اخبار نے باخبر ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ ایرانی میزائل سسٹم پر امریکی ہیکروںنے جمعرات کی رات حملہ کیا۔ یہ ہیکرز کئی مہینوں نہیں بلکہ کئی ہفتوں سے تیاری میںمصروف تھے۔ یہ اپنی نوعیت کا پہلا حملہ تھا۔ذرائع کا کہنا تھا کہ وزارت دفاع پینٹاگان نے خلیج عْمان میں دو تیل بردار جہازوں پرحملوں کے بعد ایرانی میزائل لانچنگ سسٹم پر حملے کی تجویز پیش کی تھی۔ذرائع کا مزید کہنا تھا کہ ایرانی پاسداران انقلاب پرحملے میں امریکی سینٹرل کمانڈ کی رائے شامل تھی، تاہم امریکی اخبار کے مطابق یہ کارروائی انتہائی حساس نوعیت کی تھی جس کی مزید تفصیل جاری نہیں کی گئی۔اخباری رپورٹ پر وائیٹ ہائوس کی طرف سے کوئی رد عمل ظاہر نہیں کیا گیا۔ امریکی سائبر کمانڈ کے عہدیدار بھی خاموش ہیں۔ پینٹا گان کی ترجمان الیسا سمیتھ کا کہنا تھاکہ سائبرکارروائیوں، انٹیلی جنس اورپلاننگ سے متعلق اقدامات کو پبلک میں زیربحث نہیں لایا جاتا۔دو امریکی عہدیداروں نے کہا کہ ایران کے کمپیوٹرسسٹم پر سائبرحملے امریکی قومی سلامتی کے مشیر جون بولٹن کی تجویز پرعمل درآمد کرتے ہوئے کیے گئے۔اْنہوں نے ایران کے سائبر سسٹم پر تابڑ توڑ حملوں کی تجویز پیش کی تھی۔

June 23, 2019

امریکا نے آسیہ بی بی کی رہائی کی سال کی اچھی خبر قراردےدےا

واشنگٹن جدت ویب ڈیسک : امریکی سیکریٹری آف اسٹیٹ مائیک پومپیو نے مسیحی خاتون آسیہ بی بی کی رہائی کو سال 2018 کی سب ’اچھی خبر‘ قرار دے دیا۔ مےڈےاپورٹ کے مطابق مائیک پومپیو نے اپنے محکمہ کی مذہبی آزادی سے متعلق سالانہ رپورٹ کے آغاز میں کہا کہ’2018 میں دو اہم پیش رفت ہوئی کہ آسیہ بی بی کی رہائی اور ازبکستان میں مذہبی رہنماؤں کے خلاف مقدمہ بازی میں کمی‘۔ ؔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ’سپریم کورٹ آف پاکستان نے آسیہ بی بی کو توہین مذہب کے الزام میں سزائے موت سے بری کیا تاہم وہ تقریباً 10 برس جیل میں گزار چکی تھی‘۔علاوہ ازیں مائیک پومپیو کا کہنا تھا کہ ’ادھر ازبکستان میں ابھی بہت کچھ ہونا باقی ہے لیکن گزشتہ 13 برسوں کے بعد اب ازبکستان کنٹری آف پارٹیکیولر کنسرن âسی پی سیá کا حصہ نہیں رہا‘۔خیال رہے کہ ازبکستان نے زیر حراست 1500 مذہبی قیدیوں کو رہا کردیا اور مذہبی وابستگی کے باعث بلیک لسٹ 16 سو افراد کوسفر کی اجازت دے دی۔گزشتہ برس دسمبر میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ انتظامیہ نے پاکستان کو سی پی سی کی فہرست میں شامل کرلیا تھا۔ سی پی سی فہرست میں وہ مملک شامل ہوتے ہیں جہاں زیادہ تر توہین مذہب کا قانون فعال ہوتے ہیں۔مائیک پومپیو نے بتایا کہ پاکستان میں توہین مذہب مقدمات میں 40 سے زائد عمر قید کی سزا کاٹ رہے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ ’ہم ان کی رہائی کا مطالبہ کرتے ہیں اور حکومت مذہبی آزاد سے متعلق خدشات یا امور کے مسائل کو حل کرنےکے لیے ایک سفیر مقرر کرے‘۔ انہوں نے بیجنگ پر 10 لاکھ مسلمانوں کو حراستی کیمپ میں رکھنے کا الزام لگایا۔ سیکریٹری آف اسٹیٹ نے بتایا کہ پیش کردہ رپورٹم میں ایغور مسلمانوں کے ساتھ سنکیانگ میں ہونے والی مذہبی سلوک کے بارے میں مکمل ایک باب ہے۔مائیک پومپیو نے برما میں مذہبی بدسلوکی سے متعلق بتایا کہ روہنگیا مسلمانوں کو تاحال برما فوج کے ہاتھوں تشدد کا سامنا ہے۔خیال رہے کہ رپورٹ میں بتایا گیا کہ سعودی عرب میں تقریباً 1 ہزار افراد کو سوشل میڈیا پر تنقید یا احتجاج میں شرکت کی بنیاد پر گرفتار کیا گیا۔

