August 8, 2019

ٹریفک پولیس کو دھمکیاں دینا امیر زادے کو مہنگا پڑگیا

کراچی : جدت ویب ڈیسک ::شہر قائد میں جاری فینسی نمبر پلیٹ اور کالے شیشوں کے خلاف مہم کے دوران پولیس کو دھمکانا امیر زادے کو مہنگا پڑگیا، تلاشی پر گاڑی سے شراب بر آمد ، ٹریفک پولیس نے ویڈیو بھی بنالی۔
تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے ڈیفنس میں کالے شیشوں کے خلاف مہم کے دوران مہنگی اووڈی کار سے مہنگی شراب نکل آئی ، ٹریفک پولیس کی جانب سے جاری کردہ ویڈیو میں نوجوان مسلسل ٹریفک حکام کو دھمکیاں دیتا نظر آرہا ہے ۔ایس ایس پی ساؤتھ شیراز نذیر کے مطابق جب مذکورہ گاڑی کو روکا گیا تو اس میں موجود نوجوان ٹریفک پولیس اہلکاروں کو دھمکیاں دینے پر اتر آیا، کار سوار کو سیاہ شیشوں اور فینسی نمبر پلیٹ کی بنا پر روکا گیا تھا ، اس نے پولیس اسکواڈ سے بچ کر بھاگنے کی کوشش بھی کی تھی۔نوجوان کی حرکتوں پر موقع پر موجود پولیس اہلکاروں کو شک گزرا، اورانہوں نے گاڑی کی تفصیلی تلاشی لینے کا فیصلہ کیا، جس پر نوجوان چراغ پا ہوگیا اوردھمکیاں دینے پر اتر آیا، بعد ازاں اس نے کوشش کی کہ چالان بھر کر فوراً نکل جائے۔
نوجوان کے رویے سے پولیس کا شک یقین میں بدل گیااور جب گاڑی کی تلاشی لی تو اس میں سے مہنگی وائن اور بیئر کی بوتلیں برآمد ہوئیں۔
پولیس نے شراب برآمد ہونے پر ملزم کو حراست میں لے لیا ہے ، اور اس کو کالے شیشوں اور فینسی نمبر پلیٹ پر جرمانہ بھی بھرنا ہوگا۔
طلحہ نامی اس ملزم نے گاڑی میں شراب کی موجودگی کا جواز دیتے ہوئے کہا کہ وہ بنکاک سے کراچی پہنچاتھا اس لیے اس کے پاس یہ بوتلیں موجود تھیں۔
یاد رہے کہ اے آئی جی کراچی امیر شیخ کے حکم پر ان دنوں کالے اور اندھے شیشوں کے خلاف ٹریفک پولیس کی مہم جاری ہے ، اس سے قبل ٹریفک پولیس کامیاب ہیلمٹ مہم بھی چلا چکی ہے۔

