August 1, 2020

اگر آپ قربانی کے گوشت کو زیادہ عرصے محفوظ بنانا اور استعمال کرنا چاہتے ہیں تو ایسا کریں۔۔۔۔

کراچی ویب ڈیسک ::سعودی عرب اور خلیجی ممالک سمیت دنیا کے مختلف ممالک میں آج عیدالضحیٰ مذہبی جوش و خروش سے منائی گئی جبکہ کل پاکستان اور  دیگر ایشیائی ممالک میں بھی فرزندان توحید سنتِ ابراہیمی ادا کرتے ہوئے اپنے جانور اللہ کی راہ میں قربان کریں گے۔

قربانی کی استطاعت رکھنے والے مسلمان نمازِ عید کے بعد جانور قربان کریں گے اور شرعی حکم کے مطابق اس۔ کے گوشت کو غرباء، مساکین و دیگر مصارف میں تقسیم بھی کریں گے  تاہم یہ سب کرنے کے باوجود بھی گھروں میں گوشت کی بڑی تعداد اکھٹا ہوجائے گا۔

گوشت کو محفوظ بنانے کے لیے مختلف گھریلو ٹوٹکے استعمال کیے جاتے ہیں جبکہ جدید دور میں اسے محفوظ بنانے کے لیے فریج کو نہایت اہمیت حاصل ہے یہی وجہ ہے کہ عیدقرباں سے قبل فریج یا ڈیپ فریزیر کی خرید و فروخت میں اضافہ بھی ہوجاتا ہے۔

اگر آپ قربانی کے گوشت کو زیادہ عرصے محفوظ بنانا اور استعمال کرنا چاہتے ہیں تو درج طریقے آزما کر گوشت کو 2 ماہ تک کے لیے محفوظ بنا سکتے ہیں۔

گوشت محفوظ بنانے کے آزمودہ طریقے

1.قربانی کا گوشت فریز کرنے سے قبل اسے دھونے سے گریز کریں کیونکہ گوشت پر پانی لگنے کے بعد اسے رکھا جائے تو اس میں بیکٹریا پیدا ہوجاتا ہے جو گوشت کو خراب کردیتا ہے۔

2.گوشت کو تھوڑی دیر چولھے پر رکھ کر بھونیں اور پھر اسے المونیم فوائل میں لپیٹ کر رکھ دیں جس کے بعد گوشت دو ماہ تک بالکل محفوظ رہے گا۔

3. ایسے لوگ جن کے پاس فریج موجود نہیں وہ گوشت کو بوٹیوں کی صورت میں کر کے ایک دھاگے میں پرو ئیں اور  اُسے دھوپ و ہوا میں لٹکا کر سُکھا لیں ، بعد ازاں جب ضرورت پڑے اسے استعمال کریں۔

July 29, 2020

بڑی عید  پر لبنانی کباب بنائیں وہ بھی گھر پر, مزیدار لبنانی کباب بنانے کی ترکیب

کراچی ۔ویب ڈیسک  ::بکرا عید ،بڑی عید  پر لبنانی کباب بنائیں وہ بھی گھر پر  مزیدار لبنانی کباب بنانے کی ترکیب بتائی جو نہایت آسان ہے۔ترکی اور لبنان کے کھانے اپنے منفرد ذائقوں کی وجہ سے دنیا بھر میں مشہور ہیں، یہاں پائی جانے والی جڑی بوٹیاں اور پودے جنہیں مصالحوں کے طور پر کھانوں میں استعمال کیا جاتا ہے، کھانے کو ایک منفرد ذائقہ دیتی ہیں۔

