May 23, 2019

پاکستان دیرپا امن واستحکام کے ارتقائی مراحل سے گزر رہا ہے ، آرمی چیف

جدت ویب ڈیسک ::آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا پاکستان دیرپا امن واستحکام کے ارتقائی مراحل سے گزر رہا ہے۔
آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کمانڈ اینڈ اسٹاف کالج کوئٹہ کا دورہ کیا۔ آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے اسٹاف کورس کے شرکا سے خطاب کیا جہاں آرمی چیف نے قومی سلامتی کے موضوع پر روشنی ڈالی۔آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ماضی کے تمام چیلنجز میں سرخرو ہوئے ہیں۔ پاکستان دیرپا امن واستحکام کے ارتقائی مراحل سے گزر رہا ہے۔
آرمی چیف کا کہنا تھا ہماری رفتار کم لیکن مثبت سمت میں گامزن ہیں۔ ہمیں مستقل مزاجی سے قومی مقاصد کے حصول کیلئے کاوشیں جاری رکھناہونگی۔
آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا انسداد دہشتگردی اور مشرقی سرحدی کشیدگی میں نوجوان افسران کی کاوشوں کا ادراک ہے۔ آرمی چیف نے نوجوان افسران کی پیشہ ورانہ صلاحیتوں کو بھی سراہا۔
آرمی چیف نے کہا نوجوان افسران قومی سلامتی کو درپیش چیلنجز سے نمٹنے کی صلاحیت کے حامل ہیں۔

May 23, 2019

نیب کامقصد صرف کیس بنانا اور پکڑدھکڑ نہیں، ملزم کو سزا دلوانا بھی ہے چیف جسٹس برہم

اسلام آباد :جدت ویب ڈیسک :: سپریم کورٹ نے ملزم عطا اللہ کی بریت کیخلاف نیب اپیل مسترد کردی ، چیف جسٹس نے ریمارکس میں کہا نیب کامقصد صرف کیس بنانا اور پکڑدھکڑ نہیں، بلکہ کیس ثابت کرنا ملزم کو سزا دلوانا بھی ہے، نیب کے اسی رویے کی وجہ سے لوگ ذہنی دباؤ کا شکار ہیں۔تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں ملزم کی بریت کیخلاف نیب اپیل کی سماعت چیف جسٹس آصف کھوسہ کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے کی، دوران سماعت چیف جسٹس نے ناقص تفتیش پر نیب حکام کوکھری کھری سُنا دیں۔
چیف جسٹس نے کہاکہ نیب کا مقصد صرف پکڑ دھکڑ نہیں ہے،نیب کو چاہیے جس پر کیس بنائے شواہد بھی ساتھ لگائے، انیس سال سے ملزم کو رگڑا لگایا جا رہا ہے، ان انیس سالوں کا ازالہ کیسے کرے گا؟ ملزم پر جس عہدے کی بنیاد پر کرپشن کا الزام اس عہدے کا ثبوت تک نہیں۔
جسٹس آصف کھوسہ کا کہناتھا نیب آخر کرتا کیا ہے؟ کیا نیب کا مقصد صرف کیس کو بنانا ہے؟ نیب کا مقصد کیس ثابت کرناملزم کو سزا دلوانا بھی ہے، نیب کے اسی رویے کی وجہ سے لوگ ذہنی دباؤ کا شکار ہیں۔
بعد ا زاں سپریم کورٹ نے ملزم عطا اللہ کی بریت کیخلاف نیب اپیل مسترد کردی۔