June 22, 2019

امریکا ایران تنازع،ہرمز کیلئے ’عالمی ایئرلائنز‘ کی پروازیں معطل

لندن جدت ویب ڈیسک :ایران کی جانب سے سرحدی حدود کی خلاف ورزی پر امریکی جاسوس ڈرون گرانے کے بعد واشنگٹن نے دنیا کی معروف ایئرلائنز بریٹش ایئرویز، قنٹس ایئرلائن سمیت سنگاپور ایئرلائن کو آبنائے ہرمز کےلئے پروازوں سے روک دیا۔غیر ملکی میڈیاکے مطابق امریکا کی فیڈرل ایویشن ایڈمنسٹریشن (ایف اے اے) نے نوٹس ٹو ایئر مین (این او ٹیم اے ایم) میں تمام امریکی رجسٹرڈ ایئرلائن کو خلیج عمان اور خلیج فارس کے فضائی راستوں سے پروازیں معطل کرنے کی ہدایت جاری کردی۔خیال رہے کہ آبنائے ہرمز، خلیج اومان اور خلیج فارس کے درمیان واقع ایک اہم آبنائے ہے ،اس کے شمالی ساحلوں پر ایران اور جنوبی ساحلوں پر متحدہ عرب امارات اور اومان واقع ہیں،یہ آبنائے کم از کم 21 میل چوڑی ہے۔امریکا کی جانب سے مذکورہ اقدام کے باعث لاکھوں مسافر متاثر ہوں گے۔ایف اے اے کے اعلامیہ میں کہا گیا کہ متاثرہ خطے میں عسکری سرگرمیوں اور سیاسی تناو¿ کے باعث کمرشل فلائٹس کو خطرہ لاحق ہے۔اعلامیے کے مطابق (امریکی) ڈرون پر میزائل حملے کے بعد تہران اور واشنگٹن کے مابین لفظی جنگ عروج پر ہے۔ایف اے اے کے نوٹس واضح کیا گیا کہ امریکا سے رجسٹرڈ ایئرلائن اور امریکی ایئرلائنز پر آبنائے ہرمز کا فضائی راستہ اختیار کرنے پر پابندی ہوگی۔خیال رہے کہ یورپین اور ایشین فضائی کمپنیاں پابندی کے نوٹس سے آزاد ہیں۔ایف اے اے کے ترجمان نے کہا کہ ہماری سیفٹی اور سیکیورٹی ٹیمیں دنیا بھر میں فضائی اداروں کے حکام بشمول ایف اے اے سے مسلسل رابطے میں ہیں تاکہ فضائی راستوں کے رسک کا جائزہ لے سکیں‘۔واضح رہے کہ جرمنی اور ڈش ایئرلائنز آبنائے ہرمز کے بجائے دوسرا فضائی راستہ اختیار نہیں کررہی ہیں۔علاوہ ازیں ایئرفرانس نے کہا کہ وہ مزید جنوبی خطے کی طرف سے اپنی پروازیں جاری رکھے ہوئے ہے۔