اس کے لیے آپ کو مندرجہ ذیل اجزا کی ضرورت ہوگی۔

چکن کا قیمہ، باریک پسا ہوا: 1 کلو

دہی: 1 پیالی

نمک: 1 ایک چائے کا چمچ یا حسب ذائقہ

ہری مرچ، پسی ہوئی: 1 ایک چائے کا چمچ

لہسن ادرک کا پیسٹ: 1 چائے کا چمچ

کالی مرچ پاؤڈر: 1 چائے کا چمچ

سفید مرچ پسی ہوئی: 1 چائے کا چمچ

اوریگانو کے پتے، خشک کیے ہوئے: 1 چائے کا چمچ

سمک پاؤڈر: 1 چائے کا چمچ

گھی: حسب ضرورت

ترکیب

چکن کے قیمے میں تمام مصالحے شامل کریں اور انہیں اچھی طرح میری نیٹ کرلیں۔

میری نیٹ کرنے کے بعد سیخوں میں لگا کر اچھی طرح پکا لیں۔

سرخ ہونے کے بعد مختلف چٹنیوں اور سلاد کے ساتھ گرما گرم مزیدار لبنانی کباب پیش کریں۔

 

Chakori kabab recipe lebanese

July 28, 2020

آئی ہیڈ آ ڈریم: دعا نے کم عمری میں کتاب لکھ کر بڑے بڑوں کو حیران کردیا۔

کراچی: بچپن، بچپنے اور شرارتوں سے آراستہ ہے تاہم کبھی کبھار بچوں کی عقل و ذہانت اور سنجیدگی بڑوں کو بھی مات کرجاتی ہے، ایسے ہی 14 سال کی بچی دعا نے کم عمری میں کتاب لکھ کر بڑے بڑوں کو حیران کردیا۔
دعا صدیقی نے 13 سال کی عمر میں انگریزی میں نظمیں لکھنا شروع کیں اور صرف ایک سال کے اندر 100 نظمیں لکھ ڈالیں جو اب کتاب کی صوت میں موجود ہیں۔ ان کی کتاب کا نام آئی ہیڈ آ ڈریم ہے۔
دعا نے بتایا کہ وہ ہر چیز کا مشاہدہ کرتی ہیں اور بعد ازاں اس پر اپنے خیالات کا اظہار کرنا چاہتی ہیں جو انہوں نے نظموں کی صورت میں کیا۔
وہ کہتی ہیں کہ انہیں بچپن سے مشہور رائٹر بننے کا شوق تھا۔ وہ اب تک ماحولیاتی مسائل، خواتین کی خود مختاری اور ڈپریشن جیسے موضوعات کو اپنی نظموں کا حصہ بنا چکی ہوں۔
دعا کا کہنا ہے کہ ان کے خیال میں ہر شخص کو اپنی عمر سے آگے کی چیز سوچنی چاہیئے اور وہ خدا کی شکر گزار ہیں کہ اس نے انہیں اس صلاحیت سے نوازا۔دعا کی کتاب امیزون پر دستیاب ہے جبکہ اسے آن لائن بھی پڑھا جاسکتا ہے۔
I had a dream (Poetry Book 1) eBook: Siddiqui, Dua: Amazon.in: Kindle Store
Dua Siddiqui (Author of I had a dream)
July 28, 2020

پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج ہیپاٹائٹس سے بچاؤ اور اس کے خلاف آگہی کا عالمی دن منایا جا رہا ہے