August 8, 2019

– محکمہ ماحولیات سندھ کا پلاسٹک تھیلیوں کی پابندی پر عملدرآمد کرانے کا اعلان

کراچی: جدت ویب ڈیسک ::محکمہ ماحولیات سندھ نے پلاسٹک تھیلیوں کی پابندی پر عملدرآمد کرانے کا اعلان کردیا جس کے مطابق پابندی کا اطلاق رواں سال یکم اکتوبر سے ہوگا۔
تفصیلات کے مطابق مشیر ماحولیات سندھ مرتضیٰ وہاب نے کہا ہے کہ یکم اکتوبر سے پلاسٹک تھیلیوں کی تیاری، فروخت، استعمال پر پابندی ہوگی، پلاسٹک تھیلیوں سے متعلق عوامی آگاہی مہم کا آغاز کردیا گیا ہے۔
مشیر ماحولیات سندھ مرتضیٰ وہاب نے کلفٹن کے علاقے میں شہریوں میں کپڑے کے تھیلے تقسیم کیے، انہوں نے کہا کہ شہر کے دیگر علاقوں میں بھی کپڑے کے تھیلے تقسیم کیے جائیں گے۔
پیپلزپارٹی رہنما مرتضیٰ وہاب نے پلاسٹک تھیلیوں کے کارخانوں، دکانداروں سے تعاون کی اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ بہتر مستقبل کے لیے سندھ حکومت کا ساتھ دیں۔
انہوں نے کہا کہ پلاسٹک تھیلیوں کا استعمال ممنوع ہے اس پر عملدرآمد کرانا چاہتے ہیں، کراچی کے 50 فیصد برساتی نالے پلاسٹک کی تھیلیوں کی وجہ سے چوک ہیں۔ وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے پلاسٹک بیگ سے انکار مہم کے لیے خصوصی پیغام بھی جاری کردیا ہے۔
واضح رہے کہ وفاقی حکومت نے اسلام آباد میں پلاسٹک بیگز پر پابندی کے بعد متبادل بیگز کے سیمپل تیار کرلیے ہیں، وزارت موسمیاتی تبدیلی کا کہنا تھا کہ 14 اگست کے بعد پلاسٹک بیگز استعمال کرنے والوں پر بھاری جرمانہ عائد کیا جائے گا۔

حکومت سندھ کا بڑا اعلان محکمہ ماحولیات سندھ کا پلاسٹک کی تھیلوں پر مکمل پابندی لگانے کا اعلان

حکومت سندھ کا بڑا اعلانمحکمہ ماحولیات سندھ کا پلاسٹک کی تھیلوں پر مکمل پابندی لگانے کا اعلان. پابندی کا اطلاق رواں برس یکم اکتوبر سے ہوگا.#SayNoToPlasticBags#SindhGovernment

Posted by Daily Jiddat Karachi on Thursday, August 8, 2019

August 7, 2019

وزیر اعلیٰ سندھ کی بارشوں کے پیش نظر تمام اداروں کو تیاری کرنے کی ہدایت

کراچی: جدت ویب ڈیسک ::صوبہ سندھ کے دارالحکومت کراچی میں ایک بار پھر متوقع بارشوں کے پیش نظر وزیر اعلیٰ سندھ نے تمام اداروں کو تیاری کرنے کی ہدایت دے دی۔
تفصیلات کے مطابق وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کی زیر صدارت کراچی میں تجاوزات اور بارش کی صورتحال پر اجلاس ہوا۔ وزیر اعلیٰ نے متوقع بارشوں کے پیش نظر ہدایت کی کہ تمام ادارے، کمشنر اور ڈپٹی کمشنرز بارش کی تیاری کر لیں۔وزیر اعلیٰ نے کہا کہ زیادہ جذبے اور محنت کی ضرورت ہے، آج حیدر آباد کا دورہ کروں گا، انتظامیہ کو ضروری ہدایات دوں گا۔ حیدر آباد، ٹھٹھہ اور بدین میں بلدیاتی اداروں اور ڈپٹی کمشنرز کو متحرک کریں۔انہوں نے کہا کہ حیدر آباد کے لیے واسا، ایچ ڈی اے اور ایچ ایم سی کو بے حد محنت کرنی ہوگی۔ سندھ حکومت نے کمپری ہینسو کراچی ماس ٹرانزٹ پراجیکٹ بنایا۔ مختلف پراجیکٹس پر کام کر رہے ہیں۔خیال رہے کہ محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ کراچی میں جمعے کی رات سے گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان ہے، جس سے ہفتے اور اتوار کو اربن فلڈنگ کا خدشہ بھی ہے۔
محکمہ موسمیات کی جانب سے جاری کردہ ’ویدر وارننگ‘ میں کہا گیا ہے کہ شمالی خلیج بنگال میں مون سون کا کم دب پیدا ہوا ہے، مون سون سسٹم 9 اگست کی صبح بھارتی گجرات پہنچ جائے گا۔
محکمہ موسمیات کا مزید کہنا ہے کہ 9 سے 12 اگست تک کراچی، حیدر آباد، بدین، ٹھٹھہ، میرپور خاص، حیدر آباد اور شہید بینظیر آباد میں تیز بارش کا امکان ہے۔ کراچی اور حیدر آباد میں ہفتے اور اتوار کو اربن فلڈنگ کاخدشہ ہے، متعلقہ حکام کو احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کا مشورہ دے دیا گیا ہے۔

