January 17, 2019

مجھے اگر سرکاری دورے پر باہر جانا پڑا تو کوئی طاقت روک نہیں سکتی وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ

جدت ویب ڈسیک ::سیہون میں میڈیا سے گفتگو میں وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ فواد چوہدری کے پاس کوئی چیز کرنے کو نہیں ہے، وہ خبروں میں آنے کیلئے خبریں بناتے ہیں، مرغیاں انڈے پرانی چیزیں بن چکی ہیں جب کہ عمران خان پاکستان کے وزیراعظم ہیں جب چاہیں سندھ آسکتے ہیں، ہماری سیاست اور جمہوریت کی لیول اب یہ رہی ہے کہ وزیراعظم سندھ آرہے ہیں تو کہتے ہیں سازشیں کرنے آرہے ہیں۔
مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ ای سی ایل میں نام ڈالنے سے مجھ پر کوئی فرق نہیں پڑتا، مجھے اگر سرکاری دورے پر باہر جانا پڑا تو کوئی طاقت روک نہیں سکتی۔وزیراعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ اپوزیشن جماعتیں عوام کے مسائل کے حل کے لیے ایک ہوئی ہیں، اپوزیشن جماعتوں کے متحد ہونے سے حکومت پر عوام کے مسائل حل کرنے کے لئے پریشر بڑھے گا، جو طریقہ انہوں نے اختیار کیا ہوا ہے اس سے عوام کی معاشی صورتحال بہتر نہیں ہوگی، 4 یا 5 مہینوں میں اس حکومت پر لوگ اتنی تنقید کر رہے ہیں جو کبھی پی پی اور ن لیگ پر نہیں ہوئی۔ ان کا کہنا تھا کہ نیب اور سپریم کورٹ نے وفاقی وزراء کو جے آئی ٹی رپورٹ پر بیان بازی سے روکا ہے جب کہ پی ٹی آئی حکومت عوام کے مسائل حل کرنے کے بجائے پاکستان پیپلز پارٹی اور دیگر جماعتوں کے خلاف انتقامی کاروائیاں کر رہی ہے۔

January 15, 2019

بے نامی اکاﺅنٹ میں کھپرو کے چیئرمین بھی شامل ہیں ، حلیم عادل شیخ

کھپرو جدت ویب ڈیسک : سندھ اسمبلی میں پی ٹی آئی کے پارلیمانی لیڈر حلیم عادل شیخ ضلع سانگھڑ کی تحصیل کھپرو پہنچے دورے کے دوران واٹر سپلائی اسکیم پر پہنچے جہاں جانوروں اور انسانوں کے لئے ایک ہی تالاب استعمال کیا جارہا تھا پانی کے تالابوں سے بڑی تعداد میں جانور بھی پانی پیتے ہوئے دکھائی دیئے۔ پانی کی انتہائی خراب صورتحال پر حلیم عادل شیخ نے اظہار برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کھپرو میونسپل کمیٹی کا چیئرمین بھی ٹھیکیدار کرپشن زدہ ہے جس کا نام جی آئی ٹی میں شامل ہے جس نے جعلی اکاﺅنٹ کے ذریعے رقم جمع کرائی۔ کھپرو کی عوام کے لئے دو کروڑ ماہابہ بجیٹ دیا جاتا ہے عوام کو پینے کا پانی بھی میسر نہیں ایک ہی گھاٹ سے انسان اور جانوروں کو پانی پلایا جارہا ہے۔ زرداری کی کرپشن نے کھپرو کے شہریوں کو بھی نہیں بخشا یہاں کے چیئرمین نے عوام کی امانت میں خیانت کرکے کرپشن کی ہے۔

