کراچی میں مون سون کا نیا اسپیل وقفے وقفے سے بارش برسا رہا ہے، برسات شروع ہوتے ہی حسب سابق کے الیکٹرک کے 300 سے زائد فیڈرز ٹرپ ہوگئے

August 6, 2020 8:39 pm
ویب ڈیسک  ::کراچی میں مون سون کا نیا اسپیل وقفے وقفے سے بارش برسا رہا ہے، برسات شروع ہوتے ہی حسب سابق کے الیکٹرک کے 300 سے زائد فیڈرز ٹرپ ہوگئے
۔ کے الیکٹرک کا کہنا ہے کہ شہری احتیاط کریں، ٹیمیں بجلی کی جلد بحالی کیلئے کام کررہی ہیں۔
محکمہ موسمیات کے مطابق کراچی میں مون سون کا نیا اسپیل آج جمعرات اور جمعہ کو جم کر برسے گا جبکہ ہفتہ کو بھی بارش کا امکان ہے، جمعرات کی سہر پہر سے شروع ہونیوالا بارش کا سلسلہ وقفے وقفے سے جاری ہے۔
کراچی میں بارش کے بعد حسب سابق کے الیکٹرک کے فیڈرز ٹرپ ہونے کا سلسلہ بھی شروع ہوگیا، 300 سے زائد فیڈرز ٹرپ ہونے سے شہر قائد کے بیشتر علاقوں کو بجلی کی فراہمی معطل ہوگئی۔
رپورٹ کے مطابق گلشن اقبال، گلشن معمار، ایف بی ایریا، لیاقت آباد، صدر، اولڈ سٹی ایریا، ملیر، کاٹھور، گڈاپ، شاہ فیصل کالونی اور دیگر علاقوں میں بجلی غائب ہوگئی۔
ترجمان کے الیکٹرک کا کہنا ہے کہ نشیبی علاقوں میں احتیاطی تدابیر کے طور پر بجلی بند کی گئی، ٹیمیں بجلی کی جلد بحالی پر کام کررہی ہیں۔
کے الیکٹرک نے شہریوں سے اپیل کی ہے کہ وہ بارش کے دوران ٹوٹے ہوئے تاروں، بجلی کے کھمبوں اور پی ایم ٹیز سے دور رہیں، کسی بھی شکایت کی صورت میں 118 پر فوری رابطہ کریں۔
محکمہ موسمیات کے مطابق کل تک بارشوں کا يہ طاقتور سسٹم سندھ سميت بلوچستان تک پھيل جائے گا، صرف کراچی میں 200 سے ملی ميٹر تک بارش متوقع ہے۔
محکمہ موسمیات کی پیشگوئی کے تناظر میں این ڈی ایم اے نے تمام صوبائی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹیز اور ديگر محکمہ جات کیلئے ایڈوائزری جاری کی۔
جمعرات سے ہفتہ تک بارش کی پیشگوئی پر ترجمان این ڈی ایم اے نے کراچی، حیدرآباد اور دیگر بڑے شہروں میں اربن فلڈنگ کا خدشہ ظاہر کیا ہے اور تمام محکموں کو ہدایت کی ہے کہ روڈ کلیئرنس مشینری اور ضروری عملے کو ہنگامی صورتحال کیلئے تیار رکھیں۔
ترجمان نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی نے شہریوں کو بھی ہدایت کی ہے کہ بارش کے دوران غیر ضروری طور پر گھروں سے نہ نکلیں، بجلی کے کھمبوں اور دیگر برقی تنصیبات سے فاصلہ رکھیں، ماہی گیر حضرات گہرے پانی میں جانے سے اجتناب کریں

متعلقہ خبریں