August 3, 2019

کلین کراچی مہم کا ابتدائی خاکہ تیار۔۔کام شروع

کراچی: جدت ویب ڈیسک ::وفاقی وزیر برائے بحری امور علی زیدی کی زیر صدارت ہونے والے اجلاس میں کلین کراچی مہم کا ابتدائی خاکہ تیار کرلیا گیا، مہم کے لیے ضلع غربی میں 48 مقامات اور ضلع جنوبی و شرقی میں 70 مقامات کی نشاندہی کی گئی ہے۔
تفصیلات کے مطابق کراچی پورٹ ٹرسٹ (کے پی ٹی) آفس میں کراچی صاف کریں مہم کے حوالے سے اجلاس منعقد ہوا۔ اجلاس کی صدارت وفاقی وزیر برائے بحری امور علی زیدی نے کی۔
اجلاس میں تحریک انصاف کے ارکان قومی و صوبائی اسمبلی بھی شریک ہوئے جن میں آفتاب صدیقی، صائمہ ندیم، غزالہ صدف، خرم شیر زمان، عمران شاہ، راجہ اظہر، شہزاد قریشی اور عباس جعفری شامل ہیں۔
اجلاس میں وفاقی حکومت کی کلین کراچی مہم کا ابتدائی خاکہ تیار کرلیا گیا۔ اجلاس میں اس امکان پر بھی غور کیا گیا کہ کلین کراچی مہم کا دورانیہ 2 ہفتے سے بڑھا دیا جائے۔ مہم کے پہلے مرحلے میں 6 اضلاع میں بڑے نالوں کی صفائی کی جائے گی، دوسرے مرحلے میں شاہراہوں اور گلیوں سے کچرا اٹھایا جائے گا۔
کچرا اٹھانے کے فیز میں ڈمپنگ یارڈ خالی کرنا اور اسکولز و پارکس کے اطراف سے کچرا اٹھانا شامل ہے۔ مہم میں حصہ لینے والے وفاقی و بلدیاتی اداروں کے نمائندگان کا بھی اجلاس ہوگا۔ تحریک انصاف ارکان قومی و صوبائی اسمبلی حلقوں میں صفائی کا پلان پیش کریں گے۔ کاروباری و صنعتی اداروں، تنظیموں اور کارپوریٹ سیکٹر کا الگ اجلاس ہوگا۔ وفاقی وزیر علی زیدی تمام اسٹیک ہولڈرز کے ساتھ بھی اجلاس کریں گے۔خیال رہے کہ وزیر اعظم کی خصوصی ہدایت پر کراچی میں 2 ہفتے کی صفائی مہم کا آغاز کل سے ہوگا، کلین کراچی مہم کی نگرانی وفاقی وزیر علی زیدی کریں گے۔ مہم میں 10 ہزار سے زائد رضا کار، سیاسی کارکن اور عوامی نمائندے حصہ لیں گے۔ وفاقی حکومت کی کلین کراچی مہم کے لیے قومی خزانے سے فنڈز نہیں لیے جائیں گے۔فرنٹیئر ورکس آرگنائزیشن (ایف ڈبلیو او) کلین کراچی مہم کی کلیدی شراکت دار ہے جو تکنیکی مدد و ہیوی مشینری دے گی۔ کراچی کی کاروباری و صنعتی تنظیمیں بھی کلین کراچی مہم میں حصہ لیں گی۔ مہم میں ایک ہزار ٹریکٹر ٹرالیوں 200 سے زائد ڈمپر لوڈر سے کچرا ٹھکانے لگایا جائے گا۔ ہر بلدیاتی وارڈ میں رضا کار صفائی مہم کا حصہ بنیں گے۔کلین کراچی مہم میں ضلع غربی میں 48 مقامات کی نشاندہی کی گئی ہے، ضلع جنوبی و شرقی میں 70 مقامات کو منتخب کرلیا گیا ہے۔