January 15, 2019

جے آئی ٹی صرف بہانہ ہے اور سندھ حکومت اصل نشانہ ہے،سعید غنی

کراچی جدت ویب ڈیسک : وزیر بلدیات سندھ سعیدغنی نے کہا ہے کہ یہ علیمہ خان سے توجہ ہٹانا چاہتے ہیں جب کہ جے آئی ٹی صرف بہانہ ہے اور سندھ حکومت اصل نشانہ ہے۔کراچی میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے وزیر بلدیات سندھ سعیدغنی نے کہا کہ نیب کو سیاسی ٹول کے طور پر استعمال کیا جاتا رہا، جب سے نیب بنی ہے ملک میں کرپشن کم نہیں بڑھ گئی ہے، سیاسی انتقامی کارروائیوں کیلئے نیب کو استعمال کیا جارہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ چیف جسٹس نے کہا جی آئی ٹی نے اپنے اختیارات سے تجاوز کیا، حکومت نے جو 172 افراد کے نام ای سی ایل میں ڈالے، کیا ایسا کرنے کے لیے کمیٹی نے کہا تھا، جے آئی ٹی صرف بہانہ ہے سندھ حکومت اصل نشانہ ہے۔وزیربلدیات سندھ سعیدغنی نے کہا کہ سندھ میں واحد حکومت پیپلزپارٹی کی ہے جو اپنے ووٹوں پر ہے باقی سب مانگے تانگے کی حکومتیں ہیں، حکومت چور دروازے سے سندھ حکومت گرانا چاہتی ہے، وہ کوشش کرکے دیکھ لیں ہم تیار ہیں، پی ٹی آئی کو اپنی حکومت کی فکر ہونی چاہیے۔سعید غنی کا کہنا تھا کہ یہ بھڑکیں مار کر ملک میں سنسنی پیدا کرناچاہتے ہیں، علیمہ کی آمدنی جائز ہے تو چھپانے کی کیا ضرورت تھی، یہ علیمہ خان سے توجہ ہٹانا چاہتے ہیں، اندازہ ہے کہ علیمہ خان کی مزید جائیدادیں سامنے آئیں گی۔

January 12, 2019

کراچی میں فوجی زمین سے تمام کاروباری سرگرمیاں ختم کرنے کا حکم، کلفٹن ڈولمین مال کے سامنے تعمیر کی گئی دیوار فوری گرائی جائے

کراچی: جدت ویب ڈسیک ::سپریم کورٹ کراچی رجسٹری نے شہر بھر میں ملٹری لینڈ (فوجی زمین) سے تمام کاروباری سرگرمیاں ختم کرنے کا حکم دے دیا۔ عدالت نے مزید حکم دیا کہ کلفٹن ڈولمین مال کے سامنے تعمیر کی گئی دیوار فوری گرائی جائے۔۔عدالت نے راشد منہاس روڈ پر قائم ریسٹورنٹس کی پارکنگ فوری ختم کرنے کا بھی حکم دیا۔
اجلاس میں عدالت نے فوجی زمین سے تمام کاروباری سرگرمیاں ختم کرنے کا حکم دیا۔جسٹس گلزار احمد نے کہا کہ کوئی کتنا بااثر کیوں نہ ہو، غیر قانونی تعمیرات کی اجازت نہیں ہوگی، یہ طے ہے کہ یہ زمینیں خالی ہوں گی۔اس کے علاوہ عدالت نے فٹ پاتھوں، سروس روڈز سے ٹیبلز، کرسیاں فوری ہٹانے اور کورنگی روڈ پر قائم عمارتوں کے سامنے بھی پارکنگ ہٹانے کا حکم دیا ہے۔
جسٹس گلزار نے استفسار کیا کہ کیا دیوار بنا کر خاص لوگوں کیلئے راستہ بنایا گیا ہے ؟ عدالتِ عظمیٰ نے کراچی کا ماسٹر پلان ڈپارٹمنٹ سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی (ایس بی سی اے) سے واپس لینے کا حکم دیا ہے۔
اس موقع پر سندھ حکومت کے نمائندے نے شکایت کی کہ مختلف ادارے ہمارے ساتھ تعاون نہیں کررہے جس پر جسٹس گلزار احمد نے تمام اداروں کو تعاون کی ہدایت کی۔ جب کہ عدالت نے کراچی میٹروپولیٹن کارپوریشن (کے ایم سی) کو تجاوزات کے خلاف بھرپور آپریشن جاری رکھنے کا حکم دیا۔سپریم کورٹ کراچی رجسٹری جسٹس گلزار احمد کی سربراہی میں تجاوزات کے خاتمے سے متعلق اجلاس ہوا جس میں عدالت نے حکومت کی کارکردگی پر برہمی کا اظہار کیا۔