ویب ڈیسک ::پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج ہیپاٹائٹس سے بچاؤ اور اس کے خلاف آگہی کا عالمی دن منایا جا رہا ہے۔ محکمہ صحت کے مطابق ہر سال 2 لاکھ 40 ہزار افراد ہیپاٹائٹس بی اور سی کا شکار ہو رہے ہیں۔  عالمی ادارہ صحت کے مطابق دنیا بھر میں لوگوں کو موت کے منہ میں پہنچانے والی، ٹی بی کے بعد ہیپاٹائٹس دوسری بڑی بیماری ہے۔ دنیا بھر میں 32 کروڑ سے زائد افراد اس مرض کا شکار ہیں۔ اقوام متحدہ کا کہا ہے کہ دنیا بھر میں روزانہ 4 ہزار کے قریب افراد اس مرض کے باعث موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں جبکہ سالانہ یہ شرح 14 لاکھ ہے۔ عالمی ادارہ صحت کی ایک رپورٹ کے مطابق پاکستان ہیپاٹائٹس کے مریضوں کا شکار دوسرا بڑا ملک ہے، صرف پاکستان میں ہر سال ڈیڑھ لاکھ سے زائد افراد ہیپاٹائٹس کی وجہ سے جان سے ہاتھ دھو بیٹھتے ہیں۔ پاکستان میں اس مرض کی صرف 2 اقسام بی اور سی کے ہی ڈیڑھ کروڑ مریض موجود ہیں۔ رواں برس کے آغاز میں محکمہ صحت نے پاکستان میں ہیپاٹائٹس کے مریضوں کی تعداد بڑھنے کا انکشاف کیا تھا، اس حوالے سے محکمہ صحت نے عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) سے مدد طلب کی تھی۔ محکمہ صحت کی جانب سے مراسلے میں کہا گیا تھا کہ ہر سال 2 لاکھ 40 ہزار نئے مریض ہیپاٹائٹس بی اور سی کا شکار ہو رہے ہیں، پنجاب میں 60 سے 70 فیصد افراد مرض میں مبتلا ہو رہے ہیں۔ مراسلے میں کہا گیا تھا دسمبر 2019 کے آخر تک 10 لاکھ افراد کا چیک اپ کیا گیا تھا، چیک اپ کے دوران 30ہزار افراد ہیپاٹائٹس بی اور سی میں مبتلا پائے گئے تھے۔

طبی ماہرین کے مطابق ہیپاٹائٹس کے مرض سے بچنے کے لیے احتیاط ہی بہترین طریقہ ہے جس سے آپ خود کو اس موذی مرض سے بچا سکتے ہیں، استعمال شدہ سرنجوں کا دوبارہ استعمال، گندا پانی، غیر معیاری اور ناقص غذا ہیپاٹائٹس کا سبب بننے والی بڑی وجوہات ہیں۔ماہرین کا کہنا ہے کہ ملک میں حکومت کی جانب سے وفاقی اور صوبائی سطح پر ہیپاٹائٹس کی روک تھام اور علاج کے لیے خصوصی پروگرام جاری ہیں تاہم ان کوششوں کو مزید تیز اور بہتر کرنے کی ضرورت ہے۔

World Hepatitis Day 2020: Theme, Dates, History and Significance ...

July 23, 2020

کرونا وائرس مزید طاقت ور،تحقیق میں انکشاف،تیزی سے پھیلاؤ کی وجہ مہلک وائرس میں نئی قسم کی تغیراتی تبدیلی ہے۔

برمنگھم: ویب ڈیسک :: برطانوی سائنس دان نے خبردار کیا ہے کہ کروناوائرس میں ہونے والی نئی تغیراتی تبدیلی سے مہلک وائرس دنیا بھر میں تیزی سے پھیل رہا ہے۔
غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق یونیورسٹی آف برمنگھم کے پروفیسر ’نائیک لومن‘ نے متنبہ کیا ہے کہ دنیا بھر میں کرونا کے تیزی سے پھیلاؤ کی وجہ مہلک وائرس میں نئی قسم کی تغیراتی تبدیلی ہے۔
ان کا کہنا ہے کہ کرونا میں موجود ’D614G‘ نامی جز میں نئی تغیراتی تبدیل آرہی ہے، یہ صورت حال زیادہ سے زیادہ مہلک وائرس کے پھیلاؤ میں مدد دے رہی ہے، جس سے برطانیہ سب سے زیادہ متاثر ہے۔
سائنس دان نے کہا کہ وبا میں نئی تبدیلی کرونا ویکسین کی تیاری میں کوئی رکاوٹ پیدا نہیں کرے گی، کیوں کہ عمومی طور پر مریضوں میں کرونا وائرس اپنی یہ تبدیلی چھوڑتا ہے۔
مائیک لومن کا مزید کہنا تھا کہ کرونا وائرس جب ووہان سے شروع ہوا تھا تو اس وقت وبا میں ’D‘ قسم کی تغیراتی تبدیلی دیکھی گئی تھی اور اب ’G‘ قسم کی تبدیلی دنیا بھر میں موجود ہے۔
خیال رہے کہ کرونا سے متاثر ہونے اور مرنے والے افراد کی تعداد میں یومیہ بنیادوں پر اضافہ دیکھنے میں آرہا ہے اور سب سے تشویشناک بات یہ ہے کہ ویکسین کے معاملے میں اب تک کوئی پیشرفت سامنے نہیں آسکی۔