May 23, 2019

.بھارت مذاکرات کیلئے جو بھی راستہ اپنائے پاکستان تیار ہے، ترجمان دفتر خارجہ

اسلام آباد : جدت ویب ڈیسک :: ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر محمد فیصل نے کہا بھارت مذاکرات کیلئے جو بھی راستہ اپنائے پاکستان تیار ہے، کشمیریوں کی مرضی کے بغیر کشمیر میں کوئی تبدیلی نہیں آسکتی۔
تفصیلات کے مطابق ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر محمد فیصل نے ہفتہ وار بریفنگ دیتے ہوئے کہا مقبوضہ کشمیرمیں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کاسلسلہ جاری ہے، بھارتی افواج نے رواں ہفتے 14 کشمیریوں کو شہید کیا، پاکستان کو حریت رہنماؤں کو زیرحراست رکھنے پر تشویش ہے۔ترجمان کا کہنا تھا بھارت کالے قوانین سے بنیادی انسانی حقوق کوپامال کررہاہے، بھارت عالمی برادری کی آنکھوں میں دھول جھونکنابندکرے، بھارت کشمیریوں کوان کاحق خود ارادیت دے، لاپتہ افرادسےمتعلق رپورٹ نے بھارتی مظالم کا چہرہ بےنقاب کیا۔
بھارتی افواج نے رواں ہفتے 14 کشمیریوں کو شہید کیا
ڈاکٹر محمد فیصل نے کہا کشمیریوں کی مرضی کے بغیر کشمیر میں کوئی تبدیلی نہیں آسکتی، پاکستان بھارت کو ہر جگہ مذاکرات کیلئے کہہ چکا ہے، ہم ہر صورت میں مذاکرات کو ترجیح دیتے ہیں۔
،ترجمان دفترخارجہ کا کہنا تھا بھارت گفتگو کیلئے جو بھی راستہ اپنائے پاکستان تیار ہے، وزیر خارجہ بھارتی ہم منصب سے ملاقات پر جلد بیان دیں گے۔
ڈاکٹر محمد فیصل نے کہا ایرانی وزیرخارجہ جواد ظریف آج شام کو پاکستان آرہے ہیں، ملاقات میں دوطرفہ علاقائی اورعالمی امور تبادلہ خیال ہوگا۔
ترجمان کا کہنا تھا وزیرخارجہ27 مئی کوسعودی عرب جارہے ہیں، وزیراعظم کے دورے سے متعلق ابھی کچھ نہیں بتا سکتا، پاکستان مسائل بات چیت کے ذریعےحل کرنے کا خواہاں ہے، عالمی معاہدوں پر ہر صورت میں عمل ہونا چاہیے۔بنگلادیش سے ویزا کے اجرا سے متعلق انھوں نے کہا بنگلادیش نےپاکستانیوں کوویزوں کااجرامعطل کرنےکی تردیدکی ، پاکستان بنگلادیشی حکام کیساتھ رابطےمیں ہے، پاکستان تمام ممالک کیساتھ دوستانہ تعلقات چاہتاہے۔بھارتی انتخابات سے متعلق ترجمان دفترخارجہ کا کہنا تھا بھارتی انتخابات پرسرکاری نتائج کےبعدبیان جاری کیاجائے گا۔

May 23, 2019

کراچی میں دوسری مرتبہ 3 روز کیلئے ہیٹ ویو الرٹ جاری

جدت ویب ڈیسک ::صوبہ سندھ کے دارالحکومت اور ملک کے سب سے بڑے شہر کراچی میں موسمِ گرما کے آغاز کے بعد ایک ہی ماہ میں دوسری مرتبہ ہیٹ ویو کا انتباہ جاری کردیا گیا۔
محکمہ موسمیات کی جانب سے جاری بیان کے مطابق 25 مئی سے 27 مئی تک کراچی میں ہیٹ ویو جاری رہنے کا خدشہ ہے، جس دوران زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 39 سے 41 سینٹی گریڈ تک رہنے کا امکان ہے۔ہیٹ ویو سے متعلق جاری کیے گیے بیان کے مطابق اس دوران شہر میں دن کے اوقات میں شمال مغرب ہوائیں آنے کاسلسلہ جاری رہے گا اور ہوا میں نمی کا تناسب 40 سے 50 فیصد رہنے کا امکان ہے۔محکمہ موسمیات کی جانب سے حکام اور تمام اسٹیک ہولڈرز کو احتیاطی تدابیر کرنے کی ہدایات جاری کی گئی ہیں۔
احتیاطی تدابیر
طبی ماہرین کے مطابق ہیٹ ویو کے دوران غیر ضروری طور پر گھروں سے نہ نکلا جائے اور اگر باہر نکلنا ضروری ہو تو گیلا تولیہ اور چھتری ساتھ رکھیں، اس کے ساتھ پانی زیادہ پینے کا بھی مشورہ بھی دیا گیا ہے۔
طبی ماہرین نے طبیعت بحال رکھنے کے لیے 2 سے 3 گھنٹے بعد نہانے اور گرمی سے طبیعت بگڑنے کی صورت میں فوری طور پر ڈاکٹر سے رجوع کرنے کا مشورہ بھی دیا۔
ہیٹ ویو سے متاثر ہونے کی علامات
جسم میں پانی کی کمی
گرم و خشک موسم
گرم موسم میں سخت مشقت یا ورزش
دھوپ میں براہ راست بہت زیادہ گھومنا
گھر سے باہر کام یا آؤٹ ڈور ورکنگ
غشی طاری ہونا
جسم سے پسینے کا اخراج رک جانا
دل کی دھڑکن بہت زیادہ بڑھ جانا
جلد سرخ، گرم اور خشک ہوجانا
ہیٹ اسٹروک جان لیوا بھی ثابت ہوسکتا ہے تاہم اس کی علامات بھی ظاہر ہوتی ہیں جو کہ درج ذیل ہیں۔
جسمانی درجہ حرارت 104 فارن ہائیٹ ہوجانا۔
ایسے میں کیا کرنا چاہیے؟
سب سے پہلے تو ایمبولینس کو طلب کریں یا متاثرہ شخص کو خود ہسپتال لے جائیں (طبی امداد میں تاخیر جان لیوا ثابت ہوسکتی ہے)، ایمبولینس کے انتظار کے دوران مریض کو کسی سایہ دار جگہ پر منتقل کردیں۔
مریض کو فرش پر لٹا دیں اوراسکے پیر کسی اونچی چیز پر رکھ دیں (تاکہ دل کی جانب خون کا بہاؤ بڑھ جائے اور شاک کی روک تھام ہوسکے)۔
مریض کے کپڑے ٹائٹ ہوں تو ان کو ڈھیلا کردیں۔
مریض کے جسم پر ٹھنڈی پٹیاں رکھیں یا ٹھنڈے پانی کا اسپرے کریں۔
پیڈسٹل پنکھے کا رخ مریض کی جانب کردیں تاہم بجلی نہ ہو تو اخبار سے خود مریض کو ہوا دیں۔
اس سے ہٹ کر بھی گھر سے باہر نکلتے ہوئے پانی کی بوتل اپنے پاس رکھیں چاہے روزہ ہی کیوں نہ ہو اور طبیعت بگڑنے پر فوری پانی کا استعمال کریں کیونکہ روزے کا کفارہ ہوسکتا ہے مگر جان پھر واپس نہیں آسکتی۔خیال رہے کہ اس سے قبل یکم مئی سے 3 مئی تک کراچی میں ہیٹ ویو کے اثرات نمایاں ہونے کے ساتھ ہی موسم انتہائی گرم ہوگیا تھا، اس دوران درجہ حرارت 40 سے 42 ڈگری سینٹی گریڈ تک جا پہنچا تھا۔