January 12, 2019

’اللہ اللہ‘ کر بھیا۔۔وسیم اختر کا فاروق ستار کو مشورہ

کراچی: جدت ویب ڈسیک ::کراچی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وسیم اختر نے اعتراف کیا کہ سندھ حکومت کے عدم تعاون کی وجہ سے عوام کی خدمت بہتر انداز میں نہ کرسکے، وقت پر وسائل اور وفاق کے ترقیاتی پیکج ملتے تو عوام کی خدمت بہتر انداز میں کرتے لیکن ہمارے ہاتھ پاؤں باندھ کر شہر کی خدمت کرنے کو کہا گیا، مانتا ہوں حق ادا نہیں کرسکا، ہمارے اختیارات محدود کردیے گئے۔
انہوں نے بتایا عدالت کا حکم ہے کہ وفاق سرکاری کوارٹرز کے مکینوں کا معاملہ حل کیا جائے، سرکاری کوارٹرز کے مکین 46 سالوں سے رہ رہے ہیں، وہاں کے مکینوں کو رہنے دیا جائے یہ ان کا حق ہے، سرکاری کوارٹر کے مکینوں کو جگہ حکومت نے دی تھی۔وسیم اختر کا کہنا تھا کہ جہاں آپریشن ہوا وہاں مضبوط اسٹرکچر تو قائم نہیں ہوا مگر پتھارے ضرور لگ گئے، اب یہ کام پولیس کا ہے جو پتھارے واپس آرہے ہیں اسے ہٹائے۔
ایم کیوایم پاکستان کے رہنما اور میئر کراچی وسیم اختر نے اپنی ہی پارٹی کے سابق سربراہ فاروق ستار کو گھر بیٹھ کر اللہ اللہ کرنے کا مشورہ دے دیا۔

January 12, 2019

سی ٹی ڈی کی کورنگی میں کارروائی‘ رئیس ماما کا قریبی ساتھی گرفتار

جدت ویب ڈسیک ::شہر قائد کے علاقے کورنگی میں کاؤنٹرٹیررازم ڈیپارٹمنٹ نے کارروائی کرتے ہوئے رئیس ماما کے قریبی ساتھی کو گرفتارکرلیا۔
تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے کورنگی میں سی ٹی ڈی نے کارروائی کے دوران رئیس ماما کے قریبی ساتھی محمد مذمل عرف ہلکا کو گرفتارکرلیا۔
ایس پی مرتضیٰ بھٹو کا کہنا ہے کہ گرفتار ملزم کا تعلق سیاسی جماعت سے ہے، ملزم 2001 میں یونٹ 74 کورنگی کا کارکن رہ چکا ہے۔
ایس پی کے مطابق ملزم نے 2001 میں سیکٹرانچارج کے کہنے پراعجازنامی شخص کی ریکی کی، ملزم نے ساتھیوں کے ساتھ مل کر ریکی کے بعد شہری کوقتل کیا۔ مرتضیٰ بھٹو کے مطابق ملزم قتل کیس میں پولیس کومطلوب تھا، ملزم نے پارٹی احکامات پربھتہ خوری، جلاؤ گھیراؤ کا بھی اعتراف کیا۔
ایس پی مرتضیٰ بھٹو کا کہنا ہے کہ گرفتار ملزم سے ساتھیوں سے متعلق تفتیش جاری ہے۔دوسری جانب کراچی کے علاقے کورنگی میں سی ٹی ڈی نے کارروائی کے دوران رئیس ماما کے قریبی ساتھی محمد مذمل عرف ہلکا کو گرفتارکرلیا۔ایس پی مرتضیٰ بھٹو کے مطابق گرفتار ملزم کا تعلق سیاسی جماعت سے ہے، ملزم 2001 میں یونٹ 74 کورنگی کا کارکن رہ چکا ہے

January 12, 2019

شہر قائد کے علاقے لیاری میں رینجرز کی کارروائی ، سیکیورٹی اداروں پر حملوں میں ملوث ملزم فیضو دادا کو گرفتار کرلیا۔

کراچی جدت ویب ڈسیک :: : شہر قائد کے علاقے لیاری میں رینجرز نے کارروائی کرتے ہوئے سیکیورٹی اداروں پر حملوں میں ملوث ملزم فیضو دادا کو گرفتار کرلیا۔  تفصیلات کے مطابق کراچی میں لیاری کے علی محمد محلے میں رینجرز نے خفیہ اطلاع پر کارروائی کے دوران مطلوب ملزم فیضو دادا کو گرفتار کیا۔
ترجمان رینجرز کے مطابق ملزم کا تعلق غفارذکری گروپ سے رہا، ملزم قتل، سیکیورٹی اداروں پرحملوں اور بھتہ خوری میں ملوث رہا۔
ترجمان نے بتایا کہ ملزم جون 2007 میں علی محمد محلے میں پولیس پرحملے میں ملوث رہا، جولائی 2007 میں پولیس پرحملہ کرکے کانسٹیبل کو زخمی کیا۔
ترجمان رینجرز کے مطابق 2011 میں ملزم نے غفارذکری کی ہدایت پرایک شخص کوقتل کیا، مارچ 2011 میں کچھی رابطہ کمیٹی کے 2 افراد کواغوا اورقتل کیا۔ ترجمان نے مزید بتایا کہ 2007 میں ملزم غفار ذکری کے لیے منشیات کا اڈا چلاتا رہا، 2011 میں ملزم نے گرفتار ی سے بچنےکے لیے جعلی شناختی کارڈ بنوایا۔