July 30, 2019

دو روز کے دوران کرنٹ لگنے سے جاں بحق افراد کی تعداد 15 ہو گئی

کراچی: جدت ویب ڈیسک ::موسلا دھار بارش میں شہری و صوبائی حکومت کی طرف سے انتظامی اقدامات نہ ہونے سے کراچی پانی پانی ہو چکا ہے، اس دوران دو روز میں کرنٹ لگنے سے 15 افراد زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھے۔تفصیلات کے مطابق پاکستان کے سب سے بڑے شہر کی سڑکیں تالاب بن گئی ہیں، انڈر پاس ڈوب چکے ہیں، نالے بھی ابل پڑے ہیں، کئی علاقوں میں پانی گھروں میں داخل ہو چکا ہے۔
کئی مقامات پر کے الیکٹرک کی نا اہلی کے باعث بجلی کے تار ٹوٹ کر گرے ہوئے ہیں، جن کے باعث اب تک چودہ افراد زندگی کی بازی ہار چکے ہیں۔کرنٹ لگنے سے اب تک ڈیفنس، گلشن جوہر، محمود آباد، ملیر اور بوٹ بوسن میں اموات واقع ہو چکی ہیں، ریسکیو ذرایع کا کہنا ہے کہ آج دوپہر سے کرنٹ لگنے کے واقعات میں 5 افراد جاں بحق ہوئے۔ریسکیو ذرایع کے مطابق آج نارتھ ناظم آباد میں کرنٹ لگنے سے 2 لڑکے جاں بحق ہوئے، جن کی عمر 12 سے 14 سال تھی، فشری کے علاقے میں کرنٹ لگنے سے ایک مزدور جاں بحق ہو گیا۔

July 30, 2019

188 ملی میٹر بارش ہو تو مسائل کھڑے ہوتے ہیں: وزیراعلیٰ سندھ

حیدرآباد: جدت ویب ڈیسک ::وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ اتنی برسات میں ہم نہیں کہہ سکتے پانی نہیں ٹھہرے گا، سی ای اوحیسکو کو نظام درست کرنے کی ہدایت کی ہے۔
ان خیالات کا اظہار وزیراعلیٰ سندھ نے حیدرآباد میں بارش سے متاثرہ علاقوں کے دورے کے موقع پر کیا، اس موقع پر سید مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ 188 ملی میٹر بارش ہو تو مسائل کھڑے ہوتے ہیں۔
انہون نے کہا کہ حیدرآباد شہر میں 188 ملی میٹر بارش ریکارڈ کی گئی، بجلی نہ ہونے کی وجہ سے پمپنگ اسٹیشن بند ہوئے، اتنی برسات میں ہم نہیں کہہ سکتے پانی نہیں ٹھہرے گا۔
وزیراعلیٰ نے بتایا کہ سی ای اوحیسکو کو نظام کو درست کرنے کی ہدایت کی ہے، انتظامیہ والوں کو ہدایت کی ہے رین ایمرجنسی میں موجود رہا جائے۔  مراد علی شاہ کا مزید کہنا تھا کہ کوتاہیاں ضرور ہوئی ہیں، اس کو بعد میں دیکھیں گے، کمشنر حیدرآباد کو کہا ہے حیسکو چیف کو اپنے دفتر میں بٹھائیں، نالوں سے جہاں پانی جاتا تھا وہاں تجاوزات قائم ہوچکی ہیں۔خیال رہے کہ حیدرآباد اور سندھ کے مختلف شہروں سمیت کراچی میں بھی موسلادھار بارشوں کا سلسلہ وقفے وقفے سے جاری ہے، بارش کے دوران مختلف واقعات میں 8 افراد جاں بحق ہوگئے اور رین ایمرجنسی میں غفلت برتنے پر 6 افسران کو معطل کردیا گیا ہے۔