May 23, 2019

. زمین سے زمین تک مار کرنیوالے میزائل ’’ شاہین ٹو‘‘ کا کامیاب تجربہ،انجینئرز کو مبارکباد

راولپنڈی جدت ویب ڈیسک :: پاکستان نے زمین سے زمین تک مار کرنے والے بیلسٹک میزائل شاہین ٹو کا کا میاب تجربہ کرلیا ، ڈی جی آئی ایس پی آر کا کہنا ہے شاہین ٹوخطےمیں دفاعی صلاحیتوں کوتقویت دینےکاباعث ہے۔
پاک فوج کے شعبہ برائے تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق پاکستان کی جانب سے زمین سے زمین تک مار کرنے والے میزائل شاہین ٹو کا کا میاب تجربہ کیا گیا۔
ڈی جی آئی ایس پی آر کا کہنا ہے شاہین ٹوبیلسٹک میزائل 1500 کلو میٹر تک ہدف کامیابی سے نشانہ بنا سکتا ہے ، شاہین ٹو خطے میں دفاعی صلاحیتوں کوتقویت دینےکاباعث ہے۔
ترجمان پاک فوج کا کہنا تھا کہ میزائل زمین سےزمین تک ہدف کوکامیابی سےنشانہ بناسکتاہے، شاہین ٹواسٹریٹجک ضروریات کومؤثراندازمیں پوراکرنےکی صلاحیت رکھتاہے۔
میجر جنرل آصف غفور نے کہا شاہین ٹو میزائل کا تجربہ بحیرہ عرب میں کیا گیا ، بلیسٹک میزائل روایتی اورنیوکلیئر وارہیڈ لے جاسکتا ہے۔صدر مملکت عار ف علوی اور وزیراعظم عمران خان نے نے بھی اہم سنگ میل کو عبور کرنے پر مبارکباد پیش کی۔کامیاب تجربے پر چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی اور مسلح افواج کےسربراہان نے سیاستدانوں اورانجینئرز کو مبارکباد دی۔

