لاک ڈاؤن کے دوران بند کی جانے والی 2 مسافر ٹرینوں کی بحالی کا فیصلہ

November 4, 2020 5:07 pm

لاہور: ویب ڈیسک ::کرونا وائرس لاک ڈاؤن کے دوران بند کی جانے والی 2 مسافر ٹرینوں کو بحال کرنے کا فیصلہ کرلیا گیا، سیالکوٹ ۔ وزیر آباد کے درمیان چلنے والی ٹرین فوری طور پر جبکہ کوئٹہ ۔ چمن کے درمیان چلنے والی ٹرین کو 10 نومبر سے بحال کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔
تفصیلات کے مطابق کرونا وائرس لاک ڈاؤن کے دوران بند کی جانے والی 2 مسافر ٹرینیں بحال کرنے کا فیصلہ کرلیا گیا، عوام کی سہولت کے پیش نظر کوئٹہ ۔ چمن کے درمیان چلنے والی چمن مکسڈ ٹرین کو 10 نومبر 2020 سے بحال کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔
چمن مکسڈ ٹرین کوئٹہ سے صبح 8 بج کر 30 منٹ پر روانہ ہو کر دوپہر 1 بجے چمن ریلوے اسٹیشن پہنچے گی، چمن ریلوے اسٹیشن سے دوپہر 2 بج کر 20 منٹ پر روانہ ہو کر شام 7 بجے کوئٹہ پہنچے گی۔
بعد ازاں شاہین پسنجر ٹرین سیالکوٹ سے شام 4 بج کر 30 منٹ پر روانہ ہو کر شام 5 بج کر 35 منٹ پر وزیر آباد پہنچے گی۔
عوام کی سہولت کے پیش نظر پشاور ۔ کراچی کے درمیان چلنے والی عوام ایکسپریس کو بھی 5 نومبر سے دینہ ریلوے اسٹیشن پر 2 منٹ رکنے کی اجازت دے دی گئی ہے۔ عوام کو یہ سہولت 3 ماہ کے لیے عارضی بنیادوں پر حاصل ہوگی۔تبلیغی اجتماع کے شرکا کے لیے اپ گرین لائن ٹرین کو 4 اور 5 نومبر اور ڈاؤن گرین لائن کو 8 اور 9 نومبر کو رائیونڈ ریلوے اسٹیشن پر 5 منٹ اسٹاپ کی اجازت دی گئی ہے۔علاوہ ازیں سیالکوٹ ۔ وزیر آباد کے درمیان چلنے والی شاہین پسنجر ٹرین کو بھی فوری طور پر بحال کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے، شاہین پسنجر ٹرین وزیر آباد سے صبح 5 بج کر 45 منٹ پر روانہ ہو کر صبح 6 بج کر 50 منٹ پر سیالکوٹ پہنچے گی۔

متعلقہ خبریں