July 23, 2020

خیبرپختونخوا کے سرکاری ہسپتالوں کی او پی ڈیز بند، لاکھوں مریض علاج سے محروم

پشاور: جدت ویب ڈیسک :کورونا وبا کے باعث خیبرپختونخوا کے سرکاری ہسپتالوں کی او پی ڈیز گزشتہ تین ماہ سے بند، 18 لاکھ کے قریب مریض علاج سے محروم ہیں۔ کورونا وبا کے دوران خیبر پختونخوا کے سرکاری ہسپتالوں کی او پی ڈیز کی بندش سے صوبے کے صرف تین بڑے ہسپتالوں میں 17 لاکھ 85 ہزار سے زائد مریض علاج سے محروم رہے۔ پشاور کے تین بڑے ہسپتالوں لیڈی ریڈنگ، حیات آباد میڈیکل کمپلیکس اور کے ٹی ایچ میں او پی ڈی کی بندش سے 25 ہزار کے قریب آپریشنز بھی نہ ہوسکے۔ شہریوں کا کہنا ہے کہ حکومت سرکاری ہسپتالوں کی او پی ڈی کھول کر مسائل سے چھٹکارا دلائے۔ لیڈی ریڈنگ ہسپتال میں یومیہ 5 ہزار مریضوں کی او پی ڈی ہوتی تھی، خیبر ٹیچنگ ہسپتال میں روزانہ چار ہزار اورحیات آباد میڈیکل کمپلیکس میں ساڑھے تین ہزار تک مریضوں کا علاج کیا جاتا تھا۔ ایل آر ایچ حکام کا کہنا ہے کہ عید الاضحی کے بعد او پی ڈیز کو کھولنے پرغور جاری ہے۔

July 21, 2020

خوشبو اور ذائقے سے بھر پور پھل گرما، کھانے کے بے شمار طبی فوائد

کراچی ویب ڈیسک ::کراچی میں گرمی بھی کمال کی پڑتی ہے ،گرم موسم میں ٹھنڈا ٹھنڈا گرما کھانے کا اپنا ہی مزا ہے۔خوشبو اور ذائقے سے بھر پور پھل گرما کھانے کے بے شمار طبی فوائد کیا کیا ہیں ۔گرما ایک خوش ذائقہ صحت بخش اور سردے سے قدرے شیریں پھل ہے اور متعدد امراض کا قدرتی علاج بھی ہے یہ کمزور اصحاب کے لئے ایک عمدہ قسم کی غذا ہے غذائیت کا قدرتی خزانہ ہے صالح خون پیدا کرتا ہے اور جسم موٹا کرتا ہے خوشبو اور ذائقے سے بھر پور پھل گرما کھانے کے بے شمار طبی فوائد حاصل ہوتے ہیں
ماہرین غذائیت کے مطابق گرمیوں کے لحاظ سے گرما ایک صحت بخش غذا ہے، گرما کے 100 گرام میں 34 کیلوریز، 0.2 گرام فیٹ، 16 ملی گرام سوڈیم ، 267 ملی گرام پوٹاشیم، 8 گرام کاربوہائیڈریٹس، 0.8 گرام پروٹین پائی جاتی ہے جبکہ 67 فیصد وٹامن اے، 61 فیصد وٹامن سی، 5 فیصد وٹامن بی 6 اور 3 فیصد میگنشیم پایا جاتا ہے