May 23, 2019

. معصوم فرشتہ مہمند کے سفاکانہ قتل کی شدید مذمت کرتے ہیں، آئی ایس پی آر

راولپنڈی جدت ویب ڈیسک : : پاک فوج کے ترجمان نے معصوم فرشتہ کے قتل کی مذمت اور واردات میں ملوث ملزمان کی گرفتاری کیلئے ہر قسم کے تعاون کی پیشکش کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہمیں مستقبل کی نسل کو بچانے کیلئے مل کر کوشش کرنا ہوگی۔
تفصیلات کے مطابق پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل آصف غفور نے کہا ہے کہ اسلام آباد میں زیادتی کے بعد قتل ہونے والی معصوم بچی فرشتہ مہمند کے سفاکانہ قتل کی شدید مذمت کرتے ہیں۔واقعے کے ذمہ داروں کو انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے، سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں ان کا کہنا تھا کہ پاک فوج معصوم بچی کے قتل میں کسی بھی قسم کے تعاون کیلئے تیار ہے۔
ہمیں ننھی کلیوں کو مسلنے والے درندوں کیخلاف اٹھ کھڑا ہونا ہوگا اور ہمیں مستقبل کی نسل کو بچانے کیلئے مل کر کوشش کرنا ہوگی۔یاد رہے کہ اس اندوہناک واقعے کا وزیر اعظم عمران خان نے بھی سختی سے نوٹس لیا ہے ، انہوں نے آئی جی اسلام آباد، ڈی آئی جی آپریشنز سے وضاحت طلب کرلی ہے۔واضح رہے کہ ضلع مہمند سے تعلق رکھنے والی فرشتہ مہمند نامی دس سالہ بچی کو کچھ روز قبل اغوا کرکے مبینہ ذیادتی کے بعد سفاکانہ طریقے سے قتل کردیا گیا تھا۔واقعے کا مقدمہ والدین نے درج کروانے کی کوشش کی، والدین نے الزام عائد کیا ہے کہ پولیس نے غفلت کا مظاہرہ کیا اور ہماری بچی کو تلاش نہیں کیا۔

May 22, 2019

وزیراعظم سے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی ملاقات

جدت ویب ڈیسک ) وزیراعظم عمران خان سے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی ملاقات ہوئی۔ ملاقات میں ملکی سکیورٹی سے متعلق امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ قبل ازیں بھی وزیر اعظم عمران خان کی آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات ہوئی جس میں ملکی سیکیورٹی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیر اعظم عمران خان سے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے وزیر اعظم آفس میں ملاقات کی ۔ اس ون آن ون ملاقات میں وزیر اعظم اور آرمی چیف نے علاقائی امن و امان کی صورتحال پر بھی بات چیت کی۔ میٹنگ میں پاک فوج کے پیشہ ورانہ امور بھی زیر غور آئے۔ دریں اثنا، وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس منعقد ہوا، اجلاس میں آرمی چیف سمیت انٹیلی جنس اور اہم اداروں کے سربراہان نے شرکت کی۔ذرایع کا کہنا ہے کہ اجلاس میں سروسز چیفس، خزانہ، دفاع اور داخلہ کے حکام شریک ہوئے، اور ملکی مجموعی سیکورٹی کی صورت حال کا جائزہ لیا گیا۔

