ٹیکس نظام کو صرف بہتر ہی نہیں کرنا بلکہ نافذ بھی کرنا ہے ۔وزیر خزانہ اسد عمر

March 13, 2019 3:29 pm

جدت ویب ڈیسک ::میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر خزانہ نے کہا کہ چین کے ساتھ ایکسپورٹ کی سہولیت کے لیے معاہدہ جلد تکمیل پا جائے گا ۔ ایف بی آر ، نادرا اور پرال کے درمیان ٹیکنالوجی کی بنیاد پر ٹیکس چوری روکنے کی کوشش کی جارہی ہے۔وزیر خزانہ نے کہا کہ ٹیکس نظام کی بہتری کا کوئی شارٹ کٹ نہیں ، افسران کی بھرتی اور ٹریننگ بہتر بنانے کی کوشش کر رہےہیں ، آئی ایم ایف کیساتھ مذاکرات کے نتائج جلد سامنے آجائیں گے ۔وزیر خزانہ نے بتایا کہ نادرا کے چیئرمین کو پرال کا شعبہ بھی دیدیا گیا ہے ، اس اقدام سے ٹیکس چوری کو روکنے میں مزید مدد ملے گی، سیلزٹیکس اور ٹرن اوور کے ساتھ ساتھ انکم ٹیکس کے درمیان بھی ٹیکنالوجی کی بنیاد پر تجزیہ کاری کو استحکام دیا جارہا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ ان اقدامات سے پاکستان میں ٹیکس چوری کا راستہ مزید رک جائے گا، ٹیکسٹائل کے شعبے کو بینک کا قرضہ ایک اعشاریہ 5 ارب روپے سے مزید بڑھایا جارہا ہے۔
وزیر خزانہ نے کہا کہ اس قرضے کے ذریعے ٹیکسٹائل برآمدات کو یقینی بنایا جائے گا،ٹیکسٹائل کے شعبے میں کوالٹی برآمدات کو بھی یقینی بنایا جائے گا، بینک کا قرضہ جدید لومز خریدنے میں بنیادی کردار ادا کریگا۔

متعلقہ خبریں