1:گرما 90 فیصد پانی پر مشتمل پھل ہے، اس کے استعمال سے گرمیوں میں ہائیڈریٹڈ رہنے میں مدد ملتی ہے، گرما منرلز اور وٹامنز حاصل کرنے کا بہترین ذریعہ ہے

2: گرما میں فیٹ اور کاربوہائیڈریٹس نہ ہونے کے برابر ہوتے ہیں اسی لیے یہ وزن میں کمی لانے کا سبب بنتا ہے، اگر آپ ڈائیٹ پلان کے ذریعے وزن کم کرنا چاہتے ہیں تو گرمیوں میں دوسری غذاؤں اور پھلوں کی بنسبت اس کا استعمال زیادہ سے زیادہ کریں

3:گرما میں پوٹاشیم کی بھاری مقدار پائے جانے کے سبب اس کے استعمال سے پٹھوں کو مضبوطی ملتی ہے، متاثرہ پٹھوں کو بننے میں مدد ملتی ہے اور بلڈ پریشر بھی متوازن رہتا ہے

4: گرما کے استعمال سے بلڈ شوگر لیول کنٹرول ہوتا ہے، اس کے استعمال سے ذیابطیس کے مریضوں میں شوگر لیول متوازن رہتا ہے

5:گرما میں وٹامن سی پائے جانے کے سبب اس کے استعمال سے قوت مدافعت مضبوط ہوتا ہے اور موسمی بیماریوں، وائرل، موسمی انفیکشن سے لڑنے میں مدد ملتی ہے

6: گرما ایک فرحت بخش غذا ہے، گرمیوں میں اس کے استعمال سے گرمی کا احساس کم ہوتا ہے پیٹ کی متعدد بیماریوں سمیت قبض کی شکایت دور ہوتی ہے

7: گرما میں ’ آکسیکن ‘ اجزا پائے جاتے ہیں جو گردوں میں پتھری بننے کے عمل کو روکتے ہیں گرما میں پانی کی وافر مقدار اور اس کے گودے کے سبب گردوں کی صفائی ہوتی ہے اور گردے کی کارکردگی میں مثبت تبدیلیاں آتی ہے
8: ماہرین غذائیت کے مطابق خواتین کی صحت کے لیے یہ پھل آئیڈیل ہے خصوصاً حاملہ خواتین کو اس پھل کا استعمال لازمی کرنا چاہیئے، گرما میں فولک ایسڈ پائے جانے کے نتیجے میں انسانی جسم میں موجود اضافی سوڈیم کو زائل ہونے میں مدد ملتی ہے
9: گرما میں فیٹ اور کاربوہائیڈریٹس بہت کم مقدار میں پائے جاتے ہیں، اس میں موجود فائبر سے کولیسٹرول لیول کو متوزان رہنے میں مدد ملتی ہے، گرما میں خون کو پتلا کرنے کی خصوصیات پائے جانے کے سبب دل کی صحت برقرار رہتی ہے
10: گرما کھانے کے سبب خون میں آکسیجن کی صحیح مقداد میں ترسیل ہوتی ہے، آکسیجن متوازن مقدار میں دماغ تک پہچتی ہے جس سے انسان خود کو ہلکا محسوس کرتا ہے اور ذہنی دباؤ اور اعصابی تناؤ میں آرام ملتا ہےماہرین غذائیت کے مطابق گرمیوں کے لحاظ سے گرما ایک صحت بخش غذا ہے

Cantaloupe (Garma) Health Benefits Facts and Information