May 22, 2019

ڈالر کس نے ذخیرہ کئے؟ دو اہم اداروں نے رپورٹ تیار کرلی ,

جدت ویب ڈیسک : ۔ ذرائع کے مطابق بحران پیدا کرنے میں 51 ٹاپ مافیا ،72 منی ایکس چینجر ،18 بک میکر اور 9 لینڈ مافیا ملوث نکلے ۔ پراپیگنڈا کرنیوالے 380 سوشل میڈیا اکاؤنٹس میں بیشتر کا تعلق تین سیاسی جماعتوں سے ہونے کا انکشاف ہوا ہے ۔
رپورٹ میں تفصیلی طور پر بتایا گیا کہ ڈالر کس نے ذخیرہ کئے ، کس طرح مارکیٹ سے غائب کر کے مصنوعی قلت پیدا کی گئی اور کن کن سوشل میڈیا کے اکاؤنٹس سے ڈالرز کے حوالے سے پراپیگنڈا کیا جا رہا ہے ۔
رپورٹ کے مطابق ٹاپ 51مافیا کے ایسے تمام افراد جنہوں نے ڈالر کی قیمت بڑھانے اور ڈالر کی ذخیر ہ اندوزی میں اہم کردار ادا کیا، ان کے حوالے سے اہم شواہد حاصل کر لئے گئے ہیں جبکہ 72منی ایکس چینجر، 18بڑے بک میکر اور 9لینڈ مافیا کے بڑے نام بھی سامنے آئے ہیں۔
ڈالر کے حوالے سے سوشل میڈیا پر مہم چلانے والے 380سوشل میڈیا گروپس کے حوالے سے بھی نہ صرف سراغ لگا لیا گیا بلکہ حیر ت انگیز طور پر ان میں سے زیادہ اکاؤنٹس 3سیاسی جماعتوں کے سوشل میڈیا سیل کو چلانے والے افراد چلا رہے ہیں ۔ذرائع کے مطابق تمام تر حکومتی اقدامات کے باوجود بھی ڈالر کس طرح بے قابو ہوا اور پاکستانی معیشت کو کس طرح ڈالر مہنگا اور ذخیرہ کر کے نقصان پہنچانے کی کوشش کی جارہی ہے ، اس حوالے سے اہم اداروں کی رپورٹ میں کئی اہم نام بے نقاب ہوئے ہیں ۔
ذرائع کا کہناہے کہ اس رپورٹ میں 51ایسے ٹاپ مافیا کے نام سامنے آئے ہیں جن کا بزنس کمیونٹی سے بڑا گہرا تعلق ہے اور ان میں سے کئی ایسے بھی لوگ شامل ہیں جو ڈالر کی بڑھتی ہوئی قیمتوں کو کنٹرول کرنے کے حوالے سے حکومتی سطح پر ہونے والی میٹنگز میں بھی شامل رہتے ہیں جبکہ اس ٹاپ 51مافیا کی لسٹ میں بڑے منی ایکس چینجر ،معروف کاروباری شخصیات اور 6سابقہ بینکر ز کے نام بھی شامل ہیں۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ اس رپورٹ میں یہ بھی لکھا گیا ہے کہ کچھ حاضر سروس بینکر بھی اس بحران میں اپنا اہم کردار ادا کر رہے ہیں اور ڈالر کی مانگ کے حوالے سے سب سے پہلے وہ مختلف مافیا کے افراد کو اطلاع دیتے ہیں، اس کے بعد ڈالر تیزی سے غائب ہونا شروع ہو جاتا ہے ۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ کئی بڑے بک میکرز جن کے بھارتی بک میکرز سے رابطے ہیں، ان کی بھی ایک بڑی سرمایہ کاری اس ذخیرہ اندوزی میں شامل ہے ۔ذرائع کے مطابق رپورٹ میں یہ بھی لکھا گیا ہے کہ اس بڑی سرمایہ کاری کے پیچھے بھارتی مافیا بھی شامل نظر آتا ہے جو مختلف بڑے بک میکرز کے ذریعے ڈالر کی ذخیرہ اندوزی اور مصنوعی بحران پیدا کرا کر پاکستانی معیشت کو نقصان پہنچا رہے ہیں۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ اس ضمن میں 72ایسے منی ایکس چینجر ز کے نام بھی سامنے آئے ہیں جو کہ مصنوعی بحران میں مافیا کیلئے باقاعدہ استعمال ہوتے رہے اور مختلف جگہوں سے ڈالر ز اکٹھے کر کے مافیا زکو پہنچاتے رہے اور ان منی ایکس چینجرزنے بھی افواہوں اور مصنوعی بحران اور ڈالر کو مہنگا کرنے میں اپنا اہم کردار ادا کیا۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ لینڈ مافیا اور سابق بینکرز کے نام بھی سامنے آئے ہیں جن کے حوالے سے سے یہ بھی ثبوت ملے ہیں جنھوں نے مارکیٹ اور مختلف ذرائع سے بھاری تعداد میں ڈالر ز مارکیٹ سے خرید کر اپنے پاس رکھے ہوئے ہیں اور مزید خریدو فروخت بھی کر رہے ہیں ۔ڈالر کے حوالے سے کس طرح سوشل میڈیا پر منفی مہم چلائی گئی اور کس طرح یہ تاثر دیا گیا کہ ڈالر 200روپے تک چلا جائے گا اور سوشل میڈیا پر افراتفری پھیلا کر ڈالر کے حوالے سے مانگ بڑھانے والے سوشل میڈیا اکاؤنٹس کے حوالے سے یہ انکشاف بھی سامنے آیا ہے کہ ان میں تین سیاسی جماعتوں کے سوشل میڈیا سیل چلانے والے گروپ سب سے زیادہ متحرک ہیں ۔رپورٹ میں یہ بھی لکھا گیا ہے کہ جس مافیا نے یہ مصنوعی بحران پیدا کیا ہے ، ان بڑے اور تگڑے کارروباری گروپوں کے سابقہ اور موجودہ سیاسی جماعتوں و سابقہ و موجو دہ حکمرانوں سے تعلقات ہیں۔
رپورٹ میں تما م افراد کے خلاف سخت ایکشن لینے کا کہا گیا ہے ۔